مظفرنگر: پریکٹیکل کے بہانے نشہ دے کر 17 لڑکیوں سے ریپ کی کوشش! دو اسکول مینیجروں کے خلاف مقدمہ درج

Source: S.O. News Service | Published on 7th December 2021, 12:45 PM | ملکی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

مظفرنگر،7؍دسمبر (ایس او نیوز؍ایجنسی)  ضلع مظفرنگر کے قصبہ پورقاضی دو نجی اسکولوں کے مینیجروں پر 17 لڑکیوں کو مبینہ طور پر نشیلی چیز کھلا کر جنسی ہراسانی کا نشانہ بنانے اور آبروریزی کی کوشش کرنے کا الزام عائد ہوا ہے۔ میڈیا رپورٹ کے مطابق پولیس نے اس معاملہ میں دونوں ملزمان کے خلاف مقدمہ درج کر لیا ہے۔ اسی کے ساتھ لاپروائی برتنے کی وجہ سے ایک پولیس عہدیدار کو لائن حاضر کر دیا گیا ہے۔

مظفرنگر ضلع کے سینئر سپرنٹنڈنٹ آف پولیس ابھیشیک یادو نے پیر کے روز بتایا کہ بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کے لیڈر اور مقامی رکن اسمبلی پرمود اوٹوال کی مداخلت کے بعد اہل خانہ کی شکات کی بنا پر مقدمہ درج کیا گیا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ پورقاضی پولیس تھانہ کے انچارج ونود کمار سنگھ کو اس معاملہ میں لاپروائی برتنے کی وجہ سے لائن حاضر کر دیا گیا ہے۔ وہیں، بھوپہ تھانہ میں واقع سوریہ دیو پبلک اسکول کے مینیجر یوگیش کمار چوہان اور پورقاضی علاقہ میں واقع جی جی ایس انٹرنیشنل اسکول کے مینیجر ارجن سنگھ کے خلاف جنسی ہراسانی، نشیلی چیز دینے اور پوکسو ایکٹ کی دفعات میں رپورٹ درج کی گئی ہے۔

ابھیشیک یادو نے بتایا کہ مبینہ واقعہ اس وقت رونما ہوا جب سوریہ دیو پبلک اسکول میں تعلیم حاصل کر رہیں 17 لڑکیوں کو پریکٹیکل امتحان دلانے کے لئے جی جی ایس اسکول لے کر گئے تھے اور انہیں وہاں رات بھر ٹھہرنا پڑا تھا۔ متاثرین کے اہل خانہ کی شکایت کے مطابق دونوں ملزمان نے نابالغ لڑکیوں کو مبینہ طور پر نشیلی چیز کھلا کر ان سے چھیڑخانی کی اور عصمت دری کی بھی کوشش کی۔

پولیس کے مطابق اہل خانہ نے شکایت کی ہے کہ ملزمان نے لڑکیوں کو دھمکی دی تھی کہ واقعہ کے بارے میں کسی کو نہ بتائیں اور جب شکایت کے بعد بھی مقامی پولیس نے کوئی قدم نہیں اٹھا تو انہوں نے رکن اسمبلی سے رابطہ کیا۔

ایس ایس پی نے بتایا کہ دو اسکول مینیجروں کے خلاف تعزیرات ہند کی دفعات 328 (جرم سرزد کرنے کی نیت سے زہر وغیرہ دے کر جسمانی نقصان پہنچانا، 354 خاتون کی عزت لوٹنے کے ارادے سے حملہ کرنا یا طاقت کا استعمال کرنا) اور پریونشن آف چلڈرن فرام سیکشول آفینسز (پوکسو) سے منسلک دفعات میں مقدمہ درج کیا گیا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

بی جے پی میں شامل ہونے والے اسیم ارون پر اکھلیش یادو کا حملہ ’کیسے کیسے لوگ وردی میں چھپے بیٹھے تھے‘

اتر پردیش میں اسمبلی انتخابات سے قبل سابق آئی پی ایس اسیم ارون کے بی جے پی کی رکنیت حاصل کرنے پر سماجوادی پارٹی کے سربراہ اکھلیش یادو نے سخت ردعمل ظاہر کرتے ہوئے کہا ہے کہ جو افسران پانچ سال تک بی جے پی کے لئے کام کر رہے تھے آج انہوں نے اپنی اصلیت ظاہر کر دی۔ انہوں نے کہا کہ وہ اس ...

