بنگلور جیل میں بند ایران کے 15ماہی گیروں کو رہا کرنے ہائی کورٹ کاحکم : ڈیڑھ برس کے بعد ماہی گیروں کو ملی ملک لوٹنے کی اجازت

Source: S.O. News Service | By Abu Aisha | Published on 11th January 2021, 9:22 PM | ساحلی خبریں |

منگلورو:11؍جنوری (ایس اؤ نیوز) بھارت کے آبی حدود میں غیر قانونی طور پر داخل ہوکر لکش و دیپ جزیرے کے قریب مچھلیوں کا شکار کرنے کے الزام میں گذشتہ برس بنگلورو کی جیل میں قید ایران کے 15ماہی گیروں کے خلاف دائر کئے گئے مقدمہ کو کرناٹکا ہائی کورٹ نے مسترد کردیاہے۔

ایران کے 15ماہی گیروں کو  قریب ایک برس کے بعد رہائی حاصل ہورہی ہے،  عوامی سطح پر عدالت عالیہ کے فیصلے کی ستائش کرتےہوئے کہا جارہاہے کہ عدالت عالیہ کا یہ فیصلہ انسانیت کی بنیادوں پر دیاگیا ہے۔

واقعہ کا پس منظر : 21اکتوبر 2019کو بھارتی کوسٹ گارڈدستے کی کشتیاں جب لکش و دیپ کے قریب گشت پر تھیں تو بھارت کے آبی حدود میں دو کشتیوں کا  پتہ چلا۔ جب انہیں رکنے کے لئے کہاگیا تو ماہی گیر اپنی کشتیوں کو لے کر فرار ہونےکی کوشش کئے جانے کا الزام عائد کرتےہوئے ماہی گیروں اور کشتیوں کو اپنی تحویل میں لیا تھا۔ واقعہ کو لےکر اس وقت کے ساحلی دستے کے ایس پی چیتن آر نے میڈیا کو جانکاری دی تھی۔

’عودھی ‘ اور ’ایشان ‘ نامی دو ایرانی ماہی گیر کشتیاں غیرقانونی طورپر بھارت کے سمندری حدود میں داخل ہوئی تھیں اور وہاں مچھلی شکار کرنے کے لئے ان کے پاس کوئی پروانہ نہیں تھااور کوئی دستاویزات بھی انہوں نے نہیں دکھائے تھے۔ بحریہ دستے کے افسران نے پوچھ تاچھ کے لئے بھی رکاوٹ پیدا کی تھی اسی وجہ سے انہیں اپنی تحویل میں لے کر یہاں لائے جانےکے متعلق ایس پی چیتن نے جانکاری دی تھی۔

کوسٹ گارڈ کے ڈپوٹی کمانڈنٹ اور بورڈنگ افسر کلدیپ شرما کی طرف سے دی گئی شکایت پر بھارت آبی حدود قانون کے تحت کوسٹل گارڈ پولس تھانے میں مقدمہ درج کیا گیا تھا۔ ایران کے ابوبکر انصاری میاں، موسیٰ دہدانی ، اعظم انصاری، شید باچو، عبدالمجید ، مجید رحمن  داؤد، محمد اسحق، کریم بخش دورزادے، محمد بلوچ، بمن، عبدالغنی باپور، نصیر بدھروچ، انور بلوچ، نبی بخش، یوسف جہانی  نامی ماہی گیروں کو گرفتارکرنے کے بعد انہیں منگلورو کے جیل میں پھر اس کے بعد کوروناکے حالات میں انہیں بنگلورو کے جیل میں رکھا گیا تھا۔

ایران کے سفیر ہوں یا بھارت کے سفیر ، معاملے کی سچائی کو لے کر ریاستی وزارت داخلہ کے ساتھ کسی طرح کی جانکاری کی شراکت نہیں کی تھی ۔ اسی وجہ سے قریب ڈیڑھ برس کے بعد کوئی غلطی نہ کرنے پر بھی سماوی آفت کی وجہ سے ر ماہی گیرجیل کی سلاخوں میں بند تھے۔ قانونی چارہ جوئی کے دوران میں ماہی گیروں کی طرف سے ہائی کورٹ میں عرضی داخل کی گئی تھی ایف آئی آر رد کی جائے۔

