ریاستی بلٹین میں دو دو مرتبہ شائع ہورہے ہیں بھٹکل کے کورونا متاثرین کے نام؛ دونوں کے سیمپل جانچ کے لئے روانہ کئے گئے تھے دوبارہ

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 18th May 2020, 3:12 PM | ساحلی خبریں | ریاستی خبریں |

بھٹکل 18/مئی (ایس او نیوز) ریاستی حکومت کی طرف سے جاری کی جانے والی  ہیلتھ بلٹین میں بھٹکل سے تعلق رکھنےوالے کورونا متاثرین کے نام دو دو مرتبہ شائع ہونے کی بات منظر عام پر آئی ہے ۔ یہ دوسرا موقع ہے جب کورونا سے متاثرہ  کے نام دو مرتبہ شائع ہوئے ہیں۔

کل اتوار کو ایک 68 سالہ شخص کی رپورٹ کورونا پوزیٹو بتائی گئی تھی حالانکہ ان کی رپورٹ پوزیٹو آنے کا تذکرہ     9/مئی کی بلٹین میں بھی شائع ہوچکا ہے 9/مئی کی بلٹین میں انہیں P783 کا نمبر دیا گیا تھا جبکہ اتوار کے بلٹین میں انہیں P1147 نمبر دیا گیا ہے۔ بتایا گیا ہے کہ اس سے قبل ان کی دُختر P 740  کی رپورٹ کورونا پوزیٹو آئی تھی جو مریضہ نمبر 659 کے رابطے میں تھی۔

اسی طرح آج پیر کو ایک دو سالہ بچی کی رپورٹ پھر ایک بار ہیلتھ بلٹین میں شائع ہوئی ہے اور میڈیکل ہیلتھ آفسر نے تصدیق کی ہے کہ اس بچی کی رپورٹ بھی دوسری مرتبہ  شائع ہوئی ہے۔ یاد رہے کہ اس بچی کی کورونا پوزیٹو آنے کی رپورٹ 13مئی کے ہیلتھ بلٹین میں چھپ چکی ہے اُدھر اس بچی کا فہرست نمبرP 929 ہے، آج پیر کی رپورٹ میں اسے نیا نمبر P 1206 دیا گیا ہے۔

یاد رہے کہ ان دونوں کی رپورٹ کو لے کر ڈاکٹر الجھن کا شکار ہوگئے تھے جس کی وجہ سے دونوں کے سیمپل دوبارہ جانچ کے لئے روانہ کئے گئے تھے،یہی  وجہ ہے کہ  ان دونوں کی رپورٹ دو دو مرتبہ  بلٹین میں چھپ کر آئے ہیں۔

خیال رہے کہ ضلع اُترکنڑا میں کورونا کے ایکٹو معاملات بڑھ کر آج 37 ہوگئے ہیں، جس میں صرف بھٹکل کے 30 معاملات شامل ہیں، اس سے پہلے گلف کنکشن سے آئے بھٹکل اور اُترکنڑا کے گیارہ لوگ صحتیاب ہوکر اسپتالوں سے ڈسچارج ہوچکے ہیں۔

 

ایک نظر اس پر بھی

اُڈپی ضلع میں کورونا کے بڑھتے ہوئے معاملات سے نمٹنے کے لئے کنداپور اور بیندور میں کووِڈ اسپتالوں کا قیام۔ ڈپٹی کمشنر جگدیش کا اعلان

ضلع اُڈپی کے ڈپٹی کمشنر جی جگدیش نے بتایا کہ ضلع میں کووِڈ 19سے متاثرین کی تعداد میں روزبرو ز اضافہ کو دیکھتے ہوئے کنداپور اور بیندو ر میں 400 بستروں کی سہولت کے ساتھ کووِ ڈ اسپتال قائم کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

کرناٹک میں 25 جون سے شروع ہورہے ہیں ایس ایس ایل سی امتحانات؛ ہر امتحان گاہ میں صرف 18 طلبا کو بیٹھنے کی ہوگی سہولت؛ ایک گھنٹہ پہلے امتحان گاہ پہنچنا ضروری

کورونا وباء کے بعد ملک بھر میں لگے لاک ڈاون کے بعد اب ریاست کرناٹک میں 25 جون سے ایس ایس ایل سی امتحانات شروع ہورہے ہیں جو  4 جولائی کو اختتام کو پہنچیں گے۔ امتحانات کو منعقد کرنے کے لئے ہرممکن احتیاطی اقدامات اُٹھائے جارہے ہیں تاکہ طلبا کویڈ سے  محفوظ رہیں،  طلبا کے درمیان ...

یڈیورپا کا اعلیٰ عہدیداروں کے ساتھ جائزہ اجلاس؛ بعض سرکاری دفاتر کو اندرون ایک ماہ بیلگاوی کے سورونا ودھان سودھا منتقل کرنے وزیر اعلیٰ کی ہدایت

وزیر اعلیٰ بی ایس یڈی یورپا نے حکام کو اندرون ماہ ریاست کے بعض سرکاری دفاتر کی نشاندہی اور ان کی بیلگاوی کے سورونا و دھان سودھا منتقلی کی ہدایت دی جس کا مقصد علاقائی توازن قائم کرنا ہے۔

کوویڈ۔ 19 : کمس اسپتال ہبلی میں ریاست کا پہلا پلازمہ تھیراپی تجربہ کامیاب ؛ بنگلور میں تجربہ ناکام ہونے کے بعد ہبلی ڈاکٹروں کو ملی زبردست کامیابی

ورونا وائرس وبا کی وجہ سے اس وقت پوری دنیا جوجھ رہی ہے۔ اس کے معاملات میں دن بہ دن اضافہ ہی ہوتا جا رہا ہے۔ ہر کوئی چاہتے  یا  نا چاہتے ہوئے بھی اس خطرے کے ساتھ زندگی بسر کرنے پر مجبور ہے۔ کیونکہ پوری دنیا بھر کے ممالک بھی اس کا ٹیکہ دریافت کرنے سے اب تک قاصر رہے ہیں۔

کرناٹک میں کورونا کے 24 گھنٹوں میں 267 نئے معاملات ، داونگیرے میں مریض کی موت سے مرنے والوں کی تعداد 53

گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران منگل کی شام 5 بجے تک ریاست میں 267 نئے کو رونا مریض پائے جانے سے ریاست میں کووڈ۔19 سے متاثر مریضوں کی تعداد بڑھ کر 2494 تک پہنچ گئی اور داونگیرے میں مزید ایک مریض کے ریاست میں فوت ہونے سے ریاست میں اس وبائ سے مرنے والوں کی تعداد بڑھ کر 53 ہوگئی۔