لیبیا میں ہلاک 'داعشی' جنگجوؤں کے 12 بچے مصر کے حوالے

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 26th December 2018, 11:49 AM | عالمی خبریں |

قاہرہ 26دسمبر ( ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا ) لیبیا میں لڑائی کے دوران ہلاک ہونے والے مصری داعشی خاندانوں کے 12 بچے مصری حکومت کے حوالے کردیے ہیں۔ یہ بچے مصرمیں ان کے اقارب کے سپرد کیے جائیں گے۔میڈیا کے مطابق لیبیا کے مشرقی شہر سرت میں لڑائی کے دوران ہلاک ہونے والے داعشی جنگجوؤں کے 12 بچے مصراتۃ شہر سیخصوصی طیاریکے ذریعے قاہرہ لائے گئے جنہیں مصری ہلال احمر نے اپنی تحویل میں لے لیا۔ہلال احمر کی طرف سے جاری کردہ ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ یہ بچے دو سال قبل لڑائی کے دوران اپنے والدین کو کھوہ بیٹھے تھے۔ اس کے بعد انہیں لیبیا میں ہلال احمر کی زیرنگرانی رکھا گیا۔ ان میں 12 بچے مصری جنگجوؤں کے تھے۔ مصر میں ان کے اقارب کی تلاش کے بعد بچوں کی ان کے ساتھ ویڈیو کانفرنس کے ذریعے ملاقات کرائی گئی۔ بچوں کی جانب سے شناخت کے بعد مصر لایا گیا ہے۔مصری ہلال احمر کا کہنا ہے کہ لیبیا سے لائے گئے بچوں کا ضروری نفسیاتی علاج معالجہ اور طبی امداد فراہم کی جا رہی ہے۔ انہیں مصر میں بہتر ماحول فراہم کرنے کی ہرممکن کوشش کی جائے گی تاکہ وہ لیبیا میں پیش آنے والے جنگ کے حالات کے منفی اثرات سے نکل سکیں۔

ایک نظر اس پر بھی

اپنی حماقتوں سے ترکی کی معیشت کو تباہ نہ کریں: ٹرمپ کا ایردوآن کو انتباہ

وائٹ ہاؤس کےمطابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی طرف سے اپنے ترک ہم منصب رجب طیب اردوآن کو 9 اکتوبر کو ایک مکتوب بھیجا گیا تھا جس میں انہیں شمالی شام میں کردوں کے خلاف فوجی آپریشن شروع کرنے کے فیصلے سے باز آنے کو کہا گیا تھا۔ اس مکتوب میں صدر ٹرمپ نے ایردوآن کو خبر دار کیا تھا کہ شام ...

امریکی ایوان نمائندگان کی شام سے فوج واپس بلائے جانے کی شدید مذمت

امریکی ایوان نمائندگان نے صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے شمالی شام سے امریکی فوجیوں کے انخلاء کے فیصلے کی مذمت کی ہے۔ گذشتہ روز ایوان میں شام سے امریکی فوج کی واپسی کے حوالے سے ایک قرار داد پر رائے شماری کی گئی جس میں ارکان کی اکثریت نے اس فیصلے کی مخالفت میں ووٹ ڈالا۔

فلپائن میں زلزلہ، مہلوکین کی تعداد پانچ 

فلپائن کے جنوبی حصے میں زلزلے کے نتیجے میں ہلاک ہونے والوں کی تعداد بڑھ کر پانچ ہو گئی ہے۔ بدھ کی رات آنے والی اس قدرتی آفت کی وجہ سے درجنوں افراد زخمی ہوئے جبکہ کئی عمارتوں کو بھی نقصان پہنچا۔