ماہی گیروں کے وکیل کا دعویٰ سننے کے بعد کرناٹک ہائی کورٹ نے مچھلی شکار کی وجہ سے ہو یا سماوی آفت کی وجہ سے ماہی گیر کشتیاں ہمارے ملک کی آبی حدود میں داخل ہوئی ہیں۔ ان کے خلاف کریمنل مقدمہ دائر کرنا صحیح نہیں ہے اور بین الاقوامی سمندر میں ایسے واقعات عموماً ہوتے رہتےہیں، کئی مرتبہ ہمارے ماہی گیر بھی دوسرے ممالک کی آبی حدودمیں داخل ہوئے ہیں، یہاں کوئی غلط مقاصد کار فرما نہیں ہوتےہیں اور دوسرے ممالک کے ماہی گیر ملک کی آبی حدود میں داخل ہونے پر ان کے خلاف کریمنل مقدمہ چلانا کوئی مناسب نہیں ہونے کاعدالت عالیہ نے خیال ظاہر کیا ہے۔

ان سب وجوہات کی بناپر ایران کے 15ماہی گیروں کے خلاف درج کئے گئے کریمنل مقدمے کو مستردکردیاہے۔ منگلورو کے کھیتن بنگیر اور ابھیشیک مارل نامی دونوں وکیلوں کے دعوؤوں کی سماعت کرنے کے بعد عدالت نے ایف آئی آر مسترد کئے جانے کا فیصلہ صادر فرمایا۔ فی الحال ماہی گیر بنگلورو کے پرپن اگرہار جیل میں قید ہیں رہائی کے منتظر ہیں۔

ایک نظر اس پر بھی

شمالی کینرا میں زمین کی ملکیت سے متعلق مسائل حل کیے جائیں۔ ریوینیو وزیر سے شیو رام ہیبار کا مطالبہ

شمالی کینرا ضلع انچارج وزیر شیورام ہیبارنےریوینیو وزیر آر اشوک سے مطالبہ کیا کہ ضلع میں زمین کی ملکیت سے متعلق ای۔پراپرٹی، ہاڈی، فارم نمبر 3 وغیرہ کے مسائل جلد حل کیے جائیں۔

عوامی سہولت کے لئے محکمہ ریوینیو میں کی جائیں گی انقلابی تبدیلیاں۔ وزیر مالگزاری آر اشوک کا بیان

بھٹکل میں منی ودھان سودھا کا افتتاح کے وقت حاضرین سے خطاب کرتے ہوئَے محکمہ مالگزاری کے وزیر آر اشوک نے کہا کہ عوام کو سہولت دلانے کے لئے ریوینیو ڈپارٹمنٹ کے کام کاج میں کچھ انقلابی تبدیلیاں کی جائیں گی۔

بھٹکل میں دعوت سنٹر کی تجدید و تزئین کی تکمیل پر خوبصورت تقریب کا انعقاد : بھٹکل کی اہم شخصیات کا تذکرہ

جماعت اسلامی ہند بھٹکل کی اجتماعی  سرگرمیوں کا محور ومرکز دعوت سنٹر کی تجدید و تزئین کاری کی تکمیل کے بعد  24جنوری 2021بروز اتوار کی شام 5بجے  جامع مسجد بھٹکل کےخطیب مولانا عبدالعلیم خطیب ندوی کے درس قرآن سے دعوت سنٹر کا افتتاحِ نوعمل میں آیا۔  

بھٹکل میں منی ودھان سودھا اور اندراکینٹین کا وزیر اشوک اور وزیر شیورام ہیبار کے ہاتھوں خوبصورت افتتاح

ریاستی کابینہ کے وزیر برائے ریوینیو آر اشوک نے بھٹکل کے عوام کی دیرینہ مانگ  انجمن روڈ پر نوتعمیر شدہ منی ودھان سودھا  کا فیتہ کاٹ کر افتتاح کیا۔اس موقع پر خطاب کرتےہوئے آر اشوک نےکہاکہ ریاستی حکومت کئی ترقیاتی  کاموں کو انجام دے رہی ہے ان میں سے ایک منی ودھان سودھا بھی  ہے۔ ...

جالی پٹن پنچایت کی جانب سے روینیو منسٹر اور ضلع نگراں کار وزیر کو سونپا گیا میمورنڈم؛ محکمہ جنگلات کی جانب سے پیش آرہی رکاوٹوں کو دور کرنے کا مطالبہ

بھٹکل تعلقہ جالی پٹن پنچایت کی جانب سے ریاست کے روینیو منسٹر آر اشوک کو جالی پٹن پنچایت کی محکمہ تحصیل کی جانب سے واضح سرحدی نشان طئے کرنے کا مطالبہ لے کر پنچایت کی صدر شمیم بانو شیخ نے میمورنڈم سونپا۔