انکولہ کے الگیری میں سوِل ایئر پورٹ کو ریاستی کابینہ نے دی منظوری۔ضلع انچارج وزیر نے کیا خوشی کا اظہار 

Source: S.O. News Service | Published on 25th July 2020, 11:09 AM | ساحلی خبریں | ریاستی خبریں |

انکولہ،25؍جولائی (ایس او نیوز) انکولہ تعلقہ کے الگیری دیہات میں سی برڈ بحری اڈے کی طرف سے دوسرے مرحلے میں تعمیر کیے جارہے ایئر پورٹ احاطے میں عوام کے لئے سہولت فراہم کرنے کے منصوبے کو ریاستی کابینہ نے منظوری دے دی ہے۔خیال رہے کہ بحری فوج کا یہ منصوبہ ریاستی حکومت کے اشتراک سے مکمل ہوگا۔

ضلع شمالی کینرا میں ایک عرصے سے سوِل ایئر پورٹ تعمیر کرنے کا مطالبہ ہورہا تھا مگر مناسب مقام کے انتخاب میں مشکلیں پیدا ہورہی تھیں۔ اب چونکہ نیوی کے منصوبے میں شراکت سے یہ مسئلہ حل ہورہا ہے تو اس سے ضلع کے عوام کو بڑی راحت ملنے والی ہے۔ ضلع انچارج وزیر شیو رام ہیبا ر نے اس فیصلے پر اپنی مسرت کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ انہوں نے اس ایئر پورٹ کی تعمیر کا تقاضہ حکومت کے سامنے پوری اہمیت کے ساتھ رکھا تھا۔انہیں خوشی ہے کہ چیف منسٹر نے ان کے مطالبے کو قبول کیا۔ 

جملہ 97.10ایکڑ کے علاقے پر محیط ایئر پورٹ کے اس منصوبے کا تخمینہ 200کروڑ روپے کا ہے۔ جس میں وہاں کے باشندوں کی زمینیں سرکاری تحویل میں لینے کے جو27.84کروڑ روپے کا خرچ آنے والا ہے وہ ریاستی حکومت کی طرف سے ادا کیا جائے گا۔جبکہ سوِل ٹرمینل کی تعمیر اور دوسری سہولتیں ریاستی حکومت اور انڈین ایئر پورٹ اتھاریٹی کے اشتراک سے تشکیل پانے والی کمپنی کے توسط سے ادا کیاجائے گا۔یا پھر اسے پبلک پرائیویٹ پارٹنرشپ (پی پی پی) کی بنیاد پر مکمل کیا جائے گا۔

ایک نظر اس پر بھی

چلتی ٹرین پر سے مسافر گرپڑا؛ منکی ریلوے ٹریک پر ملی نعش؛ جیب سے برآمد ہونے والی رسید سے مہلوک کی ہوئی شناخت

چلتی ٹرین پر سے مسافر باہر گرنے سے اُس کی موت واقع ہوگئی جس کی شناخت  سنتوش کمار ایم (48) کی حیثیت سے کی گئی ہے۔ حادثہ  بھٹکل سے قریب 30 کلو میٹردور منکی ریلوے ٹریک پر  پیش آیا، جہاں ایک شخص کی نعش لاوارث حالت میں پڑی ہوئی تھی۔

بھٹکل میں لنگر انداز 2کشتیاں پانی کے تیز بہاؤ کی وجہ سے ٹکرا گئیں;کشتیوں کو نقصان

موسلادھار بارش کے ساتھ تیز ہواؤں کی وجہ سے سمندر میں اونچی لہریں اٹھ رہی ہیں جس کا اثر بندگاہوں پر لنگر انداز کشتیوں پر بھی دیکھنے کو مل رہا ہے۔  ایسا ہی ایک واقعہ بھٹکل بندرگاہ پر بھی سامنے آیا جس میں ساحل سے ٹکرانے والی تیز سمندری لہروں اور شرابی ندی میں سیلاب آجانےسے پانی کا ...

