مالیگاؤں 2008ء بم دھماکہ معاملہ:بھگواملزمین کی مقدمہ سے خلاصی کی عرضداشت پر فوری سماعت سے ہائی کورٹ کا انکار، 18نومبر سے شنوائی ہوگی

Source: S.O. News Service | Published on 10th October 2019, 5:45 PM | ملکی خبریں |

ممبئی،10؍اکتوبر(ایس او نیوز؍ایجنسی) مالیگاؤں 2008ء بم دھماکہ معاملہ کا سامنا کررہے بھگوا ملزمین کو آج اس وقت مایوسی ہوئی جب ممبئی ہائی کورٹ نے ان کی جانب سے مقدمہ سے ڈسچارج کی عرضداشت پر بم دھماکہ متأثرین کی نمائندگی کرنے والے وکلا کی مخالفت کے بعد سماعت ملتوی کردی۔بم دھماکہ ملزمین جس میں سادھوی پرگیا سنگھ ٹھاکر، کرنل پروہیت اور سمیر کلکرنی شامل ہیں کی جانب سے داخل مقدمہ سے خلاصی کی عرضداشت کو ممبئی ہائی کورٹ کی 2/رکنی بنچ کے جسٹس ایس ایس شندے اور جسٹس سوریہ ونشی نے فوری سماعت کرنے سے انکار کردیا اور معاملہ کی سماعت دیوالی کی تعطیلات کے بعد یعنی کے18/نومبر سے شروع کئے جانے کا حکم دیا۔یہ اطلاع آج یہاں ممبئی میں مالیگاؤں 2008ء بم دھماکہ متأثرین کو قانونی امداد فراہم کرنے والی تنظیم جمعیۃ علماء مہاراشٹر (ارشد مدنی) قانونی امدا د کمیٹی کے سربراہ گلزار اعظمی نے دی۔ انہوں نے بتایا کہ آج جیسے ہی سوا 3/بجے معاملہ ہائی کورٹ میں سماعت کے لئے پیش ہوا بم دھماکہ متأثرین کی نمائندگی کرتے ہوئے سینئر ایڈوکیٹ بی اے دیسائی نے عدالت کو بتایا کہ اس معاملہ میں نچلی عدالت میں اب تک 127/گواہوں کی گواہیاں مکمل ہوچکی ہیں اور ملزمین کی مقدمہ سے خلاصی کی درخواست کو نچلی عدالت نے مسترد کردیا ہے۔ لہٰذا آج ملزمین ہائی کورٹ میں داخل عرضداشت پر بحث کرنا چاہتے ہیں جس پر فوری سماعت کی ضرورت نہیں ہے کیونکہ جو سوال انہوں نے عرضداشت میں اٹھایا ہے اسے نچلی عدالت سے لے کر سپریم کورٹ نے ماضی میں خارج کردیا تھا۔ گلزار اعظمی نے کہاکہ بی اے دیسائی نے عدالت کو مزید بتایا کہ این آئی اے کی اضافی چارج شیٹ میں این آئی اے نے اسے مقدمہ سے کلین چٹ دے دی ہے۔ لیکن نچلی عدالت نے اے ٹی ایس کی چارج شیٹ کی روشنی میں اس کے اور دیگر ملزمین کے خلاف چارج فریم کردیا ہے جسے ملزمین نے چینلج کیاہے۔ لیکن بجائے مقدمہ کا سامنا کرنے کے ملزمین چاہتے ہیں کہ انہیں این آئی اے کی تازہ فرد جرم کا فائدہ ملے اور انہیں مقدمہ سے ڈسچار کردیا جائے۔انہوں نے کہا کہ ملزم کرنل پروہیت نے ہائی کورٹ میں مقدمہ سے ڈسچار ج کے ساتھ ساتھ یو اے پی اے کے اطلاق کو غیر قانونی قرار دینے کی عرضداشت بھی داخل کی ہے۔ لیکن اس سوال کو ممبئی ہائی کورٹ نے پہلے ہی خارج کردیا ہے لہٰذا امید ہے کہ عدالت ملزم کی عرضداشت کو ایک بار پھر خارج کردے گی اور ملزمین کو مقدمہ کا سامنا کرنا پڑے گا۔

