منگلورو میں قتل اور ڈکیتی کی منصوبہ بندی کے الزام میں پانچ گرفتار

Source: S.O. News Service | Published on 15th January 2022, 12:41 PM | ساحلی خبریں |

منگلورو،15/ جنوری (ایس او نیوز) قتل اور ڈکیتی کی منصوبہ بندی سے متعلق ایک معاملہ میں سورتکل پولیس نے 5 ملزمین کو گرفتار کرلیا  ہے جن کی شناخت روہیداس عرف آکاش بھون شرن (38)، انیل کمار سالیان عرف انیل پمپ ویل (40)، سائنال ڈیسوزا (22)، پرساد (39) اور چیتن کوٹاری (35) کے طور پر کی گئی ہے ۔

سٹی پولیس کمشنر ششی کمار نے پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ 8 دسمبر کو اس گینگ نے ایک شخص کا راستہ روکا اور اس کا اسکوٹر اور دیگر قیمتی اشیاء لوٹ لیں ۔ ابتدائی تفتیش کے دوران معلوم ہوا کہ حال ہی میں ضمانت پر رہا ہوئے آکاش بھون شرن اور اس کے ساتھی اپنی مخالف گینگ کے ایک گرگے کو قتل کرنا چاہتے تھے ۔ جس کے لئے انہیں چرائے  گئے اسکوٹر اور موبائل فون کی ضرورت تھی ۔ اس لئے انہوں نے سڑک پر جارہے شخص کو لوٹا ۔ گرفتار ملزمین کے پاس سے ایک ایس یو وی کار اور تین موبائل فون ضبط کیے گئے ہیں ۔ جو ملزمین فرار ہیں انہیں جلد ہی گرفتار کیا جائے گا۔ اس گینگ کے بارے میں یہ بھی پتہ چلا ہے کہ وہ بیرونی ممالک میں موجود مجرموں سے رابطہ بڑھانے میں مصروف تھے ۔"

پولیس کمشنر نے بتایا کہ " آکاش بھون شرن کے خلاف اڈپی، جنوبی کینرا اور منی پال میں 22 معاملے پہلے سے درج ہیں جن میں قتل، قتل کی کوشش، چوری ، منشیات اور پوکسو سے متعلق مقدمات شامل ہیں ۔ کاور پولیس اسٹیشن کے حدود میں وہ ایک ہسٹری شیٹر کے طور پر نامزد ہے ۔ دوسرا ملزم انکل پمپ ویل بھی سریندرا بنٹوال قتل کیس میں ملوث ہے ۔ سائنال ڈیسوزا کے خلاف بجپے پولیس اسٹیشن میں اور چتین کوٹاری کے خلاف کنکناڈی پولیس اسٹیشن میں کیس داخل کیا گیا ہے ۔ 

ایک نظر اس پر بھی

کاروار: دانتوں میں درد اور سردرد جیسی عام بیماریوں پر اسپتال نہ جائیں ،شدید بیمار پڑنے یا ایمرجنسی کی صورت میں ہی اسپتال کا رخ کریں: کاروار اور ہوناور میں پانچ دنوں تک اسکول بند

شدید بیمار پڑنے اور ایمرجنسی ہونے پر ہی سرکاری، پرائیویٹ  اسپتال یا سوپر اسپیشالٹی اسپتال کا رُخ کریں اور معمولی بیمار مثلاً دانتوں کا درد، سر میں درد وغیرہ پر  اسپتالوں کا رُخ نہ کیا جائے، ایسی عام بیماریوں کے لئے مقامی ڈاکٹروں کے ذریعے علاج کراسکتے ہیں۔ اس طرح  کا حکم حکومت ...

جامعہ اسلامیہ بھٹکل کے ہونہار فرزند کابڑا کارنامہ ۔ انٹرنیشنل سطح پر روشن کیا بھٹکل کانام

کہتے ہیں کہ درخت اپنے پھل سے پہچانا جاتا ہے اور تعلیمی ادارے اپنے فارغین کی لیاقت اور صلاحیت سے پہچانے جاتے ہیں، ہندوستان میں بڑے تعلیمی اداروں کا نام کچھ شخصیات نے ہی روشن کیا ہے ،  الحمد للہ بھٹکل کے دینی و عصری تعلیم گاہوں کے طلبہ و طالبات بھی بڑی حد تک اپنی مادر علمی کی نیک  ...