بھٹکل : شمالی کینرا کے اراکین اسمبلی نے کی کرناٹک کے وزیراعلیٰ ایڈی یورپا کے ساتھ صف بندی

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 19th June 2021, 7:41 PM | ساحلی خبریں | ریاستی خبریں |

بھٹکل 19/ جون (ایس او نیوز) ریاستی حکومت کے بی جے پی کیمپ میں اس وقت وزیر اعلیٰ ایڈی یورپا کے خلاف بغاوت کے سُر تیز ہوتے جارہے ہیں۔  ایم ایل سی وشوا ناتھ اور دیگر دو ایک اراکین اسمبلی نے یکے بعد دیگرے مختلف زاویوں سے وزیر اعلیٰ پر زبانی حملوں کا محاذ کھول رکھا ہے۔ اس پس منظر میں دونوں خیموں کی لام بندی بھی تیز ہوگئی ہے۔

    بغاوت کی ہوا کے ساتھ ایک طرف اراکین اسمبلی کی زیادہ تر تعداد بھی ایڈی یورپا کے ساتھ  کھڑی نظر آتی ہے تو دوسری طرف پارٹی ہائی کمان کی طرف سے بھی باغی آوازوں کو کوئی حمایت مل نہیں رہی ہے اس لئے وزیر اعلیٰ ایڈی یورپا اس وقت چین کی سانس لے رہے ہیں اور عوام کو آئندہ دو سال تک خود ہی کرسی پر بنے رہنے کا یقین دلاتے پھر رہے ہیں۔

   اگر ضلع شمالی کینرا کی بات کریں تو چاہے کاروار کی روپالی نائک ہو یا کمٹہ کے دینکر شیٹی یا پھر بھٹکل ہوناور کے سنیل نائک۔ سبھی ایڈی یورپا کیمپ میں صف بندی کرتے دکھائی دے رہے ہیں۔ ظاہر ہے کہ حکومت میں بغاوت کے آثار جب بھی پیدا ہوتے ہیں، تو اس وقت اندر ہی اندر دو موافق اور مخالف دو کیمپ بن ہی جاتے ہیں۔ لیکن سیاسی تجزیہ کاروں کا ماننا ہے کہ  اس وقت ریاستی سطح پر بھی اورضلعی سطح پر زیادہ تر اراکین اسمبلی کا ایڈی یورپا کے ساتھ کھڑا ہوجانا ان اراکین کی مجبوری ہے۔ وہ اس لئے کہ اگر باغی اراکین کامیاب ہوتے ہیں اور حکومت گر جاتی ہے تو پھر فطری طور پر نئے سرے سے انتخابات کے لئے جانا ہوگا۔ اور حقیقت یہ ہے کہ موجودہ حالات میں اکثر اراکین کی حالت یہ ہے کہ وہ تازہ انتخابات میں اترنے اور عوام کا سامنا کرنے کی پوزیشن میں نہیں ہیں۔

    شمالی کینرا کے اراکین اسمبلی کی بات کریں تو یہاں پر سوائے وشویشورا ہیگڈے کاگیری کے بقیہ تمام اراکین اسمبلی سابقہ انتخاب جیتنے کے لئے رکن پارلیمان اننت کمار ہیگڈے کے ممنون احسان ہیں۔ یہ کوئی ڈھکی چھپی بات نہیں ہے کہ اننت کمار ہیگڈے کا تعلق ایڈی یورپا کیمپ کے کٹر حامیوں سے ہے۔ اور ان اراکین اسمبلی کو ٹکٹ دلوانے اور انہیں انتخاب میں جیت سے ہمکنار کرنے کے لئے اننت کمار کیمپ نے جان توڑ اور کامیاب کوشش کی تھی۔ ایسی صورت میں ان اراکین اسمبلی کے سامنے دو راستے ہی رہ جاتے ہیں کہ یا تو ایڈی یورپا کا تختہ الٹ جانے کی صورت میں ضرورت پڑے تو الیکشن کا سامنا کریں۔ لیکن جب عام انتخاب کے لئے دو سال سے  کم  عرصہ رہ گیا تو ہوتو پھر یہ جوکھم اٹھانا ان کی بے وقوفی کہلائے گی۔ دوسرا راستہ یہ ہے کہ ایڈی یورپا کیمپ کی حمایت کرکے کرسی بچالی جائے اور اپنے حلقہ کے لئے زیادہ سے زیادہ فنڈ حاصل کرکے کچھ ترقیاتی کام انجام دئے جائیں، تاکہ اگلے عام انتخاب کے دوران اس کا بھرپور فائدہ اٹھایا جا سکے اور خود اننت کمار ہیگڈے اور ان کے حامیوں کے ساتھ بھی تال میل برقرار رکھا جاسکے۔ جس کی بنیاد پران کے لئے اگلا انتخاب بھی جیتنے کے امکانات روشن ہوجائیں گے۔

ایک نظر اس پر بھی

اترکنڑا میں بارش کا سلسلہ جاری؛ 737کروڑروپیوں کا نقصان، راستوں پر چٹان کھسکنے کے واقعات جاری

اترکنڑا ضلع میں مسلسل برسی بارش سے پید ا ہونے والے سیلاب کےنتیجےمیں کل 737.54 کروڑ روپئے کا نقصان ہونے اور سڑکیں، برج، سرکاری عمارات، پینے کےپانی کے منصوبے ، چھوٹی آب پاشی کے تعمیراتی کام، ہیسکام اور قومی شاہراہ سمیت کئی محکمہ جات کی املاک کو نقصان پہنچنے کا ضلع انتظامیہ نے ...

