مرکز سے ریاستی سیاست میں داخل ہونے ڈی کے شیوکمارکا منی اپا سے اصرار، ملباگل اسمبلی حلقہ سے انتخاب لڑنے پر زور

Source: S.O. News Service | Published on 16th October 2020, 10:40 AM | ریاستی خبریں |

کولار،16؍اکتوبر(ایس او نیوز) مرکزی سیاست کو چھوڑکر ریاستی سیاست میں داخلہ لینے سابق مرکزی وزیر وسابق رکن پارلیمان حلقہ کولار کے منی اپا کو ریاستی کانگریس کے صدر ڈی کے شیوکمار دباؤ ڈال رہے ہیں اور بار بار انہوں نے مجھ سے اصرار کررہے ہیں۔اس بات کا اظہار کولار کے سابق رکن پارلیمان وسابق مرکزی وزیر منی اپا نے اخباری کانفرنس میں کیا۔

انہوں نے بتایا کہ انہوں نے اس بارے میں ابھی تک کوئی خیال ظاہر نہیں کیا اورنہ ہی فیصلہ لیا ہے۔لیکن اے آئی سی سی کی جانب سے جو بھی فیصلہ کیا جاتا ہے اس کو میں تسلیم کرلوں گا۔ آئندہ پارلیمانی اورریاست کے اسمبلی چناؤ میں کانگریس پارٹی ضرور اقتدار پر آئے گی جس کیلئے ریاستی صدر ڈی کے شیوکمار اپوزیشن لیڈر سدارامیا اور میں پوری طاقت سے پارٹی کیلئے کام کریں گے اور پارٹی لیڈراور ورکرس پر بھی اس کی ذمہ داری رہے گی۔ اب کانگریس میں جو بھی اختلافات ہیں اس کو بھلاکر پارٹی کے لئے کام کرنا ہر ایک کا فرض ہے اوراس سلسلے میں ڈی کے اور سدارامیا دونوں نے مجھ سے بات بھی کی ہے -

انہوں نے بتایا کہ کولار ضلع کے ملباگل اسمبلی حلقہ سے آنے والے چناؤ میں مجھے حصہ لینے وہاں کے کانگریس لیڈرس اورورکرس دباؤ ڈال رہے ہیں۔مگر اس بارے میں ابھی میں نے کوئی فیصلہ نہیں کیا اورمیں اب اے آئی سی سی میں کام کررہاہوں اورہائی کمان کے سامنے رکھوں گا، وہ جو بھی فیصلہ کریں گے میں اس کے لئے تیار ہوں۔ میں کانگریس کے ایک وفادار کے طورپر کام کروں گا -

منی اپا نے مزید بتایا کہ پچھلے لوک سبھا چناؤ کے وقت کانگریس امیدوار کے خلاف وہاں کے سابق رکن اسمبلی کوتور منجوناتھ نے کام کیا اور کانگریس امیدوارکو شکست دلوانے میں اہم رول ادا کیا مگر میں تب سے آج تک منجوناتھ کی طرف دیکھا بھی نہیں۔بات بھی نہیں کی اب آنے والے دنوں میں کیا ہوگا دیکھا جائے گا- منی اپا نے ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے کہاکہ آئندہ ہونے والے کولار اسمبلی چناؤ سے کوتور منجوناتھ ملباگل چھوڑکر کولار اسمبلی حلقہ سے کانگریس امیدوار حصہ لینے پر انہوں نے بتایا کہ اس کا مجھے علم نہیں ہے ضلع اور تعلقہ کانگریس صدر کا اختیار ہے وہ اگر نام سفارش کرکے ہائی کمان کو روانہ کریں گے تو ہائی کمان کا فیصلہ ہے۔اب میں ضمنی انتخابات میں سرااسمبلی حلقہ میں کانگریس امیدوار کی کامیابی کیلئے کام کررہاہوں۔اس وقت ان کے ہمراہ ضلع کانگریس صدر چندراریڈی،کے اے نثاراحمد،پرساد بابو وغیرہ موجود تھے۔

ایک نظر اس پر بھی