کاروار: رکن پارلیمان اننت کمار ہیگڈے کے خلاف آنند اسنوٹیکر کی بیان بازی ۔ بی جے پی کیمپ سے ہورہی ہے سخت مذمت ۔ پولیس اسٹیشن میں درج ہوئی شکایت 

Source: S.O. News Service | Published on 7th April 2021, 12:24 PM | ساحلی خبریں | ریاستی خبریں |

کاروار، 7 ؍ اپریل (ایس او نیوز) ضلع شمالی کینرا کے رکن پارلیمان اننت کمار ہیگڈے ان دنوں علیل ہیں اور عوامی سطح پر کہیں نظرنہیں آرہے ہیں۔ اس پس منظر میں سابق وزیر آنند اسنوٹیکر نے ایک قابل اعتراض بیان دیا تھا جس پر بی جے پی کیمپ میں کھلبلی مچ گئی ہے اور ہر طرف سے اس بیان کی مذمت کی جارہی ہے۔

   خیال رہے کہ کاروار میں الیکٹرانک میڈیا کے نمائندوں سے بات چیت کے دوران آنند اسنوٹیکر نے رکن پارلیمان اننت کمار ہیگڈے کے خلاف انتہائی نامناسب لہجے میں کہا تھا:" وہ زندہ رہے یا مر جائے کیا فرق پڑتا ہے؟ ان سے عوام کو کیا فائدہ پہنچا ہے؟" 

اسنوٹیکر کا ذہنی دیوالیہ :    بی جے پی ضلع صدر وینکٹیش نائیک نے کاروار میں اخباری کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے آنند اسنوٹیکر کے بیان کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ بیمار رکن پارلیمان اننت کمار ہیگڈے کے خلاف ایسا قابل اعتراض دینا اسنوٹیکر کے ذہنی دیوالیہ پن کی علامت ہے۔ گزشتہ الیکشن میں اننت کمار نے اسنوٹیکر کو ذلت آمیز شکست دیتے ہوئے 4.80 لاکھ سے زائد ووٹ حاصل کیے تھے۔ اس بات کو نہیں بھولنا چاہیے۔ وینکٹیش نائک نے اسنوٹیکر کا مذاق اڑاتے ہوئے کہا وہ دیوے گوڈا خاندان کے سہاے اپنا سیاسی کیریئر بنانے میں لگے ہیں، جبکہ اننت کمار نے اپنا سیاسی کیریئر خود اپنے ہاتھوں بنایا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ اننت کمار کی حالت بہتر ہوتی جارہی ہے اور ڈاکٹروں کے مشورے سے ایک مہینے کے اندر وہ عوامی زندگی میں واپس لوٹ آئیں گے اور پارٹی میں سرگرم ہوجائیں گے۔

  اسنوٹیکر کا خاندانی دیوتا؟!:    پریس کانفرنس میں موجود بی جے پی کے ترجمان ناگراج نائک نے بھی آنند اسنوٹیکر کے بیان کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ سیاست میں اختلاف پارٹی کی پالیسیوں اور اصولوں پر ہونا چاہیے۔ اس سے ہٹ کر کسی سے ذاتی اختلاف کرنا اور دشمنی کرنا سیاست نہیں ہے۔ سابق وزیر کی حیثیت سے اسنوٹیکر کو اپنی سرگرمیوں سے سماج کے لئے ایک مثالی شخصیت ہونا چاہیے تھا۔ مگر اس کے بجائے وہ اننت کمار ہیگڈے کے خلاف بچکانہ بیان بازی کررہے ہیں۔ انہوں  نے کہا کہ اس سے پہلے اسی اسنوٹیکر نے کہا تھا اننت کمار ہیگڈے میرے لئے اپنے خاندانی دیوتا جیسے ہیں۔ اور اب اسی دیوتا کی موت کی تمنا کرنا کونسی تہذیب ہے۔وہ جسمانی طور پر طاقتور ہیں لیکن ذہنی طور پر قبرستان میں پہنچ گئے ہیں ۔  

