ہند۔روس تعاون سے ترقی کی راہیں کھلیں گی: وزیراعظم نریندرمودی

Source: S.O. News Service | Published on 5th September 2019, 11:02 AM | عالمی خبریں |

ولادیووستوک،5؍ستمبر(ایس او نیوز؍یواین آئی) وزیراعظم نریندرمودی نے بدھ کو روس کے صدر ولادیمر پوتن کے ساتھ دوطرفہ بات چیت کی اور خطے کی ترقی کے لئے ان کی وسیع النظری اور عزم کی ستائش کی۔مسٹر مودی نے اپنی ڈھائی گھنٹے لمبی وفد سطح کی بات چیت میں کہاکہ میں علاقے کی ترقی کے لئے آپ کے عزم اور وسیع النظری کا قائل ہوں۔ مودی نے کہاکہ مشرقی اقتصادی فورم کے لئے آپ کی دعوت میرے لئے اعزاز کی بات ہے۔یہ دونوں ملکوں کے درمیان تعاون کو فروغ دینے کے لئے ایک نئی اونچائی کا تاریخی لمحہ ہے۔میں پانچ ستمبر (جمعرات)کو اس پلیٹ فارم کی میٹنگ حصہ لینے کے لئے پرجوش ہوں۔ وزیراعظم نے یہ بھی کہا کہ سفر اور دوطرفہ بات چیت جہاز بنانے کی تربیت میں جدید تکنیکوں کے استعمال میں دونوں فریقوں کے درمیان تعاون کے نئے راستے کھولے گی۔مسٹر مودی نے ٹویٹ کیا،“سفر کے دوران صدر پوتن نے مجھے شپ یارڈ میں جدید ترین تکنیک دکھائیں۔ میرا یہ سفر اس اہم شعبہ میں تعاون کے نئے راستے کھولے گا۔وزیراعظم نے اپنے ایک پیغام میں لکھاکہ صدر پوتن کا میں شکر گزار ہوں کہ وہ میرے ساتھ جویجدا شپ بلڈنگ کامپلکس گئے۔یہ آرکٹک شپنگ کی ترقی میں بڑا تعاون دینے کے لئے تیار ہیں۔اس سے پہلے دونوں لیڈروں نے جویجدا شپ بلڈنگ کامپلکس کا دورہ کیا۔وزیراعظم کے دفتر کی جانب سے ٹویٹ کیاگیا کہ ہندوستان اور روس کے دوستانہ رشتوں نے نئے باب کی شروعات کی ہے۔صدر پوتن اور وزیراعظم مودی نے ولادیووستوک میں ملاقات کی۔جویجدا شپ بلڈنگ کامپلکس میں صدر پوتن مودی کے ساتھ موجود رہے۔ پوتن نے وفد سطح کی بات چیت ختم ہونے کے بعد کہا کہ یہ ان کے ملک کے لئے روس کا سب سے بڑا شہری ایوارڈ‘آرڈر آف سینٹ اینڈریو دی اپاسٹل’دینا ایک بڑا اعزاز تھا۔اس سال اپریل میں ماسکومیں پوتن کے دفتر نے ایک حکم میں کہا کہ مودی کو‘روس اور ہندوستان کے درمیان خصوصی اور خصوصی اختیارات حاصل کردہ اسٹراٹجک ساجھے داری کی ترقی میں خاص کامیابی’کے لئے روس کے سب سے بڑے شہری اعزاز سے نوازا گیا ہے۔وزارت خارجہ نے ایک بیان جاری کرکے یہاں اس فیصلے کا استقبال کیا اور کہاکہ یہ ایوارڈ ہندوستان اور روس دونوں ملکوں کے درمیان خصوصی اور مستحکم ساجھے داری کو ظاہر کرتا ہے جو غیر معمولی حوصلہ افزائی اور دوستی کی علامت ہے۔”مشرقی اقتصادی فورم میں جاپان کے وزیراعظم شنزو آبے،منگولیا کے صدر خلتماگن بتولگا اور ملائشیا کے وزیراعظم مہاتیربن محمدبھی موجود رہیں گے۔سہ روزہ پروگرام میں چین،جنوبی کوریا،سنگاپور اورانڈونیشیا سمیت دیگر ملکوں کے کابینہ کے اراکین بھی حصہ لیں گے۔مسٹر مودی کوفورم کے لئے مہمان خصوصی کے طورپر مدعو کیاگیا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

