کابل: سرکاری عمارت پر حملہ، کم از کم 29 افراد ہلاک

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 26th December 2018, 11:33 AM | عالمی خبریں |

واشنگٹن 26دسمبر ( ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا )افغان حکام نے کہا ہے کہ مسلح افراد کے ایک نامعلوم گروہ نے، جس میں خودکش بم حملہ آور شامل ہے، پیر کو کابل کی ایک سرکاری عمارت پر دھاوا بول دیا، جس میں کم از کم 29 افراد ہلاک جب کہ 20 زخمی ہوئے۔یہ چھاپہ مار کارروائی شام کے وقت اْس ہوئی جب ایک خود کش بم حملہ آور نے بارود سے بھری موٹر گاڑی عمارت سے ٹکرا دی۔ دھماکے کے بعد حملہ آور کے ساتھی عمارت کے اندر داخل ہوئے، جہاں دیگر محکموں کے علاوہ معذور افراد اور شہدا کے خاندانوں سے متعلق محکمہ شامل ہے۔وزارت داخلہ کے ترجمان، نجیب دانش نے کابل میں اخباری نمائندوں کو بتایا کہ حملہ سات گھنٹے تک جاری رہا، جس کے بعد عمارت کو محفوظ قرار دیا گیا۔اہلکاروں نے بتایا ہے کہ حملہ شروع ہونے کے بعد، محکمے کے 200 سے زائد ملازمین کو محفوظ مقامات کی جانب منتقل کیا گیا۔مشرقی کابل کے انہی مضافات میں جہاں تشدد کی یہ کارروائی ہوئی، دیگر کلیدی عمارتیں اور محکمے واقع ہیں۔فوری طور پر کسی نے پیر کے روز ہونے والے اِس حملے کی ذمہ داری قبول نہیں کی۔طالبان اور داعش کے نامراد شدت پسند دونوں ہی کابل میں ہونے والے گذشتہ حملوں کی منصوبہ بندی کا سہرا اپنے نام کرتے رہے ہیں۔

ایک نظر اس پر بھی

ترکی پر پابندیاں سنجیدہ اور بھرپور نوعیت کی ہیں: امریکی اہلکار 

امریکی وائٹ ہاؤس کے ایک ذمے دار نے دئے گئے خصوصی بیان میں باور کرایا ہے کہ ترکی پر پابندیاں سنجیدہ اور بھرپور نوعیت کی ہیں جو اس کی معیشت کو نقصان پہنچائیں گی۔ذمے دار کا کہنا تھا کہ اب ہمارا مقصد شام میں فائر بندی تک پہنچنا ہے۔