وزارت داخلہ کا بنگال میں سی اے پی ایف کی مزید 71 کمپنیاں تعینات کرنے کا فیصلہ

Source: S.O. News Service | Published on 12th April 2021, 9:17 AM | ملکی خبریں |

نئی دہلی،12؍اپریل (ایس او نیوز؍ایجنسی)  مغربی بنگال میں اسمبلی انتخابات میں جاری تشدد کے پیش نظر وزارت داخلہ نے سنٹرل آرمڈ پولیس فورس (سی اے پی ایف) کی اضافی 71 کمپنیاں فوری طور پر تعینات کرنے کا فیصلہ کیا ہے تاکہ پرامن اور آزادانہ انتخابات کو یقینی بنایا جاسکے وزارت داخلہ نے یہ فیصلہ ہفتے کے روز لیا۔ وزارت داخلہ نے ریاست میں تشدد کے حالیہ واقعات کو مدنظر رکھتے ہوئے الیکشن کمیشن آف انڈیا (ای سی آئی) کی درخواست کے بعد یہ قدم اٹھایا ہے۔

مرکز نے ریاست مغربی بنگال میں پر امن اور آزادانہ انتخابات سے پہلے ہی سی اے پی ایف کی 1000 کمپنیاں تعینات کی تھیں، انہیں نیم فوجہ دستوں کے نام سے جانا جاتا ہے۔ گزشتہ روزمغربی بنگال کے چیف سکریٹری، ہوم سکریٹری اور پولیس ڈائریکٹر جنرل نے اس سلسلے میں وزارت داخلہ کو ایک فیکس بھیجا، جس میں الیکشن کمیشن نے مرکز سے سی اے پی ایف/ ریاستی آرمڈ پولیس (ایس اے پی) / انڈیا ریزرو بٹالین کی مزید 71 کمپنیاں بنگال اسمبلی الیکشن 2021 کے لئے تعینات کرنے کی درخواست کی ہے۔

ہفتہ کے روز اسمبلی انتخابات 2021 کے لئے مغربی بنگال میں الیکشن کمیشن کی سفارشات کی تعمیل میں سی اے پی ایف کے علاوہ 71 کمپنیاں تعینات کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ وزارت کے مکتوب کے مطابق 71 اضافی بٹالین میں سنٹرل ریزرو پولیس (سی آر پی ایف) کی 12 کمپنیاں، بارڈر سیکورٹی فورس (بی ایس ایف) کی 33، انڈو تبت بارڈر پولیس (آئی ٹی بی پی) کی 13 اور چار کمپنیاں شامل ہوں گی۔ سنٹرل انڈسٹریل سیکورٹی فورس (سی آئی ایس ایف) اور شستر سیما بل (ایس ایس بی) کی نو کمپنیاں اس میں شامل ہوں گی۔ سی اے پی ایف کی 71 کمپنیوں کی تعیناتی کے ساتھ مغربی بنگال میں انتخابات کیلئے کل 1071 کمپنیاں سی اے پی ایف، ایس اے پی اور آئی آر بٹالین دستیاب ہوں گی۔

ایک نظر اس پر بھی

کورونا کا خاتمہ جولائی تک نہیں ہوگا: ایکسپرٹ

جس طرح کورونا کے نئے معاملوں کی تعداد میں کمی درج ہو رہی ہے اس سے یہ امید بنی ہے کہ ہندوستان میں کورونا کی دوسری لہر کا خاتمہ جلد ہو جائے گا لیکن وبائی بیماریوں کے ماہر شاہد جمیل کا کہنا ہے کہ بھلے ہی ابھی کچھ ریاستوں میں کورونا کے کیس کم ہوتے نظر آ رہے ہوں لیکن دوسری لہر کا ...

سادگی کے ساتھ عید منائیں اور چھوٹی جماعت کے ساتھ عید کی نماز ادا کریں ، سرکردہ مسلم رہنماوں کی مسلمانوں سے اپیل

آل انڈیا مسلم پرسنل لاء بورڈ کے صدر مولانا رابع حسنی ندوی ۔ جمعیت علماءہند کے صدر مولانا ارشد مدنی ۔ جماعت اسلامی ہند کے امیر سید سعادت اللہ حسینی سمیت دیگر سرکردہ علماء اور مسلم قائدین مسلمانوں نے اپیل کی ہے کہ وہ کرونا کے بڑھتے خطرات کے پیش نظر احتیاط کریں اور مختصر جماعت ...

لاک ڈاؤن پر ہو سختی سے عمل: اشوک گہلوت

راجستھان میں عالمی وبا کورونا کی دوسری لہر کی چین توڑنے کے لئے آج صبح 5بجے سے لے کر 24 مئی تک سخت لاک ڈاؤن نافذ ہوگیا ہے۔ اس مدت کے دوران، ہنگامی اور ضروری خدمات، میڈیکل، دودھ اور دیگر ضروری خدمات کے لئے رعایت رہے گی۔