لکھنؤ: درندے نے عصمت دری کے بعد 6 سالہ دوست کی بیٹی کا کیا قتل

Source: S.O. News Service | Published on 16th September 2019, 12:56 PM | ملکی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

لکھنؤ،16؍ستمبر(ایس او نیوز؍یو این آئی)  اترپردیش میں لکھنؤ کے سعادت گنج علاقے میں ایک درندے نے اپنے دوست کی چھ سالہ بچی کے ساتھ زیادتی کرنے کے بعد اس کا گلا کاٹ کر قتل کردیا۔

پولس ترجمان کے مطابق پرانے لکھنؤ کے سعادت گنج علاقے میں رہنے والی چھ سالہ بچی اتوار کی دوپہر سے غائب تھی۔ جب کافی دیر تک بچی گھر نہیں پہنچی تب اس کی تلاش کی گئی لیکن اس کا کوئی پتہ نہیں چل سکا۔ بعد میں اہل خانہ نے سعادت گنج پولس اسٹیشن میں لڑکی کے لاپتہ ہونے کی اطلاع دی۔ بچی کے والد نے اپنے دوست ببلو پر بچی کو غائب کرنے کا شبہ ظاہر کیا۔ اس کے بعد پولس ٹھاكرگج کے ہزارہ باغ میں واقع ببلو کے گھر پہنچی تو ملزم نشے کی حالت میں پایا گیا۔

پولس نے جب اس سے پوچھ گچھ کی تو وہ کافی دیر تک گمراہ کرنے کی کوشش کرتا رہا۔ اسی درمیان بچی کے گھر والے دوبارہ ملزم کے گھر پہنچ گئے جہاں ہنگامے کے خدشہ کے پیش نظر پولس بھی موقع پر پہنچ گئی۔ انہوں نے بتایا کہ اہل خانہ کے دباؤ میں پولس نے ببلو کے گھر لگا تالا توڑا اور تلاشی لی تو اس کے پلنگ کے نیچے بچی ننگی حالت میں خون سے لت پت ملی۔ پولس بچی کو لے کر ٹراما سینٹر گئی جہاں ڈاكٹروں نے اسے مردہ قرار دے دیا۔ بچی کے گلے پر تیز دھار ہتھیار کے نشان تھے۔

اس واقعہ سے مشتعل بچی کے اہل خانہ نے رات کو ٹراما سینٹر اور وزیرباغ میں جم کر ہنگامہ کیا اور بعد میں ملزم کے گھر پر بھی توڑ پھوڑ کی۔ واقعہ کے بعد علاقے میں کشیدگی کو دیکھتے ہوئے پولس اور پی اے سی تعینات کرنی پڑی۔

واضح رہے کہ ملزم ببلو اور بچی کے والد آپس میں دوست تھے اور ایک دوسرے کے گھر آنا جانا تھا۔ ببلو عمارت سازی کے سامان کی دکان پر کام کرتا تھا لیکن نشے کی لت کی وجہ سے دکاندار نے اسے دکان سے نکال دیا تھا۔ بچی کے والد کے مطابق اتوار کی دوپہر ببلو اس کے گھر آیا، دونوں نے ساتھ کھانا کھایا اور اس کے بعد وہ گھر سے چلے گئے۔ تھوڑی دیر بعد ببلو پھر دوست کے گھر پہنچا اور دوست کی بیٹی کوبہلا پھسلا کر اپنے ساتھ لے کر چلا گیا۔ گھر لے جاکر اس نے بچی کی عصمت دری کی اور گلا کاٹ کر اس کا قتل کردیا۔ بچی ملزم کو ماموں کہتی تھی۔

ایک نظر اس پر بھی

ملک میں گزشتہ 24 گھنٹے میں کورونا کے 6387 نئے معاملے، متاثرین کی تعداد 1.50 لاکھ سے متجاوز

ملک میں گزشتہ دو دنوں کے دوران کورونا انفیکشن کے نئے معاملوں میں جزوی کمی آئی اور تقریباً 4000 لوگوں کے صحت مند ہونے سے جہاں تھوڑی راحت ملی ہے، وہیں گزشتہ 24 گھنٹے میں انفیکشن کے 6387 نئے کیس سامنے آنے سے ملک میں اس سے متاثر ہونے والے لوگوں کی تعداد 1.50 لاکھ سے تجاوز کر گئی ہے۔

گجرات کے سورت سے نکلی ٹرین ، بہار کے چھپرا کے بجائے پہنچی کرناٹک کے بنگلورو: مزدورں کا حال بے حال

لاک ڈاؤن کی مدت میں مزدوروں کو ان کے وطن لوٹانے گجرات سے نکلی ایک مزدور ٹرین (شریمک ریل ) بہار پہنچنے کے بجائے کرناٹکا کے بنگلورو پہنچ کر سب کو حیرت میں ڈال دیا ہے۔ گرچہ یہ ایک مذاق لگتا ہے مگر ہے حقیقت۔ اسی طرح اور ایک خصوصی مزدور ریل گجرات کے سورت سے 1200مزدوروں کو لے کر بہار کے ...