کورونا وائرس کو عالمی وبا قرار دیا گیا، چین میں ہلاکتوں کی تعداد بڑھ کر 56 ہوگئیں ؛ چین سے دوسرے ممالک میں بھی پھیلنے کا خدشہ

چین کی حکومت نے کہا ہے کہ 25 جنوری تک 1975 افراد کے 'کورونا' وائرس سے متاثر ہونے کی تصدیق کی ہوئی ہے اور اس وائرس سے اب تک ہلاکتوں کی تعداد 56 ہوگئی ہے۔دوسری طرف 'کورونا' وائرس کو عالمی وباء قرار دیتے ہوئیاس کے انسداد کے لیے عالمی سطح پر مزید اقدامات پر زور دیا جا رہا ہے۔یہ وائرس گذشتہ ...

ترکی میں زلزلے کے باعث ملبے تلے دبے افراد کی تلاش جاری طاقت ور زلزلے کے باعث ہلاکتوں کی تعداد 29 ہوگئی، 1400 زخمی

ترکی میں جمعہ کی شام آنے والیطاقت ور زلزلے کے نتیجے میں اب تک 29 افراد جاں بحق جب کہ 1400 زخمی ہوئے ہیں۔ متاثرہ علاقوں میں ہنگامی بنیاداوں پر امدادی کام جاری ہے اور ملبے تلے دبے افراد کی تلاش کی جا رہی ہے۔ مشرقی ترکی کے علاقوں میں آنے والے اس تباہ کن زلزلے کیباعث دسیوں افراد لاپتا ...

آپ کا شکریہ... ٹرمپ نے مذاکرات سے متعلق ایران کی مشروط پیش کش مسترد کر دی

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے ایران کی اس پیش کش کو یکسر مسترد کر دیا ہے کہ وہ پابندیاں اٹھائے جانے کی شرط کے ساتھ مذاکرات کے لیے تیار ہے۔ ٹرمپ کا یہ موقف ایرانی وزیر خارجہ محمد جواد ظریف کی حالیہ تجویز کے جواب میں سامنے آیا ہے۔ٹرمپ نے اتوار کے روز اپنی ٹویٹ میں کہا کہ ’ایرانی وزیر ...

امریکی ڈیموکریٹس پرصدر ٹرمپ کے خلاف من گھڑت معلومات فراہم کرنے کا الزام

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے مواخذے کے لیے اپوزیشن جماعت ڈیموکریٹک پارٹی کی طرف سے فراہم کردہ معلومات پر ری پبلیکنز کی طرف سے شدید تنقید کرتے ہوئے ان معلومات کو جعلی اور من گھڑت قرار دیا ہے۔امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی دفاعی ٹیم کے رکن سینیٹر رِک اسکاٹ نے کہا ہے کہ 'ڈیموکریٹس نے صدر کے ...

اردغان کی معاہدے کی خلاف ورزی، ترک فوجیوں کی لیبیا آمد جاری

ترکی کے صدر رجب طیب ایردوآن کی طرف سے لیبیا میں عدم مداخلت سے متعلق طے پائے برلن معاہدے کی خلاف ورزیاں بدستور جاری ہیں۔ ترکی کی طرف سے لیبیا میں قومی وفاق حکومت کی مدد کے لیے مسلسل فوجی بھیجے جا رہے ہیں۔کل جمعہ کو ترک صدر نے ایک بیان میں کہا کہ لیبیا میں فائز السراج کی قیادت میں ...