بارہمولہ ضلع کے دور دراز علاقے میں 17 برس بعد موبائل خدمات بحال، لوگوں میں خوشی کی لہر

Source: S.O. News Service | Published on 16th September 2020, 11:28 AM | ملکی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

بارہمولہ،16؍ستمبر (ایس او نیوز؍ایجنسی)ضلع بارہمولہ کے سوپور قصبہ کے دور دراز علاقہ رام پورہ راج پورہ میں 17 برس بعد موبائل خدمات بحال کی گئیں جس سے مقامی لوگوں میں خوشی کی لہر دوڑ گئی۔ سوپور قصبے سے 25 کلومیٹر کی دوری پر واقع اس دور افتادہ علاقے  میں ریلائنس جیو کمپنی نے موبائل خدمات فراہم کرکے لوگوں کی دیرینہ مانگ کو پورا کردیا۔

واضح رہے کہ جموں کشمیر میں 2003 میں موبائل خدمات شروع کی گئی تھیں اور اس گاؤں میں 17 سال بعد ان خدمات کو شروع کیا گیا جس سے لوگوں کو کافی سہولت مل رہی ہے۔ رام پورہ اور راج پورہ کے گرد ونواح علاقوں میں ابھی تک کمیونیکیشن کا کوئی ذریعہ نہیں تھا اور موبائل سروسز نہ ہونے کی وجہ سے ان لوگوں کو کافی مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا تھا۔ علاقے کے ایک معمر شخص علی محمد لون کا کہنا ہے کہ اس دور جدید میں بھی یہاں کے لوگ موبائل سروسز سے محروم تھے جس کے چلتے انہیں طرح طرح کی مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا تھا۔ ان کا مزید کہنا ہے کہ علاقے میں موبائل سہولیات کو شروع کرانے کیلئے انہوں نے آج تک کافی جد وجہد کی اور سرکاری اور نجی کمپنیوں کو اسضمن میں کئی بار عرضیاں بھی دی گئیں لیکن بالآخر 17 برس کے طویل انتظار کے بعد جیو کمپنی نےانہیں باقی دنیا سے جوڑ دیا۔

علاقے میں موبائل اور انٹرنیٹ کی سہولت کے نہ ہونے سے عام لوگوں کے ساتھ ساتھ یہاں کے طلبا کو بھی شدید مشکلات سے دوچار ہونا پڑتا تھا۔ گاوں کے ایک طالب علم عبدالمنان کا کہنا ہے کہ آج کل کے دور میں جہاں انٹرنیٹ کے بغیر زندگی کا تصور بھی نہیں کیا جا سکتا انہیں نہ جانے کیوں اس بنیادی سہولت سے  آج تک محروم رکھا گیا۔ ان کا مزید کہنا ہے کہ ہم جیسے کئی طلبا و طالبات کو انٹرنیٹ سہولت  سے استفادہ کرنے کے لیے میلوں کا سفر طے کرنا پڑتا تھا اور بعض اوقات وہ مختلف امتحانات کی جانکاری اور ضروری انفارمیشن حاصل کرنے سے محروم وہ جایا کرتے تھے۔

یہاں کے لوگوں نے ریلائنس جیو کمپنی کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ موبائل ٹیلیفون اور انٹرنیٹ سے جڑ جانے سے نہ صرف اس پچھڑے علاقے میں ترقی ممکن ہو سکے گی بلکہ تعلیم حاصل کرنے والے بچوں کو بھی اس سے کافی فائدہ ہوگا۔

ایک نظر اس پر بھی

ملک میں کورونا سے 95542 افراد ہلاک، متاثرین کی تعداد 60.74 لاکھ

 ملک میں گزشتہ 24 گھنٹے کے دوران متاثرہ افراد کے 82 ہزار سے زیادہ نئے معاملے سامنے آنے سے متاثرین کی تعداد 60.74 لاکھ سے تجاوز کر چکی ہے جبکہ کورونا کے انفیکشن سے 74 ہزار سے زائد افراد صحت مند ہوچکے ہیں جس کے نتیجے میں صحت مند افراد کی تعداد 50.16 لاکھ ہوگئی ہے۔

بہار اسمبلی انتخابات میں ٹکٹ کے لئے بی جے پی کے دفتر میں ہنگامہ

بہار اسمبلی انتخابات کی تاریخوں کے اعلان کے بعد سے ٹکٹ کے دعویداروں کی سرگرمیاں اس قدر بڑھ گئی ہیں کہ ان کے حامی کارکنان ہنگامہ آرائی اور ہاتھاپائی کرنے تک آمادہ ہیں اور کل ایسا ہی نظارہ بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کے ریاستی دفتر میں دیکھا گیا۔

بالاسبرامنیم اس ملک کے موسیقی اورلسانی ثقافت کی ایک عمدہ مثال تھے: سونیا گاندھی

کانگریس  کی  چیئرپرسن سونیا گاندھی نے موسیقی کی دنیا کی ایک عظیم ہستی بالاسبرامنیم کے انتقال پراپنے گہرے رنج  وغم  کا اظہار کرتےہوئے کہا ہے کہ وہ ملک کی  موسیقی اور لسانی  ثقافت کے عمدہ مثال تھے اور ان کے نہیں رہنے  سے آرٹ اور کلچرل کی دنیا پھیکی پڑگئی ہے۔

منشیات مخالف مہم: منگلورو میں ڈانسر کشور کا ایک او رساتھی گرفتار 

ریاست میں   اینٹی نارکوٹکس ڈپارٹمنٹ اور پولیس کی طرف سے چلائی جا رہی منشیات مخالف مہم کے دوران منگلورو پولیس  کی سٹی کرائم برانچ نے مشہور ڈانسر  اور فلم ایکٹرکشور شیٹی ، اس کے ساتھی امن شیٹی اور عقیل نوشیل کو ایم ڈی ایم  جیسی نشہ آور اشیاء کے استعمال اور ان کی فروخت کے سلسلے ...

28ستمبر کو کرناٹکا بند کے پس منظر میں ایس ایس ایل سی سپلمنٹری امتحان کیا گیا ملتوی

کرناٹکا ہائی اسکول اکزامنیشن بورڈ کی طرف سے جاری کیے گئے اعلامیہ کے مطابق ایس ایس ایل سی کا جو سپلمنٹری امتحان  28ستمبر کو منعقد ہونے والا تھا اسے کسانوں کے احتجاجی بند کے پیش نظر ملتوی کردیا گیا ہے۔