بہار میں بچوں کی موت کا معاملہ: سپریم کورٹ نے تشویش ظاہر کی، مرکز، بہار اور یو پی حکومت سے سات دنوں میں مانگا جواب 

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 24th June 2019, 11:16 PM | ملکی خبریں |

نئی دہلی، 24 جون (ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا) بہار میں چمکی بخار سے بچوں کی موت معاملے پر سپریم کورٹ نے تشویش ظاہر کی ہے۔بچوں کی موت کے معاملے پر دائر درخواست پر سماعت کرتے ہوئے سپریم کورٹ نے مرکزی، بہار اور یوپی حکومت سے سات دنوں میں جواب مانگا ہے۔ کورٹ نے کہا کہ بخار سے جن کی موت ہوئی ہے، وہ سب کے سب بچے ہیں۔سپریم کورٹ نے تشویش ظاہر کرتے ہوئے کہا کہ ہم نے رپورٹ دیکھی ہے لوگ گاؤں چھوڑ رہے ہیں۔سپریم کورٹ نے جن تین چیزوں پر جواب مانگا ہے، ان میں معقول صحت کی خدمات، غذائیت اور صفائی شامل ہے۔ساتھ ہی عدالت نے کہا کہ یہ بنیادی حقوق کا معاملہ ہے۔حکومتوں نے اس سے نمٹنے کے لئے کیا اقدامات کئے ہیں؟ بتا دیں ایکیوٹ انسیفلاٹس سنڈروم سے ہو رہی بچوں کی موت معاملے کو لے کر سپریم کورٹ میں پٹیشن داخل کی گئی تھی۔مفاد عامہ کی عرضی میں ریاست اور مرکزی حکومت کو علاج کے پختہ انتظامات کرنے کی ہدایت دیئے جانے کی مانگ کی گئی تھی۔داخل مفاد عامہ کی عرضی میں کہا گیا ہے کہ بہار حکومت بیماری کو پھیلنے سے روکنے میں ناکام رہی ہے لہٰذا کورٹ اور مرکزی حکومت معاملے میں دخل دے۔ساتھ ہی بہار حکومت اور مرکزی حکومت کو ہدایت دی جائے کہ وہ متاثرین کے علاج کے لئے بہار میں تقریباً500 آئی سی یو اور موبائل آئی سی یو کا بندوبست کرے۔
 

ایک نظر اس پر بھی

دہلی کے راج پتھ پر دھوم دھام سے71 واں جشن یوم جمہوریہ منایا گیا دنیانے فوج کی طاقت، ہندوستان کی شان و شوکت اور ثقافتی ورثے کا کیا مشاہدہ

صدر رام ناتھ کووندنے اتوار کو 71 ویں یوم جمہوریہ کے موقع پر راج پتھ پرسلامی لی۔لیفٹیننٹ جنرل مستری، جنرل آفیسرکمانڈنگ، ہیڈکوارٹر دہلی ایریا کی طرف سے اس سال یوم جمہوریہ کی پریڈ کی قیادت کی گئی۔ اس دوران راج پتھ پر سخت سیکورٹی کے درمیان ملک کے وزیر اعظم نریندر مودی، مہمان خصوصی ...

تلنگانہ میں بھی شہریت قانون کے خلاف اسمبلی میں تجویز لانے پر کیا جارہا ہے غور؛ وزیراعلیٰ نے  کہا ضرورت پڑی تو تاریخی اجلاس عام بھی کریں گے

شہریت ترمیم قانون (سی اے اے) پارلیمنٹ سے پاس ہونے کے بعد تنازعہ رکنے کا نام نہیں لے رہا ہے۔کیرلا، پنجاب اور راجستھان میں اس قانون کے خلاف اسمبلی میں تجویز  پاس ہو چکی ہے۔اس کڑی میں اب نئی ریاست تلنگانہ کا بھی شمار ہونے والا ہے۔

دہلی الیکشن:سینئر لیڈران کے میدان چھوڑنے سے کانگریس کی حلیف پارٹیوں کی بڑھ گئی ٹکٹوں میں شراکت

مہاراشٹر، ہریانہ اور جھارکھنڈ کے انتخابات کے دوران ٹکٹوں کی تقسیم سے مایوس ہوئے یوتھ کانگریس، این ایس یو آئی اور خواتین کانگریس کی دہلی اسمبلی انتخابات کے لئے امیدواروں کے انتخاب میں شرکت میں اضافہ ہوا ہے اور اس کی ایک بڑی وجہ کانگریس کے کئی سینئر لیڈروں کا انتخاب لڑنے کی ...

مدھیہ پردیش کے اندور میں پرچم کشائی سے پہلے کانگریس لیڈران کے درمیان جم کر ہاتھاپائی

پورا ملک یوم جمہوریہ کا جشن منا رہا ہے۔دنیا نے راج پتھ سے ہندوستان کی طاقت کا نظارہ دیکھا،دنیا کے کئی ممالک میں ہندوستانی سفارت خانے پر  دھوم دھام سے یوم جمہوریہ منایا گیا۔دوسری طرف ایک تصویر مدھیہ پردیش کے اندور سے بھی سامنے آئی ہے۔ملی معلومات کے مطابق، یہاں کانگریس دفتر میں ...

یوم جمہوریہ کے موقع پر پس مرگ پدما وبھوشن ایوارڈ پانے والوں میں شامل ہیں اڈپی پیجاورمٹھ سوامی اور جارج فرنانڈیز

یوم جمہوریہ کے موقع پر مرکزی حکومت کی طرف سے مختلف شعبہ ہائے زندگی میں نمایاں خدمات انجام دینے والی شخصیات کو پدما بھوشن اور پدماوبھوشن جیسے اعزازات سے نوازا جاتا ہے۔ امسال جن شخصیات کو پس مرگ پدماوبھوشن ایوارڈ سے نوازا گیا ہے اس میں پیجاور مٹھ کے سوامی اور سابق مرکزی وزیر ...

شاہین باغ وہ انقلاب ہے جو اب تھمنے والا نہیں ... آز:ظفر آغا

شاہین باغ اب محض ایک پتہ نہیں بلکہ ایک تاریخ ہے۔ یہ وہ تاریخ ہے جس کا سلسلہ 1857 سے ملتا ہے۔ جی ہاں، 1857 میں جس طرح انگریزوں کے مظالم اور ناانصافی کے خلاف بہادر شاہ ظفر کی قیادت میں ایک بغاوت پھوٹ پڑی تھی، ویسے ہی نریندر مودی کے خلاف شاہین باغ سے ایک بغاوت کا نقارہ بج اٹھا ہے اور ...