بنٹوال : پائپ لائن میں سوراخ بنا کر ڈیزل کی چوری ۔ کیس درج ہونے کے بعد ملزم ہوگیا فرار

بنٹوال کے مضافات اربی سوناڈو علاقے میں ایوان نامی ایک شخص کے ذریعے منگلورو ریفائنری اینڈ پیٹرولیم لمیٹیڈ (ایم آر پی ایل) کی پائپ لائن میں سوراخ بنا کر ڈیزل چوری کرنے اور زمین کے اندر سے ہی ڈیڑھ کلومیٹر دور پائپ بچھا کر ڈیزل اپنے گھر تک لے جانے کا معاملہ سامنے آیا ہے۔

مہاراشٹرا کے کونکن میں  سیلاب سے مچی تباہی کا منظر دیکھنے کے بعد  بھٹکل تنظیم وفد کے اراکین کی طرف سے 22 لاکھ روپیوں کی امداد؛ بازآباکاری کے لئے بھٹکل تنظیم کی طرف سے امداد کی اپیل

ومی سماجی ادارہ مجلس اصلاح و تنظیم بھٹکل کے نائب صدر(دوم)جناب  عتیق الرحمن مُنیری کی قیادت میں چار گاڑیوں پر  جملہ 19 اراکین پر مشتمل وفد جب مہاراشٹرا کے کونکن علاقہ پہنچا اور اپنی انکھوں سے تباہی کے  مناظر دیکھے  تو  کئی ایک کی انکھوں سے آنسو جاری ہوگئے تو کئی ایک  افسوس کا ...

یلاپور تعلقہ میں سیلاب سے بری طرح متاثر کلچی مضاف کو مکمل منتقل کیا جائے گا: وزیر اعلیٰ بسوراج بومائی

اترکنڑا ضلع یلاپور تعلقہ کے وجرلی گرام پنچایت حدود کے کلچی نامی مضاف بری طرح متاثر ہوا ہے، یہاں سب سے زیادہ زمین کھسکنے اور رہائشی علاقوں کو نقصان پہنچنے کے واقعات پیش آئے ہیں۔ وزیر اعلیٰ بسوراج بومائی نے مضاف کا معائنہ کرنے کے بعد ضلعی انتظامیہ کو حکم دیا کہ کلچی مضاف مکمل ...

بسوراج بومئی کرناٹک کے 30ویں وزیراعلی ؛گورنر تاور چند گہلوٹ نے دلایاعہدہ کی راز داری کا حلف

یڈی یورپا  کے سبکدوش  ہونے کے بعد بدھ 28 جولائی کو  بسواراج بومئی نے ریاست کرناٹک کے 30 ویں وزیراعلی کی حیثیت سے حلف اٹھایا - راج بھون کے گلاس ہاؤز میں منعقدہ مختصر تقریب میں ریاستی گورنر تاور چند گہلوٹ نے بومئی کوعہدہ کی راز داری کا حلف دلایا ۔

بنگلورو: خواتین کے تحفظ کیلئے ریلوے پو لیس کو13موٹر سائیکلیں فراہم

خواتین کے تحفظ کیلئے ریلوے ڈویژن پو لیس نے اپنے اہلکاروں کو13موٹر سائیکلیں فراہم کی ہیں۔ سنگولی رائنا سٹی ریلوے اسٹیشن احاطہ میں ریلوے ڈویژن کے اڈیشنل ڈرائرکٹر جنرل آف پو لیس(اے ڈی جی پی) بھاسکر راؤ نے موٹر سائیکلوں کو عملہ میں تقسیم کیا۔

ریاستی کابینہ میں توسیع جلد کی جائے: کمارسوامی

سابق وزیر اعلیٰ اور ریاستی جنتا دل کے رہنما ایچ ڈی کماسوامی نے وزیر اعلیٰ بسوراج بومئی سے کہا ہے کہ ریاست میں سیلاب کی سنگین صورتحال سے نپٹنے کے لئے وہ اپنی کابینہ میں جلد از جلد توسیع کریں۔

کرناٹک: یڈی یورپا کے استعفیٰ سے غمزدہ حامی نے کر لی خودکشی

کرناٹک کے وزیر اعلی بی ایس یڈی یورپا کے استعفیٰ سے غمزدہ ہوکر ان کے ایک حامی نے خود کشی کرلی ہے، جس پر وزیراعلی نے نوجوانوں کو اس طرح کے قدم نہ اٹھانے کی اپیل کی ہے۔ پولیس ذرائع نے بتایا کہ خودکشی کرنے والے کی شناخت روی (35) کے طور پر ہوئی ہے اور وہ چامراج نگر ضلع کے بومل پور گاؤں کا ...