مایاوتی نے یوگی حکومت سے کسانوں کے سامنے پیدا کھاد بحران سے نجات دلانے کا کیا مطالبہ

Source: S.O. News Service | Published on 28th October 2021, 12:01 AM | ملکی خبریں |

لکھنؤ،27؍اکتوبر(ایس او نیوز؍ایجنسی) اترپردیش کی سابق وزیر اعلی و بی ایس پی کی سپریمو مایاوتی نے ریاست کی یوگی حکومت سے کسانوں کے سامنے پیدا کھاد کے بحران سے نجات دلانے کا مطالبہ کیا ہے۔ مایاوتی نے اترپردیش میں بندیل کھنڈ سمیت ریاست کے دیگر علاقوں میں کھاد کی کمی سے پریشان کسانوں کا مدا ٹوئٹر پر اٹھاتے ہوئے حکومت سے اس مسئلے کو بلاتاخیر حل نکالنے کا مطالبہ کیا۔

مایاوتی نے کہا کہ پورے یوپی اور خاص کر بندیل کھنڈ علاقے میں حکومت کسانوں کو وقت سے کھاد دستیاب نہیں کرا پا رہی ہے۔ جس سے پورے دن لائن میں لگے کئی کسانوں کی موت ہوگئی اور کافی بیمار بھی ہوگئے۔ مایاوتی نے مطالبہ کیا کہ ’’اس کافی تکلیف دہ و باعث فکر سنگین مسئلہ کا حل حکومت فوراً نکالے۔ بی ایس پی کا یہ مطالبہ ہے۔

قابل ذکر ہے کہ حال ہی میں بندیل کھنڈ کے للت پور ضلع میں کھاد تقسیم کی لائن میں کافی وقت تک کھڑے رہنے کی وجہ سے ایک کسان کی موت ہوگئی تھی۔ بندیل کھنڈ ریاست کے مختلف علاقوں میں کھاد کی مبینہ کالا بازار کی وجہ سے کسانوں کو کھاد نہیں مل پا رہی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

بھیما کوریگاؤں معاملے کی ملزم سدھا بھاردواج کی مشکلات میں اضافہ، ضمانت کے خلاف سپریم کورٹ پہنچی این آئی اے

چھتیس گڑھ کی معروف سماجی کارکن اور وکیل سدھا بھاردواج کو ممبئی ہائی کورٹ کی طرف سے دی گئی ضمانت کے خلاف قومی تحقیقاتی ایجنسی (این آئی اے) نے سپریم کورٹ میں عرضی دائر کی ہے۔