مہاراشٹر انتخابات: شرد پوار کا اعلان،کانگریس اوراین سی پی 125-125 سیٹوں پر لڑیں گی 

Source: S.O. News Service | Published on 16th September 2019, 7:20 PM | ملکی خبریں |

ممبئی 16ستمبر(ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا) مہاراشٹر اسمبلی انتخابات کے لیے این سی پی اور کانگریس کے درمیان سیٹوں کی تقسیم ہوگئی ہے۔ این سی پی کے صدر شرد پوارنے کہاہے کہ کانگریس اور این سی پی 125-125 سیٹوں پر انتخاب لڑیں گی، جبکہ 38 سیٹوں پر اتحادی پارٹیاں لڑیں گی۔شردپوار نے 10 ستمبر کو مہاراشٹر اسمبلی انتخابات میں سیٹ تقسیم کے معاملے پر کانگریس کی عبوری صدر سونیا گاندھی سے بات چیت کی تھی۔معاملے سے آگاہ ایک سینئر کانگریس لیڈر نے کہا کہ دونوں رہنماؤں نے ریاست کے حکمران بھارتیہ جنتا پارٹی-شیوسینا اتحاد کو روکنے کے لیے کانگریس اور این سی پی کے درمیان اتحاد کے معاملے پر بات چیت کی جس میں علاقائی پارٹیاں بھی شامل ہوں گی۔انہوں نے کہا کہ دونوں رہنماؤں نے ریاست میں بائیں پارٹیوں کو اپنے اتحاد میں شامل کرنے کے معاملے پر بھی بات چیت کی۔ایک اور پارٹی لیڈر نے کہا کہ کانگریس اور این سی پی ریاست میں اپنے بی جے پی مخالف اتحاد میں راج ٹھاکرے کی مہاراشٹر نونرمان سینا (ایم این ایس) کو بھی شامل کرنے پر غور کر رہی ہیں۔لیڈرنے کہاہے کہ مہاراشٹر میں بی جے پی مخالف اتحاد میں ایم این ایس کو شامل کرنے کو لے کر کانگریس کو کچھ شک ہے۔لہٰذامعاملے پرحتمی فیصلہ لینے سے پہلے، پارٹی کے سینئر لیڈر ریاستی قیادت سے بات چیت کریں گے۔پارٹی کا عبوری صدر بننے کے بعد یہ سونیاگاندھی کی شردپوار سے پہلی ملاقات تھی۔دوماہ پہلے ایم این ایس سربراہ ٹھاکرے نے ان سے ان کی رہائش گاہ پرملاقات کی تھی، جس سے یہ قیاس لگائے جانے لگے تھے کہ وہ بھی ریاست میں ہونے والے اسمبلی انتخابات میں بی جے پی-شیوسینا مخالف اتحاد کا حصہ ہو سکتے ہیں۔ 2014 کے انتخابات میں، بی جے پی نے 288 رکنی اسمبلی میں 122 سیٹوں پر قبضہ جمایا تھا جبکہ شیوسینا کو 62 سیٹیں ملی تھیں۔کانگریس اور این سی پی کو بالترتیب 42 اور 41 سیٹوں کے ساتھ مطمئن ہوناپڑاتھا۔

ایک نظر اس پر بھی

منگلورو ایئر پورٹ پر بم رکھنے کا معاملہ ؛ ملزم آدتیہ راؤ سے پوچھ تاچھ کیلئے مرکزی وزارت داخلہ سے اجازت کا انتظار

گودی میڈیا نے منگلورو ایئر پورٹ پر بم رکھ کر تہلکہ مچانے والے سنگھ پریوار سے جڑے نوجوان آدتیہ راؤ کے معاملہ پر پوری طرح اب تک خاموشی اختیار رکھی ہے اور اب تک اس سلسلہ میں کوئی خبر ہی نہیں دی گئی تھی، اس معاملہ پر پردہ ڈالنے کی بھی کوشش جاری ہے ،

مزدوروں کا 85 فیصد ریل کرایہ مرکز کے ذریعہ ادا کرنے کا جھوٹ عدالت میں بے نقاب

مہاجر مزدوروں کو ان کے آبائی وطن روانہ کرنے کے لیے ریلوے کا 85 فیصد کرایہ مرکزی حکومت کی جانب سے ادا کیے جانے کا بی جے پی کاجھوٹ آج اس وقت بے نقاب ہوگیا جب سپریم کورٹ کے روبرو مرکزی حکومت کے سالیسٹر جنرل تشار مہتہ نے اس بات کا اعتراف کیا کہ ریلوے کرائے کا پورا خرچ ریاستی حکومتوں ...

بنگال بی جے پی صدردلیپ گھوش کا شرمناک بیان، کہا ”ٹرینوں میں مزدوروں کی موت معمولی واقعہ“

مغربی بنگال بی جے پی کے صدر دلیپ گھوش نے شرمک اسپیشل ٹرین میں بھوک اور پیاس کی وجہ سے ہونے والی اموات کو 'معمولی اور چھوٹا' واقعہ قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ اس کے لیے انڈین ریلوے کو ذمہ دار نہیں ٹھہرایا جا سکتا۔ انہوں نے کہا کہ اپوزیشن جماعتیں اس چھوٹے سے واقعے کو حد سے زیادہ حساس ...