اڈپی میں پیش آئے کووِڈ کے مزید 61معاملات۔ مریضوں کی تعداد ہوگئی 471۔ جملہ 17 گرام پنچایتوں کے 26علاقوں کو سیل ڈاؤن

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 4th June 2020, 2:14 PM | ساحلی خبریں | ریاستی خبریں |

اُاڈپی 4/جون (ایس او نیوز) اُڈپی میں کووِڈ متاثرین کا سلسلہ تھمنے کا نام نہیں لے رہا ہے۔ کل شام تک مزید 61معاملات میں رپورٹ پوزیٹیو آنے کے ساتھ جملہ مریضوں کی تعداد 471ہوگئی ہے۔

 ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسرڈاکٹرسدھیر چندرا سوُڈانے بتایا کہ جن 61مریضوں کی رپورٹ پوزیٹیو آئی ہے وہ سب مہاراشٹرا سے لوٹے ہوئے لوگ ہیں۔ان میں 44مرد اور 17 خواتین شامل ہیں۔ان تمام مریضوں کو ان کے گھروں سے نکال کر علاج کے لئے کووِڈ اسپتال میں منتقل کیا گیا ہے۔57مریضو ں کو کنداپور کے اسپتال میں رکھا گیا ہے اور بقیہ 4مریضوں کو اڈپی کے اسپتال میں داخل کیا گیا ہے۔    

    انہوں نے مزید یہ بھی بتایا کہ کل جملہ 912 افراد کی رپورٹ موصول ہوئی تھی جس میں سے 851لوگوں کی رپورٹ نگیٹیو آئی ہے۔اس کے علاوہ پیر کے دن جو پانچ کورونا پوزیٹیو افراد موبائیل فون سوئچ آف کرکے لاپتہ ہوگئے تھے ان میں سے 3لوگوں کا  پتہ چل گیا ہے، لیکن دو متاثرین کے بارے میں ابھی کوئی سراغ نہیں ملا ہے۔

 محکمہ صحت کی طرف سے جاری بلیٹین کے مطابق اب اڈپی ضلع کووِڈ متاثرین کی تعداد کے اعتبارریاستی سطح پر اول مقام سے نیچے اتر کر دوسرے مقام پر آگیا ہے، جبکہ کلبرگی ضلع 561مریضوں کے ساتھ اول نمبر پر آگیا ہے۔

 اس وقت اڈپی ضلع کے 17گرام پنچایتوں کے 26علاقوں کو سیل ڈاؤن کردیا گیا ہے۔کاپو تعلقہ کے شیروا میں واقع ڈی اے آر کے اسسٹنٹ سب انسپکٹر کے گھر کو کوارنٹین کیا گیا ہے اور پورے شیروا گاؤں کو بفر زون میں تبدیل کیا گیا ہے۔بیندور تعلقہ میں جملہ 7گرام پنچایتوں کے 15علاقوں کو سیل ڈاؤن کیا گیا ہے۔ کنداپور تعلقہ کے ہیماڈی، تلور، بیجاڈی علاقوں کو سیل ڈاؤن کیا گیا ہے۔ کنداپور پولیس اسٹیشن کے حدود میں گُلواڈی،، کورکنجے کو کوارنٹین علاقہ قرار دیا  گیا ہے۔برہماور تعلقہ کے ہیبری پولیس اسٹیشن کے حدود میں کلتور گرام کو سیل ڈان کیا گیا ہے۔

اس کے علاوہ آرنتوڈ نامی گاؤں میں ایک متاثرہ مریض کے ابتدائی رابطے میں آنے والے دو اشخاص ایک شادی کی تقریب میں شامل ہوئے تھے۔ اس کے بعد شادی میں شریک ہونے والے تمام افراد کی نشاندہی کرکے انہیں ہوم کوارنٹین کیا گیا ہے۔    
 

ایک نظر اس پر بھی

بھٹکل میں بڑھتے کورونا معاملات؛ اب بھٹکل ویمن سینٹر کو کیا جائے گا کورونا سینٹر میں تبدیل؛ سو بستروں کا کیا جارہا ہے انتظام

بھٹکل میں کورونا کے بڑھتے معاملات اور آئندہ مزید اس میں اضافہ  کے خدشے کے  پیش نظر اب بھٹکل ویمن سینٹر کو  کورونا سینٹر میں تبدیل کئے جانے کا کام تیزی کے ساتھ جاری ہے۔ ویمن سینٹر میں بستروں کا انتظام کیا جارہا ہے اور آج یا کل میں کورونا سے متاثرہ لوگوں کو   اس نئے کورونا ...

اُترکنڑا میں آج 23 لوگوں کی رپورٹ آئی کورونا پوزیٹیو، یلاپور میں کورونا سے ایک عمر رسیدہ عورت کی موت

بھٹکل کے گیارہ لوگوں کے بشمول ضلع اُترکنڑا میں آج کورونا کے 23 لوگوں کی رپورٹ کورونا پوزیٹیو آئی ہے،  جس میں  کمٹہ کے چھ ، انکولہ کے پانچ اور کاروار سے ایک شخص بھی شامل ہیں۔اس دوران یلاپور میں ایک خاتون کی موت واقع ہونے کی بھی اطلاع ملی ہے جس کے ساتھ ہی ضلع اُترکنڑا میں کورونا ...

کورونا نے دھارا بھیانک روپ؛ بھٹکل کے دو افراد مینگلور اسپتال میں فوت؛ آج گیارہ لوگوں کی رپورٹ آئی پوزیٹیو

کورونا نے اب بھیانک روپ اپناتے ہوئے بھٹکل کے دو لوگوں کو اپنا شکار بنادیا ہے جس کے ساتھ ہی  بھٹکل کے عوام میں کورونا کو لے کر  تشویش بڑھتی جارہی ہے۔ابتدا میں جب  کورونا کے معاملات  بھٹکل سے سامنے آرہے تھے تو تنظیم کے تعاون سے تعلقہ اور ضلعی انتظامیہ نے کورونا پر قابو پانے میں ...

سرسی کی ڈاکٹر مبارک النساء تونسے نے حاصل کی کینسر کے علاج میں سوپر اسپیشالٹی کی ڈگری 

سرسی کے معروف سماجی قائد جناب عباس تونسے کی دختر ڈاکٹر مبار ک النسا ء نے ایک لائق تحسین کارنامہ انجام دیتے ہوئے دوائی کے ذریعے کینسر کا علاج (میڈیکل آنکولوجی) کے شعبے میں خصوصی مہارت (سوپر اسپیشالٹی) کی تربیت مکمل کرتے ہوئے ڈی ایم کی ڈگری حاصل کی ہے۔

کرناٹک کے بلاری ضلع میں کورونا سے مرنے والوں کی غیر مہذب تدفین کا واقعہ انسانیت سوز: ایس ڈی پی آئی

 سوشیل ڈیموکریٹک پارٹی آف انڈیا (ایس ڈی پی آئی)کرناٹک شاخہ نے بلاری ضلع میں کورونا سے مرنے والوں کی انتہائی غیر مہذب تدفین کے واقعہ کی شدید مذمت کرتے ہوئے اسے انسانیت سوز قرار دیا ہے۔