ہمیں گوڈسے نہیں، گاندھی-نہرو کا ہندوستان چاہیے: محبوبہ مفتی

Source: S.O. News Service | Published on 24th November 2021, 11:35 PM | ملکی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

سری نگر،24؍نومبر (ایس او نیوز؍ایجنسی) جموں و کشمیر کی سابق وزیر اعلیٰ اور پی ڈی پی سربراہ محبوبہ مفتی نے ہندوستان کی موجودہ صورت حال پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ ’’ہم گوڈسے کے ہندوستان کے ساتھ نہیں رہ سکتے۔ ہمیں گاندھی-نہرو کا ہندوستان چاہیے۔‘‘ ساتھ ہی انھوں نے یہ بھی کہا کہ اگر جموں و کشمیر کو اپنے ساتھ رکھنا ہے تو 370، 35اے سے متعلق فیصلہ واپس لینا ہوگا اور کشمیر کا مسئلہ حل کرنے کے لیے قدم بڑھانا ہوگا۔ یہ باتیں محبوبہ مفتی نے بانیہال میں ایک جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے کہا۔ انھوں نے واضح لفظوں میں کہا کہ ’’ڈنڈے، بندوق، لاشوں کو دبانے کی طاقت پر کشمیر کو ساتھ نہیں رکھ سکتے۔ بندوق کی طاقت پر امریکہ بھی افغانستان پر راج نہیں کر سکا۔‘‘

’اے بی پی‘ پر شائع ایک رپورٹ میں محبوبہ مفتی نے مرکز کو اس کی پالیسیوں کے لیے سخت تنقید کا نشانہ بنایا۔ انھوں نے کہا کہ اگر وہ کشمیر رکھنا چاہتا ہے تو دفعہ 370 بحال کرے اور کشمیر مسئلہ کا حل نکالے۔ انھوں نے مزید کہا کہ لوگ اپنی شناخت اور وقار واپس چاہتے ہیں اور وہ بھی سود کے ساتھ۔ محبوبہ مفتی کا کہنا ہے کہ جموں و کشمیر کے لوگوں نے ہماری قسمت کا فیصلہ مہاتما گاندھی کے ہندوستان کے ساتھ کیا تھا، جس نے ہمیں دفعہ 370 دیا، ہمارا اپنا آئین اور پرچم دیا، اور ہم (ناتھو رام) گوڈسے کے ساتھ نہیں رہ سکتے۔

محبوبہ مفتی نے خطاب کے دوران بی جے پی کا نام لیے بغیر کہا کہ ’’ہمارے خود کے کچھ لوگ اس وقت ناراض ہو جاتے ہیں جب میں جموں و کشمیر میں امن اور (کشمیر) ایشو کے حل کے لیے پاکستان سے مذاکرہ کا مطالبہ کرتی ہوں۔ وہ مجھے غدارِ وطن اور ملک مخالف قرار دیتے ہیں۔‘‘ ساتھ ہی انھوں نے یہ بھی کہا کہ ’’آج وہ لوگ طالبان اور چین کے ساتھ بھی بات چیت کر رہے ہیں، جس نے (چین نے) لداخ میں ہماری زمین پر قبضہ کر لیا ہے اور اروناچل پردیش میں ایک گاؤں بھی بسا دیا ہے۔‘‘

ایک نظر اس پر بھی

بھیما کوریگاؤں معاملے کی ملزم سدھا بھاردواج کی مشکلات میں اضافہ، ضمانت کے خلاف سپریم کورٹ پہنچی این آئی اے

چھتیس گڑھ کی معروف سماجی کارکن اور وکیل سدھا بھاردواج کو ممبئی ہائی کورٹ کی طرف سے دی گئی ضمانت کے خلاف قومی تحقیقاتی ایجنسی (این آئی اے) نے سپریم کورٹ میں عرضی دائر کی ہے۔

قومی راجدھانی دہلی میں ’اومیکرون‘ کا خطرہ! 12 مشتبہ مریض ’ایل این جے پی‘ اسپتال میں داخل

 دہلی میں کورونا وائرس کے نئے ویرینٹ اومیکرون کا خطرہ منڈلا رہا ہے۔ خدشہ ظاہر کیا جا رہا ہے کہ کرناٹک کے بعد دہلی میں بھی اومیکرون داخل ہو چکا ہے تاہم مشتبہ افراد کی رپورٹ ابھی سامنے نہیں آئی ہے۔

بھٹکل میں’ نمَّا ناڈا اوکوٹا‘ کا تعارفی پروگرام : ملت کی سماجی وفلاحی خدمت ادارے کا اہم مقصد

ملت کے نوجوانوں کی روزگار حاصل کرنے  اور سرکاری سہولیات سےاستفادہ کرنےمیں رہنمائی اور عملی کام کرنےکا مقصد لےکر مینگلورو میں ایک سال پہلے بنیاد ڈالے گئے ’’نمَّا ناڈا وکوٹا‘‘ نامی ادارے کا تعارفی پروگرام بھٹکل کے گرین پیراڈائز میں 2نومبر 2021بروز جمعرات کی شام منعقد ہوا۔

ہندوستان میں کورونا کے 9,765 نئے کیسز، 477 اموات

گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران ملک بھر میں کورونا وائرس کے کل 9,765 نئے کیسز رپورٹ ہوئے ہیں۔ نیز ملک میں کووڈ متاثرین کی کل تعداد اب تک بڑھ کر 3 کروڑ 46 لاکھ 06 ہزار 541 ہو گئی ہے۔ گزشتہ 24 گھنٹوں میں ملک بھر میں کووڈ کی وجہ سے کل 477 لوگوں کی موت ہوئی ہے۔ ملک میں کووڈ سے اب تک کل 4 لاکھ 69 ہزار 724 ...