مہاراشٹر: پانچ سے چھ دنوں میں پورا ہو جائے گا حکومت سازی کا عمل: شیوسینا

Source: S.O. News Service | Published on 20th November 2019, 9:02 PM | ملکی خبریں |

ممبئی،20/نومبر(ایس او نیوز/ایجنسی) مہاراشٹر میں حکومت تشکیل کو لے کر ایک بار پھر ہلچل تیز ہو گئی ہے۔ شیوسینا کی جانب سے حکومت تشکیل کو لے کر بڑا بیان آیا ہے۔ شیوسینا کے لیڈر سنجے راؤت نے کہا کہ ’’حکومت بنانے کا عمل اگلے پانچ چھ دنوں میں پورا ہو جائے گا اور دسمبر سے پہلے مہاراشٹر میں ایک مقبول اور مضبوط حکومت تشکیل دی جائے گی۔ اس کا عمل جاری ہے۔‘‘

سنجے راؤت نے آگے کہا کہ ’’مہاراشٹر میں حکومت تشکیل کو لے کر گزشتہ 15-10 دنوں میں جو بھی رکاوٹیں تھیں، وہ اب نہیں ہیں۔ جمعرات دوپہر 12 بجے تک آپ کو پتہ چل جائے گا کہ سبھی رخنات دور ہو گئے ہیں۔ جمعرات دوپہر تک تصویر صاف ہو جائے گی۔‘‘

این سی پی سربراہ شرد پوار آج پی ایم مودی سے ملاقات کریں گے۔ اس ملاقات پر سوال کھڑے کرنے والوں کو بھی سنجے راؤت نے جواب دیا۔ انھوں نے کہا کہ ’’کیا اگر وزیر اعظم سے کوئی ملتا ہے تو کھچڑی پکتی ہے؟ پی ایم پورے ملک کے ہیں۔ مہاراشٹر میں کسان پریشان ہیں۔ پوار اور ادھو صاحب ہمیشہ کسانوں کے لیے سوچتے ہیں۔‘‘

شیوسینا لیڈر نے کہا کہ ’’ہم نے پوار صاحب سے گزارش کی ہے کہ وہ ریاست کی حالت کے بارے میں پی ایم کو جانکاری دیں۔ مہاراشٹر کے سبھی اراکین پارلیمنٹ پی ایم سے ملیں گے اور انھیں کسانوں کی حالت کے بارے میں بتائیں گے۔ ہم یہ یقینی بنانے کی کوشش کریں گے کہ مرکز کسانوں کو زیادہ ممکن مدد کرے۔‘‘

مہاراشٹر کے کسانوں کے ایشو پر این سی پی سربراہ شرد پوار آج پارلیمنٹ میں وزیر اعظم نریندر مودی سے ملاقات کریں گے، اس بات کی تصدیق این سی پی نے بھی کی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

ملک میں کورونا نے توڑا اب تک کا تمام ریکارڈ، 24 گھنٹے میں 24,805 نئے معاملے، 613 اموات

 ملک میں کورونا انفیکشن کے بڑھتے ہوئے پھیلاؤ کے درمیان گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران سب سے زیادہ 24،850 نئے معاملے رپورٹ ہونے کے سبب ہندوستان انفیکشن سے متاثرہ ممالک کی فہرست میں تیسرے نمبر پر روس کے بہت قریب پہنچ گیا ہے۔ اس عرصے میں ریکارڈ 613 افراد کی موت ہوئی ہے۔

معروف عالم دین اور جمعیۃ علما ہند کے نائب صدر مولانا امان اللہ قاسمی کا انتقال

 کوہ کن کے معروف عالم دین اور جمعیۃ علما ء ہند کے نائب صدر مولانا امان اللہ قاسمی نے سنیچر کے روز مختصر علالت کے بعد 84 سال کی عمر میں داعی اجل کو لبیک کہہ دیا۔ موصوف قدیم دینی و علمی درسگاہ دار العلوم حسینیہ شری وردھن ضلع رائے گڑھ (مہاراشٹرا) کے مہتمم بھی تھے۔

’کیا چین کا ہندوستانی سرزمین پر قبضہ نہیں ہے؟ مودی جی کو بتانا چاہیے‘

 کانگریس نے کہا ہے کہ چین نے وادی گلوان میں ہندوستانی حدود میں دراندازی کی ہے اور اس کے فوجی دستے ملک کے اسٹریٹجک نقطہ نظر سے متعدد اہم علاقوں میں تعینات ہیں، اس لیے اب وزیر اعظم نریندر مودی کو یہ بتانا چاہiے کہ کیا چین کا ہندوستانی سرزمین پر قبضہ نہیں ہے۔