ایک نظر اس پر بھی

پی ایم مودی کی بھتیجی کے ’پرس‘ کی طرح تلاش کرتے تو میرا بیٹا میرے ساتھ ہوتا، نجیب کی ماں

جواہر لال نہرو یونیورسٹی (جے این یو) کے طالب علم نجیب احمد کے لاپتہ ہونے کے تین سال بعد اس کی والدہ فاطمہ نفیس نے منگل کے روز جنتر منتر پر احتجاج کیا اور وزارت داخلہ سے اپنے بیٹے کی گمشدگی کے حوالہ سے جواب مانگا۔ اس موقع پر یونائیٹڈ اگینسٹ ہیٹ کی جانب سے ایک احتجاجی مارچ کا ...

آگسٹا ویسٹ لینڈ کے ملزم کے خلاف کارروائی پر روک لگانے کے لئے دہلی ہائی کورٹ کے فیصلے کو سپریم کورٹ نے کیا منسوخ

آگسٹا ویسٹ لینڈ کے ملزم گوتم کھیتان کے خلاف کارروائی پر روک لگانے کے لئے دہلی ہائی کورٹ کے فیصلے کو سپریم کورٹ نے منسوخ کر دیا۔سپریم کورٹ نے دوبارہ دہلی ہائی کورٹ سے کھیتان کی عرضی پر سماعت کرنے کو کہا۔دہلی ہائی کورٹ نے کہا تھا کہ کھیتان کا معاملہ 1 اپریل 2016 سے پہلے کا ہے لہٰذا ...

یوپی کی سابق ایم پی اور کانگریس لیڈر راج کماری رتنا سنگھ بی جے پی میں ہوئیں شامل

پرتاپ گڑھ کی سابق ایم پی اور کانگریس لیڈر راج کماری رتنا سنگھ اپنے حامیوں کے ساتھ بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) میں شامل ہو گئیں ہیں۔رتناسنگھ نے وزیر اعلی یوگی آدتیہ ناتھ کی موجودگی میں بی جے پی کی رکنیت حاصل کی۔بتا دیں کہ پرتاپ گڑھ کے گڑوارا میں منگل کو وزیر اعلی یوگی آدتیہ ...

یوپی: دو سال کی بچی سے عصمت دری، ملزم گرفتار

شہر کے تھانہ سی بی گنج علاقے کے ایک گاؤں میں دو سال کی بچی کے ساتھ پڑوسی نے مبینہ طور پر عصمت دری کی۔پولیس نے ملزم کو گرفتار کر لیا ہے۔سینئر پولیس سپرنٹنڈنٹ شیلندر پانڈے نے منگل کو بتایا کہ گاؤں کے رہائشی ایک شخص کی دو سالہ بیٹی پیر کی شام گھر کے باہر کھیل رہی تھی۔

بندیل کھنڈ: پہلے سوکھا اور اب بے موسم کی بارش سے پریشان کسان کررہے ہیں خودکشی

پہلے سوکھا اور اب زیادہ بارش کی وجہ سے بندیل کھنڈ کے کسان خودکشی کر رہے ہیں۔کئی سال سے بندیل کھنڈ میں پڑ رہے سوکھے کی وجہ سے کسان خودکشی کر رہے تھے، لیکن اس سال بے موسم بارش کی وجہ سے بندیل کھنڈ میں خریف کی فصل برباد ہوگئی۔جس سے کسانوں میں زبردست مایوسی ہے۔

مدھیہ پردیش: آبکاری افسر کے ٹھکانوں پر لوک آیکت کے چھاپے، کروڑوں کی جائیداد کا انکشاف

مدھیہ پردیش کے اندور میں آبکاری محکمہ کے اسسٹنٹ کمشنر آلوک کھرے کے کئی ٹھکانوں پر منگل کو لوک آیکت کی ٹیم نے چھاپہ ماری کی۔ابتدائی تحقیقات میں ہی دو مقامات پر 57 ایکڑ کے فارم ہاؤس سمیت کروڑوں کی جائیداد کا انکشاف ہوا ہے۔ٹیم مزید تفتیش میں لگی ہوئی ہے۔لوک آیکت کے ذرائع سے ملی ...