منگلورو : جعلی ای میل آئی ڈی کے ذریعے پرنسپال کو بدنام کرنے والا لیکچرر گرفتار

Source: S.O. News Service | Published on 1st December 2021, 8:31 PM | ساحلی خبریں |

منگلورو،یکم دسمبر (ایس او نیوز) جعلی  ای میل آئی ڈی بنا کر اپنے کالج کے پرنسپال کے خلاف بے بنیاد الزامات والے مراسلے بھیجنے والے لیکچرر سائبر کرائم، اکنامک آفینس اینڈ نارکوٹکس پولیس اسٹیشن کے افسران نے گرفتار کرلیا ۔

ذرائع سے ملی اطلاع کے مطابق گرفتار شدہ شخص کا نام ڈیوڈ راکیش ڈیسوزا (36 سال)ہے جو اُلیا رانیپورا کا رہنے والا ہے ۔ اور وہ ڈیرلکٹہ میں واقع ایک میڈیکل کالج میں لیکچرر ہے ۔ اس نے جعلی آئی ڈی بنا کر اپنے کالج کے پرنسپال کے خلاف بے بنیاد الزامات والے پیغامات میڈیکل کالج کے ڈائریکٹر کو ای میل کے ذریعے بھیجے تھے ۔ 

کہا جاتا ہے کہ وہ اپنے کالج کا پرنسپال بننے کے خواب دیکھ رہا تھا ۔ اس لئے اس نے کالج کے ڈائریکٹر کو پرنسپال کے خلاف بے شمار الزامات والے مراسلے بھیجے جس میں  پیپر لیکیج جیسے معاملات بھی شامل تھے ۔  چونکہ یہ ای میل فیک آئی ڈی سے جا رہے تھے اس لئے اصل آدمی کو ڈھونڈ نکالنا مشکل ہو رہا تھا ۔ دوسری طرف ملزم بھی بالکل نارمل طریقے سے پیش آ رہا تھا جس کی وجہ سے کسی کو بھی اس پر کوئی شبہ نہیں ہو رہا تھا ۔

امسال ستمبر میں کالج کے پرنسپال نے سی ای این پولیس اسٹیشن میں شکایت درج کروائی جس کے بعد پولیس نے سافٹ ویئر کا استعمال کرتے ہوئے اصل ملزم تک پہنچنے میں کامیابی حاصل کی ۔ 

گرفتاری کے بعد ملزم کو عدالت میں پیش کیا گیا جہاں سے اس کو عدالتی حراست میں بھیج دیا گیا۔

ایک نظر اس پر بھی

کاروار: دانتوں میں درد اور سردرد جیسی عام بیماریوں پر اسپتال نہ جائیں ،شدید بیمار پڑنے یا ایمرجنسی کی صورت میں ہی اسپتال کا رخ کریں: کاروار اور ہوناور میں پانچ دنوں تک اسکول بند

شدید بیمار پڑنے اور ایمرجنسی ہونے پر ہی سرکاری، پرائیویٹ  اسپتال یا سوپر اسپیشالٹی اسپتال کا رُخ کریں اور معمولی بیمار مثلاً دانتوں کا درد، سر میں درد وغیرہ پر  اسپتالوں کا رُخ نہ کیا جائے، ایسی عام بیماریوں کے لئے مقامی ڈاکٹروں کے ذریعے علاج کراسکتے ہیں۔ اس طرح  کا حکم حکومت ...

جامعہ اسلامیہ بھٹکل کے ہونہار فرزند کابڑا کارنامہ ۔ انٹرنیشنل سطح پر روشن کیا بھٹکل کانام

کہتے ہیں کہ درخت اپنے پھل سے پہچانا جاتا ہے اور تعلیمی ادارے اپنے فارغین کی لیاقت اور صلاحیت سے پہچانے جاتے ہیں، ہندوستان میں بڑے تعلیمی اداروں کا نام کچھ شخصیات نے ہی روشن کیا ہے ،  الحمد للہ بھٹکل کے دینی و عصری تعلیم گاہوں کے طلبہ و طالبات بھی بڑی حد تک اپنی مادر علمی کی نیک  ...