بیلگاوی: سر چڑھ کے بولا پب جی کا نشہ۔ فون ریچارج نہ کرنے پر بیٹے نے کردیا باپ کا سر اور پیر تن سے جدا!۔ پولیس نے کیا قتل کے الزام میں بیٹے کو گرفتار

Source: S.O. News Service | Published on 10th September 2019, 11:18 AM | ریاستی خبریں |

بیلگاوی 10/ستمبر (ایس ا ونیوز) نوجوانوں اور خاص کرکے کالج میں زیرتعلیم طلبہ کے اندر پب جی گیم کا نشہ کس طرح عام ہوگیا ہے اور ایک بار اس نشے کا عادی ہوجانے والا کس حد جرم کا ارتکاب کرسکتا ہے، اس کا اندازہ اس بات سے لگایا جاسکتا ہے کہ اس گیم سے بازرکھنے کی کوشش کرنے پر بیٹے نے نہ صرف اپنے باپ کا سر قلم کردیا، ساتھ میں اس کے دونوں پیر بھی کاٹ ڈالے۔

موصولہ اطلاعات کے مطابق یہ وحشت ناک واقعہ بیلگاوی کے ایک چھوٹے سے گاؤں کاٹکی میں پیش آیا ہے، جہاں شنکر اپّا نامی شخص کا بیٹا رگھویر کمّار پچھلے کچھ مہینوں سے پب جی گیم کے نشے کا اس قدر عادی ہوگیا تھا کہ اس نے کالج جانا تک بند کردیا تھا۔ وہ کوئی کام دھندہ بھی نہیں کررہا تھا۔رات دن بس پب جی کھیلنے میں مصروف رہتا تھا۔ باپ کی طرف سے فہمائش اور ڈانٹ کا اس پر کوئی اثر ہی نہیں ہورہاتھا۔ اس گیم سے باز رکھنے کی تمام تدابیر ناکام ہوگئی تھیں جس کی وجہ سے شنکراپّا بہت ہی فکر مند تھا۔

 بتایاجاتا ہے کہ اتوار کی رات کو رگھویر کمّار نے اپنے والد سے مطالبہ کیا کہ اسے فون ریچارج کرنے کے لئے فوری طور پر پیسے دئے جائیں۔ شنکراپّا نے پیسے دینے سے انکار کرنے کے ساتھ ہی رگھویر کا فون بھی چھین کر اپنے پاس رکھ لیا۔اس سے رگھویر بے انتہا غصے کاشکار ہوگیا اور جب گھر کے تما م لوگ گہری نیند سو گئے تو اس نے ایک تیز دھار دار ہتھیار سے پہلے اپنے باپ کا گلا کاٹا۔اس کے بعد سر کو جسم الگ کردیا۔ پھر دونوں پیر بھی کاٹ کر تن سے جدا کردئے اور اپنا فون لے کر کہیں فرار ہوگیا۔

  گھر والوں نے پیر کے دن علی الصبح اس خوفناک واردات کی اطلاع کاٹکی پولیس اسٹیشن کو دی تو افسران نے موقع پر پہنچ کر معائنہ کیااور ملزم کو تلاش شروع کردی۔پھر دوپہر کے وقت مفرور ملزم رگھویر کو گرفتار کرنے میں اسے کامیابی ملی۔ پولیس انسپکٹرشیوا نند کوجالگی کا کہنا ہے کہ مقتول شنکراپّا محکمہ پولیس کے لئے کام کیا کرتا تھا۔ وہ اپنے بیٹے رگھویرکی پب جی گیم کھیلنے کی لت کی وجہ سے بہت پریشان تھا۔بیٹے کوسمجھانے بجھانے کی تمام کوشش اور تدابیر ناکام ہوگئی تھیں۔ بالآخر اتوار کی رات کو شنکراپّا نے ریچارج کے لئے پیسے نہ دیتے ہوئے رگھویر کا فون ہی اپنے قبضے میں لیا تو وہ مشتعل ہوگیا اور اپنے باپ کا کام تمام کردیا۔

 پولیس کا کہنا ہے کہ تفتیش کے دوران رگھویر نے باپ کے قتل کا جرم قبول کرلیا ہے۔ اس معاملے کی مزید تحقیقات جاری ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

  مسلم متحدہ محاذ، جماعت اسلامی ہند اور کئی تنظیموں کے ایک نمائندہ وفدکا سابق وزیر اعظم ایچ ڈی دیوے گوڈا سے ملاقات اور شہریت ترمیمی بل   کی مخالفت اور دستور کے تحفظ میں تعاون کرنے کی اپیل

مسلم متحدہ محاذ، جما عت اسلامی ہند، سدبھاؤ نا منچ بورڈ آف اسلامک ایجوکیشن کرناٹک، ایف ڈی سی اے، ایس آئی او، اے پی سی آر  اور مومنٹ فار جسٹس جیسے ہم خیال تنظیموں کی قیادت میں مسلم نمائندوں کا ایک وفد 7 / دسمبر 2019  ء  بروز سنیچر، سابق وزیر اعظم شری ایچ ڈی دیوے گوڈا سے ملاقات کرتے ...

ہوناورمیں پریش میستا کی مشتبہ موت کوگزرگئے2سال۔ سی بی آئی کی تحقیقات کے باوجود نہیں کھل رہا ہے راز۔ اشتعال انگیزی کرنے والے ہیگڈے اور کرندلاجے کے منھ پر کیوں پڑا ہے تالا؟

اب سے دو سال قبل 6دسمبر کو ہوناور میں دو فریقوں کے درمیان معمولی بات پر شرو ع ہونے والا جھگڑا باقاعدہ فرقہ وارانہ فساد کا روپ اختیار کرگیا تھا جس کے بعد پریش میستا نامی ایک نوجوان کی لاش شنی مندر کے قریب واقع تالاب سے برآمد ہوئی تھی۔     اس مشکوک موت کو فرقہ وارانہ رنگ دے کر پورے ...

کاروار:ہائی وے توسیع کے لئے سرکاری زمین تحویل میں لینے پرمعاوضہ کی ادا ئیگی۔ ملک میں قانون وضع کرنے کے لئے ضلع شمالی کینرا بنا ماڈل

نیشنل ہائی وے66 توسیعی منصوبے کے لئے سرکاری زمینات کو تحویل میں لینے کے بعد خیر سگالی کے طورمعاوضہ ادا کرنے کی پہل ضلع شمالی کینرا میں ہوئی جس کی بنیاد پر نیشنل ہائی وے ایکٹ 1956میں ترمیم کرتے ہوئے ملک بھر میں تحویل اراضی پرمعاوضہ ادائیگی کا نیا قانون2017میں وضع کیا گیا ہے۔