تبلیغی جماعت کے 57 غیر ملکی افراد عدالت سے بری، حکومت ہریانہ کو ان کے ملک بھیجنے کا حکم

  ہریانہ کی ایک عدالت نے اہم فیصلہ سناتے ہوئے سبھی چھ ممالک کے 57 غیرملکی جماعتیوں پرغیرملکی قوانین کے تحت عائد تمام دفعات کو بے بنیاد تسلیم کرتے ہو ئے سبھی جماعتیوں کو بری کردیا اورہریانہ حکومت کو حکم دیا کہ جلد سے جلد سبھی جماعت والوں کو ان کے ملک بھیجنے کا انتظام کرے۔ یہ بات ...

مزدور پیدل نہ جائیں، سب کے لئے مفت ریل سفر کے انتظامات: منیش سسودیا

  دہلی کے نائب وزیر اعلی منیش سسودیا نے تارکین وطن مزدوروں سے پیدل سفر نہ کرنے کی اپیل کی ہے۔ انہوں نے کہا ہے کہ دہلی حکومت نے تمام مفت ریل سفروں کا انتظام کیا ہے۔ 7 مئی سے 25 مئی تک ، 2،41،169 افراد کو 196 ٹرینوں کے ذریعے ان کے گھر بھیج دیا گیا ہے۔ بہار میں سب سے زیادہ 1،25،711 افراد ہیں ...

ملک میں پہلی بار 5 ہزار مسلمانوں نے عید کی نماز آن لائن ادا کی

 کورونا وائرس کے سبب جب لوگوں کو مسجد میں جا کر نمازیں پرھنے اورعبادت کرنے پرروک لگی ہوئی ہے اور مسلمان اجتماعی عبادت کے بجائے انفرادی عبادت کرنے پر مجبور ہیں تو ایسی استثنائی صورتحال میں نئی اور جدید ٹیکنالوجی کے استعمال کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے

مزدور پیدل نہ جائیں، سب کے لئے مفت ریل سفر کے انتظامات: منیش سسودیا

  دہلی کے نائب وزیر اعلی منیش سسودیا نے تارکین وطن مزدوروں سے پیدل سفر نہ کرنے کی اپیل کی ہے۔ انہوں نے کہا ہے کہ دہلی حکومت نے تمام مفت ریل سفروں کا انتظام کیا ہے۔ 7 مئی سے 25 مئی تک ، 2،41،169 افراد کو 196 ٹرینوں کے ذریعے ان کے گھر بھیج دیا گیا ہے۔ بہار میں سب سے زیادہ 1،25،711 افراد ہیں ...

بھٹکل میں خدمات انجام دینے والے کورونا کے خصوصی آفسر ڈاکٹر شرتھ نائیک اب ہوں گے ضلع ہیلتھ آفسر

بھٹکل میں کورونا وباء پر قابو پانے کے لئے کاروار سے ڈاکٹر شرتھ نائیک کو بھٹکل روانہ کرکے انہیں نوڈل آفسر کی ذمہ داری سونپی گئی تھی، اُنہیں اب ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفسر کے طور پر نامزد کیا گیا ہے۔ ذرائع سے ملی اطلاع کے مطابق  ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفسر کے طور پرخدمات انجام دینے والے  ڈاکٹر ...

بھٹکل کے کورونا سے متاثرہ مزید چار لوگ صحت یاب ہوکر کاروار اسپتال سے ڈسچارج؛ پہنچے بھٹکل

مینگلور اسپتال لنک کے جن 29 لوگوں کو کاروار کمس اسپتال میں ایڈمٹ کیا گیا تھا، اُس میں سے 20 لوگوں کو سنیچر کے دن اسپتال سے ڈسچارج کیا گیا تھا ، اُن ہی میں سے مزید چار لوگوں کو آج کمس  سے ڈسچارج کیا گیا ہے۔ چاروں بذریعہ ایمبولنس آج منگل کو بھٹکل سرکاری اسپتال پہنچے جہاں سے ضروری ...