کاروار کے پی یو کالجوں میں ڈی ڈی پی یو کا چھاپہ۔ طلبہ کے پاس موجود 60موبائل فون کیے گئے ضبط

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 18th July 2019, 11:18 PM | ساحلی خبریں |

کاروار18/جولائی (ایس او نیوز) پی یو کالجوں میں محکمہ تعلیمات کی جانب سے طلبہ کے لئے موبائل فون کے استعمال عاید ہے۔لیکن اکثر دیکھاگیا ہے کہ طلبہ اس قانون کی کھلی ورزی کرتے ہیں اور کالج کے احاطے میں موبائل فون استعمال کرتے ہوئے دکھائی دیتے ہیں۔

قانون کی اس خلاف ورزی پر روک لگانے کے لئے ڈی ڈی پی یو نے کاروار شہر میں موجود سرکاری پی یو کالجوں پر اچانک چھاپہ مارااور طلبہ کے پاس موجود 60موبائل فون ضبط کرلیے۔خیال رہے کہ محکمہ تعلیمات نے گزشتہ سال ہی پویو کالجوں میں موبائل کے استعمال پر پابندی کا اعلان کیا تھا۔لیکن کہیں بھی اس پر پوری طرح عمل پیرائی نہیں ہورہی ہے۔شروع میں موبائل فون اپنی کتابوں کی بیگ میں چھپاکر رکھنے اور کلاس ختم ہونے پر کالج کے احاطے میں اس کا استعمال کرنے والے طلبہ پر کالج کے اساتذہ یا پرنسپال کی طرف سے کوئی کارروائی نہ کیے جانے کا نتیجہ یہ ہوا ہے کہ اب طلبہ کلاس میں لیکچر کے دوران ہی بے خوف ہوکر موبائل استعمال کرنے لگے ہیں۔اس طرح محکمہ تعلیمات کا حکم کالج دفتر کے فائلوں میں بند ہوکر رہ گیا ہے۔ اس لئے اس قانون کو سختی کے ساتھ لاگو کرنے کی سمت میں اقدام کرتے ہوئے سرکاری کالجوں پر چھاپہ ماری کی گئی تھی۔اس دوران ڈی ڈی پی یو نے مختلف کالجوں میں پہنچ سیدھے کلاس رومس میں داخل ہوکر طلبہ کی تلاشی لی اور 60سے زائدفون ضبط کرلیے۔ اور ضبط شدہ فون کالج پرنسپال کی تحویل میں دیتے ہوئے ہدایت دی کہ طلبہ کے والدین سے بلاکر ان سے بانڈ لینے اور طلبہ کو تنبیہ کرنے کے بعد فون والدین کے حوالے کیے جائیں۔

ڈپٹی ڈائریکٹر پری یونیورسٹی ایم جی پول نے کہا کہ کالجوں کے اندر موبائل فون کے استعمال سے طلبہ کی تعلیم بری طرح متاثر ہوتی ہے۔ پابندی والے قانون پر عمل پیرائی کے لئے یہ چھاپے مارے گئے تھے اور اس کا سلسلہ آئندہ بھی جاری رہے گا۔والدین کوسمجھنا چاہیے کہ بھاری قیمت کے موبائل فون طلبہ کو فراہم کرکے وہ خود اپنے بچوں کا تعلیمی نقصان کررہے ہیں۔کالج کے اساتذہ اور پرنسپال کو اپنی ذمہ داری سمجھ کر اس قانون کو سختی کے ساتھ لاگو کرنا چاہیے۔

پتہ چلا ہے کہ ڈپٹی ڈائریکٹر پری یونیورسٹی ایم جی پول کی طرف سے چھاپہ مارنے اور طلبہ سے ان کے قیمتی موبائل فون ضبط کیے جانے کی خبر ملنے پر بہت سے والدین کالجوں میں دوڑے چلے آئے اور بعض والدین نے طلبہ کے پاس بھاری قیمت کے اینڈروائیڈ فونس موجود ہوے کو غلط نہ مانتے ہوئے ڈی ڈی پی یو کی کارروائی پر ہی سوال اٹھاکر الجھنے لگے۔ان کا کہنا ہے کہ طلبہ کی تعلیمی ترقی کے لئے انٹرنیٹ کا استعمال بہت ہی کارآمد ہوتا ہے، اس طرح آج موبائل فون کا استعمال طلبہ کے ضرورتوں میں شامل ہے۔ اس لئے محکمہ تعلیمات کی طرف سے کیا گیا یہ اقدام ہی غلط ہے۔اس کے باوجودپرنسپال اور لیکچررس نے والدین کو مسئلے کی نوعیت سمجھاتے ہوئے ان میں سے بہت سارے والدین کو تحریری بانڈ دینے اور اپنے فون واپس لے جانے پر آمادہ کرلیا۔

ایک نظر اس پر بھی

منجیشور میں چرچ پر حملے کے خلاف 25اگست کو ہوگی عیسائی تنظیموں کی زبردست احتجاجی ریالی

حال ہی میں منجیشور میں آور لیڈی آف مرسی چرچ پر جو حملہ ہوا تھا اس کے خلاف عیسائی تنظیموں کی جانب سے کیتھولک سبھا کاسرگوڈ زون کے پرچم تلے25اگست کو ایک زبردست احتجاجی ریالی منعقد کی جارہی ہے۔

منگلورو میں ایک بدنام زمانہ دھوکے باز کشمیری اور اس کا ساتھی گرفتار

منگلورو سٹی پولیس کمشنرنے ایک پریس کانفرنس کے دوران بتایا ہے کہ برکے پولیس اسٹیشن کے حدود میں ایک بدنام زمانہ کشمیری دھوکے باز اور اس کے ڈرائیور کو گرفتار کرلیا ہے جس کے بارے میں شبہ ہے کہ وہ بھی کشمیری دھوکے باز کا ساتھی ہوسکتا ہے۔

بھٹکل میں دوبارہ موسلا دھار بارش : شرالی میں گھر کو نقصان

جولائی اور اگست کے وسط تک برسی موسلادھار بارش کے بعد تھوڑی سی راحت ملنےکے بعد پھر سے بارش اپنی رفتار پکڑتی نظر آرہی ہے۔ پچھلے دودنوں سے  برسی بارش کی وجہ سے شرالی میں دیوار گرنےسے گھر کو کافی نقصان پہنچنےکا واقعہ پیش آیاہے۔

بھٹکل سرکاری فرسٹ گریڈ ڈگری کالج میں لکچررس اور عملہ کے تبادلے پر روک: رکن اسمبلی سنیل نائک

بھٹکل تعلقہ کی سرکاری ڈگری کالج میں لکچررس اور عملہ کی قلت ہے۔ یہاں سے جو کوئی کسی دوسرے مقام پر تبادلہ ہوکر گئےہیں انہیں واپس لانے کےلئے ضروری اقدامات کئے جانے کی رکن اسمبلی سنیل نائک نے جانکاری دی۔

شیرور کے کلسٹرل لیول پرتیبھا کارنجی مقابلہ جات میں  توحید پبلک اسکول کے طلبا کا بہترین مظاہرہ

گورنمنٹ ماڈل ہائر پرائمری اسکول شیرور اور محکمہ تعلیمات عامہ بیندور کے اشتراک سے منعقدہ کلسٹر لیول پرتیبھا کارنجی ثقافتی مقابلہ جات  میں توحید پبلک اسکول شیرور کے طلبا نے بہترین مظاہرہ پیش کرتےہوئے 7مقابلہ جات میں اول ، 6میں دوم اور دو مساہموں نے تیسرامقام حاصل کرتےہوئے ...