شموگہ میں زبردست بارش کے نتیجے میں ہوناور کے شراوتی ندی کے اطراف رہنے والوں کے لئے بج گئی خطرہ کی گھنٹی؛ ڈیم سے کسی بھی وقت پانی چھوڑے جانے کی وارننگ

پڑوسی ضلع شموگہ میں زبردست بارش  کے بعد  لنگن مکّی ڈیم میں پانی کی سطح کافی حد تک بڑھ گئی ہے جس کو دیکھتے ہوئے کرناٹکا پاور کارپوریشن (کے پی سی ایل) کی طرف سے  ہوناور تعلقہ کے شراوتی ندی کے اطراف بسنے والوں کے لئے خطرے کا الارم بجا دیا گیا ہے اور ندی کے اطراف بسنے والے دیہات کے ...

بھٹکل: شمالی کینرا میں طوفانی بارش کا سلسلہ جاری۔کئی دیہات تالاب میں تبدیل، ندی کنارے بسنے والوں کے لئے چوکنا رہنے کی ہدایت

ضلع شمالی کینرا کے تقریباً تمام تعلقہ جات میں موسلا دھار بارش اور تیز ہواؤں کا سلسلہ جاری ہے جس کے نتیجے میں کئی دیہاتوں میں زرعی زمین ، ناریل کے باغات اور راستے وغیرہ تالاب میں تبدیل ہوگئے ہیں،  مسلسل ہورہی بارش کی وجہ سے عام زندگی بھی ٹھپ ہوگئی ہے جبکہ ندیوں کے کنارے بسنے ...

زرعی بل کی مخالفت میں کسان تنظیموں کا ملک بھر میں احتجاج؛ کیا اس بل کے خلاف جمعہ کو کرناٹکا بند ہوگا ؟

ملک بھر میں تنازعہ  کھڑا کرنے والے زرعی بل کی سخت مخالفت کرتے ہوئے ایک طرف ملک کی مختلف ریاستوں میں احتجاج کئے جارہے ہیں وہیں   ریاست کرناٹک کے کسانوں کی طرف سے  جمعہ 25 ستمبرکو ریاست گیر سطح پر کرناٹک بند کرنے کے تعلق سے سوچا جارہا ہے۔زرعی بل کو کسانوں کے لئے موت کے منہ میں ...

شموگہ میں زبردست بارش کے نتیجے میں ہوناور کے شراوتی ندی کے اطراف رہنے والوں کے لئے بج گئی خطرہ کی گھنٹی؛ ڈیم سے کسی بھی وقت پانی چھوڑے جانے کی وارننگ

پڑوسی ضلع شموگہ میں زبردست بارش  کے بعد  لنگن مکّی ڈیم میں پانی کی سطح کافی حد تک بڑھ گئی ہے جس کو دیکھتے ہوئے کرناٹکا پاور کارپوریشن (کے پی سی ایل) کی طرف سے  ہوناور تعلقہ کے شراوتی ندی کے اطراف بسنے والوں کے لئے خطرے کا الارم بجا دیا گیا ہے اور ندی کے اطراف بسنے والے دیہات کے ...

سرسی: اسمبلی اسپیکر کے دفتر کے سامنے  دھرنا۔شمالی کینر ا کو تقسیم کرکے سرسی کو علیحدہ ضلع تشکیل دینے کا مطالبہ

عوامی مفادات اور انتظامی سہولیات کے پیش نظر ضلع شمالی کینرا کو تقسیم کرکے الگ سے سرسی ضلع تشکیل دینے اور بنواسی کو تعلقہ کا درجہ دینے کا مطالبہ کرتے ہوئے کل 21ستمبر کوسرسی ضلع ہوراٹا سمیتی نے احتجاجی ریالی  نکالی اوراسمبلی اسپیکروشویشور ہیگڈے کاگیری کے دفتر کے باہر  دھرنا ...

کاروار: سابق وزیر آنند اسنوٹیکر کے سامان میں پستول۔ بنگلورو ایئر پورٹ پر تفتیش کے بعد جانے کی دی گئی اجازت

بنگلورو سے بذریعہ ہوائی جہاز گوا ہوتے ہوئے کاروار کے لئے نکلے سابق وزیر اور جنتا دل لیڈر آنند اسنوٹیکر کو سنٹرل انڈسٹریل سیکیوریٹی فورس  نے سنیچر کو  بنگلورو ایئر پورٹ پراپنی تحویل میں لیا گیا تھا  کیونکہ ان کے سامان میں پستول  موجود تھا جسے ساتھ لے جانے کی اجازت انہوں نے ...