دارا سنگھ سماجوادی پارٹی میں شامل، یوگی کے تیسرے وزیر اکھلیش کی سائیکل پر سوار

 سوامی پرساد موریہ کے نقش قدم پر چلتے ہوئے بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کو خیر آباد کہنے والے یوگی حکومت کے سابق وزیر دارا سنگھ چوہان نے اتوار کے روز سماج وادی پارٹی (ایس پی) کا دامن تھام لیا۔

جیل سے رہا ہونے کے بعد رامپور پہنچے عبد اللہ اعظم ’ہم پر جتنا ہو سکتا تھا ظلم ہوا، میرے والد کی جان کو خطرہ‘

اتر پردیش میں انتخابات سے قبل سماجوادی پارٹی کے قدآور لیڈر اعظم خان کے بیٹے عبداللہ اعظم کو بڑی راحت ملی ہے۔ تقریباً 23 مہینے بعد جیل سے رہا ہونے کے بعد عبد اللہ اعظم نے حکومت اور انتظامیہ پر جم کر نشانہ لگایا۔

کانگریس لیڈران نے مرکزی حکومت پر لگایا پسماندہ ہندو سماج اورمظلوم طبقے کی ہتک کرنے کا الزام

ہرسال یوم جمہوریہ کی تقریب میں ریاستوں کی نمائندگی کرنےوالی نمائش  کا اہتمام ہوتاہے۔ اس مرتبہ  ریاست کیرلا کی جانب سےبھیجے گئے انقلابی شخصیت ، سماجی مصلح شری نارائن گرو مجسمہ کو نمائش میں شامل کرنے سے مرکزی حکومت نے انکار کیاہے۔ اس طرح  مرکزی حکومت نے بھارت کی تاریخی ، اہم ...

راگھو چڈھا کا الیکشن کمیشن پر الزام، کہا،الیکشن کمیشن کسی پارٹی کی مددکر رہا ہے

راگھو چڈھا نے آج پریس کانفرنس کرتے ہوئے الیکشن کمیشن پر بڑا الزام لگایا ہے۔ انہوں نے کہاہے کہ چند روز قبل ہم نے پریس کانفرنس کے ذریعے بتایا تھا کہ الیکشن کمیشن رولز میں تبدیلی کرکے نئی سیاسی جماعت کو رجسٹر کرناچاہتاہے۔ الیکشن کمیشن اس پارٹی کو انتخابی نشان دینے جا رہا ہے۔ ...

دہلی میں صبح سے دھند کی چادر، سردی کا ستم جاری

 قومی راجدھانی دہلی اور اس سے ملحقہ علاقوں کو ہفتہ کو دھند نے اپنی لپیٹ میں لے لیا اور سردی کی لہر جاری رہی۔ محکمہ موسمیات کے مطابق راجدھانی اور این سی آر میں اگلے چار دنوں تک گھنی سے درمیانی دھند چھائی رہ سکتی ہے۔

جامعہ اسلامیہ بھٹکل کے ہونہار فرزند کابڑا کارنامہ ۔ انٹرنیشنل سطح پر روشن کیا بھٹکل کانام

کہتے ہیں کہ درخت اپنے پھل سے پہچانا جاتا ہے اور تعلیمی ادارے اپنے فارغین کی لیاقت اور صلاحیت سے پہچانے جاتے ہیں، ہندوستان میں بڑے تعلیمی اداروں کا نام کچھ شخصیات نے ہی روشن کیا ہے ،  الحمد للہ بھٹکل کے دینی و عصری تعلیم گاہوں کے طلبہ و طالبات بھی بڑی حد تک اپنی مادر علمی کی نیک  ...