روپالی نائک نے کی مذمت:    انکولہ کاروار ایم ایل اے روپالی نائک نے اسنوٹیکر کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ قابل فخر دیش بھکت اننت کمار ہیگڈے جیسے رکن پارلیمان کے خلاف غیر مہذب زبان استعمال کرنے والے سابق وزیر آنند اسنوٹیکر کو معافی مانگنی چاہیے۔ ورنہ آنے والے دنوں میں بی جے پی کی طرف سے انہیں سبق سکھایا جائے گا۔ روپالی نائک نے کہا کہ اننت کمار کے ووٹرس اور ریاست بھر میں ان کے چاہنے والوں کو آنند اسنوٹیکر کے بیان سے چوٹ پہنچی ہے۔

منڈیا میں درج ہوئی شکایت:     اننت کمار ہیگڈے کے چاہنے والوں کی طرف سے منڈیا میں آنند اسنوٹیکر کے خلاف پولیس کے پاس شکایت درج کروائی گئی۔ منڈیا کے انیل گوڈا نامی شخص نے اپنے آپ کو ہیگڈے کا پرستار بتاتے ہوئے پولیس سپرنٹنڈنٹ کے پاس شکایت درج کروائی اور مطالبہ کیا ہے کہ رکن پارلیمان ہیگڈے کے بارے میں ناشائستہ زبان استعمال کرنے والے اسنوٹیکر کے خلاف قانونی کارروائی کی جائے۔

    سنیل نائک نے بھی کی مذمت:     بھٹکل ہوناور حلقہ کے رکن اسمبلی سنیل نائک نے آنند اسنوٹیکر کے بیان کی سخت الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا کہ اسنوٹیکر کو دماغی علاج کی سخت ضرورت ہے۔ شہر میں اخباری کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ رکن پارلیمان اور سابق مرکزی وزیر اننت کمار ہیگڈے کے خلاف بولنے کا اسنوٹیکر کو کوئی حق نہیں ہے۔ اس طرح جو بھی منھ میں آیا بولنے کا مزاج ان کے کلچر کی عکاسی کرتا ہے۔ 4 لاکھ ووٹوں کے فرق سے ہارنے والے آنند اسنوٹیکر کو اننت کمار ہیگڈے کی طاقت کیا ہے اس کا اندازہ لگانے کا شعور نہیں ہے۔ ہمیشہ گوا میں پڑے رہنے والے اسنوٹیکر کو کسی بڑے دماغی علاج کے اسپتال میں داخل کیا جانا ضروری ہے۔انہوں نے اسنوٹیکر کو تاکید کرتے ہوئے کہا کہ وہ اپنی زبان کو لگام دیں اور اس قسم کی باتیں دوبارہ اپنے منھ  سے نہ نکالیں۔ ہم سے ہرگز برداشت نہیں کریں گے۔

    اننت کمار کو فون پر دھمکی؟! :     اننت کمار ہیگڈے کے پرسنل سیکریٹری سنتوش شیٹی نے سرسی پولیس اسٹیشن میں شکایت درج کروائی ہے کہ کسی گمنام شخص کی طرف سے ٹیلی فون پر دھمکیاں دی جارہی ہیں۔ شکایت میں کہا گیا ہے کہ فون کرنے والے نے اردو ملی جلی زبان میں کہا ہے کہ 'میں تمہارے ساتھ کیا کرتا ہوں، دیکھ لینا۔ میں تمہیں ایسے ہی نہیں چھوڑوں گا۔' اس سے پہلے فروری 2019 اور اپریل 2019 میں بھی اس قسم کی کال آئی تھی جس کے بارے میں پولیس سے شکایت کی گئی تھی ۔ اوراب پھر ایک بار ایسی کال موصول ہوئی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

ہوناور کے کاسرکوڈ سمندر سے ایک نامعلوم خاتون کی نعش برآمد؛ شناخت کے لئے عوام سے تعاون کی اپیل

تعلقہ کے کاسرکوڈ سمندر سے ایک نامعلوم خاتون کی نعش برآمد ہوئی ہے جس کی عمر  35 سے 45 سال  تک ہوسکتی ہے۔ پولس نے عوام الناس سے اپیل کی  ہے کہ اگر کسی کو اس خاتون کےتعلق سے کوئی جانکاری ہوتو پولس کو خبرکریں۔

منگلورو: بس پر سفر کے دوران خاتون کی بیگ سے 2.5 لاکھ روپے مالیت کے زیورات چرانے والا ملزم گرفتار

شیموگہ سے منگلورو کی طرف بس میں سفر کررہی ایک خاتون کی بیگ سے 53 گرام وزنی 2.5 لاکھ روپے مالیت کے سونے کے زیورات چوری کرنے کے الزام میں پولیس نے ایک شخص کو گرفتار کرلیا ہے جس کی شناخت  پی جنارتنم کرپا راو کی حییثیت سے کی گئی ہے۔

بنگلورو: کورونا مریضوں کے بیڈبلاکنگ گھپلے میں بی جے پی رکن اسمبلی ستیش ریڈی کے خاص الخاص سمیت تین ملزمان کے خلاف چارج شیٹ داخل

بیڈ بلاکنگ گھپلہ کو لے کر بومن ہلی حلقہ کے بی جے پی رکن اسمبلی ستیش ریڈی کے خاص الخاص بابو سمیت روہیت اور نیتراوتی  کے خلاف سی سی بی پولس نے شہر کے ایک ویں اے سی ایم اے کورٹ میں چارج شیٹ داخل کی ہے۔

ڈی جے ہلی، کے جی ہلی کیس میں بڑی کامیابی ؛ این آئی اے چارچ شیٹ داخل کرنے میں ناکام،ملزمین کو ہائی کورٹ سے ضمانت

بنگلورو شہر کے کے جی ہلی اور ڈی جے ہلی تشدد کے سلسلے میں گزشتہ 10ماہ سے مقید نوجوانوں میں سے کرناٹک ہائی کورٹ نے بعض کی ضمانت اس بنیاد پر منظور کرلی ہے کہ اس معاملے کی جانچ میں لگی قومی تحقیقاتی ایجنسی کی طرف سے تحقیقاتی رپورٹ داخل کرنے میں غیر معمولی تاخیر ہوگئی۔

بنگلور وسیشن عدالت کا بڑا فیصلہ ؛ 12 برس کے بعددہشت گردی کے الزام سے مسلم شخص باعزت بری

بنگلور وکی سیشن عدالت نے دہشت گردی کے الزامات سے ایک مسلم نوجوان کو اس بنیاد پر ڈسچارج کردیا کہ استغاثہ عدالت میں ملزم کے خلاف اس کے مبینہ اقبالیہ بیان کے علاوہ کوئی دوسرا ثبوت پیش نہیں کرسکا۔

پٹرول، ڈیزل و پکوان گیس کی قیمتوں میں اضافہ کے خلاف گلبرگہ میں کانگریس کا انوکھا و منفرد احتجاج؛ فی لیٹر پٹرول کی خریدی پرہر گاہک کوکانگریس کی طرف سے 50روپئے واپس 

 شہر گلبرگہ میں 15جون کو پٹرول،ڈیزل اور پکوان گیس و ضروری اشیاء کی قیمتوں میں اضافہ  پر مرکزی حکومت کے خلاف ایک نہایت انوکھااور منفرد قسم کا احتجاج کیا گیا جس میں  ایک لیٹر پٹرول خریدنے والے موٹر سائیکل سواروں کو 50روپئے اسی وقت کانگریس کی جانب سے واپس کردئے گئے۔ اولڈ جیورگی ...

عشقِ رسولﷺ کے حصول کیلئے نعت خوانی بہترین ذریعہ ہے! مرکز تحفظ اسلام ہند کے زیر اہتمام عظیم الشان کل ہند نعتیہ مشاعرہ، برادران اسلام سے شرکت کی اپیل!

حضرت محمد مصطفیٰ صلی اللہ علیہ و سلم کی مدحت، تعریف و توصیف، شمائل و خصائص کے نظمی اندازِ بیاں کو نعت یا نعت خوانی یا نعت گوئی کہا جاتا ہے۔

کرناٹک میں پی یو سی نتائج کے اعلان پر روک؛رپیٹرس کو پاس کرنے کی عدالت سے درخواست

جاریہ سال میں  پی یو سی سال دوم طلبا کو امتحان کے بغیر پاس کرنے کا حکومت نے فیصلہ کر لیا ہے۔ اس کے خلاف ہائی کورٹ میں ان طلبا نے بھی عرضی دائر کی جو پچھلے امتحانات میں فیل ہوگئے ہیں۔ اس لئے ان کو رپیٹرس کہا جاتا ہے۔ عرضی میں انہوں نے عدالت سے درخواست کی ہے کہ اس سال تمام طلبا کو ...