کرناٹک میں چرچ پر حملہ: ہفتہ بھر بعد بھی کوئی گرفتاری نہیں، سرِ عام گھوم رہے ’بجرنگ دل‘ کے ملزمان

Source: S.O. News Service | Published on 5th December 2021, 11:28 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو، 5؍دسمبر (ایس او نیوز) کرناٹک کے شہر بیلور میں واقع ایک چرچ میں قدامت پسند ہندو تنظیموں سے وابستہ ایک گروہ زبردستی داخل ہو گیا اور وہاں موجود لوگوں پر تبدیلی مذہب کا الزام عائد کرتے ہوئے دھمکیاں دیں۔ این ڈی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق، اس واقعہ کو ایک ہفتہ ہو گیا لیکن اس معاملہ تاحال کوئی گرفتار عمل میں نہیں آئی، حالانکہ بجرنگ دل کے پانچ کارکنان کے خلاف مذہبی منافرت پھیلانے کے الزام میں ایف آئی آر درج کی گئی ہے۔ یہ واقعہ بنگلورو سے تقریباً 5 گھنٹے کی مسافت پر ’لائف ٹو دی نیشن منسٹریز‘ نامی چرچ میں پیش آیا تھا۔

خیال رہے کہ 28 نومبر کو بجرنگ دل کے 25 کارکان جس وقت چرچ میں داخل ہوئے تھے تو اس وقت وہاں دعائیہ تقریب چل رہی تھی۔ رپورٹ کے مطابق جن پولیس اہلکاروں کو صورت حال پر قابو پانے کے لئے بلایا گیا، انہیں حملہ آوروں پر لگام لگانے کے بجائے مبینہ طور پر بجرنگ دل کے کارکنان سے بات چیت کرتے ہوئے دیکھا گیا۔

چرچ کے ارکان کی شکایت کے بعد بیلور پولیس نے امن کو خراب کرنے کے الزام میں بجرنگ دل کے 5 افراد کے خلاف ایف آئی درج کی تھی۔ ایک اعلیٰ پولیس عہدیدار نے قانون کارروائی کرنے کے بجائے ایک امن اجلاس طلب کیا، جس میں دنوں فریقین سے رسمی طور پر یقین دہائی کرائی کہ مستقبل میں کوئی تنازعہ نہیں ہوگا۔ حالانکہ ویڈیو میں بجرنگ دل کے کارکنان کو مشتعل ہو کر چرچ میں داخل ہوتے ہوئے دیکھا جا سکتا ہے۔

ادھر چرچ سے وابستہ لوگوں نے جبری تبدیلی مذہب کے الزامات سے انکار کیا ہے۔ چرچ کے پادری سریش پال نے بھی الزامات کی تردید کرتے ہوئے کہا کہ چرچ گزشتہ تین سالوں سے فعال ہے اور یہ کوئی تبدیلی مذہب کی جگہ نہیں ہے۔ بجرنگ دل کے لوگ یہاں آئے، دھمکیاں دی اور لوگوں سے مار پیٹ کی کوشش کی۔

حال ہی میں کرناٹک کے وزیر اعلیٰ نے اسمبلی میں آئندہ سرمائی اجلاس کے دوران تبدیلی مذہب سے متعلق بل لانے کا وعدہ کیا ہے، جس کے بعد چرچوں پر حملوں کے کئی واقعات رونما ہوئے۔

ایک نظر اس پر بھی

ریاستی سرکاری نصاب کی غلطیوں کی تصحیح کےلئے متبادل نصابی کتب تیار کریں گے اور بچوں کو توہم پرستی اور اندھی تقلید سے بچائیں گے : دیونور مہادیو

آر ایس ایس کی سرکار اسکولی بچوں کو جو کچھ سکھانا چاہتی ہے وہ سکھائے ۔ لیکن ہم متبادل کے طورپر دستور کی تمہید، منشاء سمیت سب کچھ انہیں سکھانے کا کام کریں گے۔ ریاست کے مشہور و معروف کنڑا ادیب دیونورمہادیو نے ان خیالات کااظہار کیا۔

ملک میں ایک نہ ایک دن ’یکساں سول کوڈ‘ ضرور نافذ ہوگا، کرناٹک کے وزیرکوٹا سرینواس پجاری کا خیال

 کرناٹک کے سماجی بہبود کے وزیر کوٹا سرینواس پجاری نے بدھ کے روز کہا کہ متنازعہ یونیفارم (یکساں) سول کوڈ ایک نہ ایک دن ملک میں نافذ ہوگا۔ انہوں نے کہا، ’’بی جے پی یکساں سول کوڈ لانے کے لیے پرعزم ہے اور اسے نافذ کرنے جا رہی ہے۔ یہ بی جے پی ہی ہی ہے جس نے جموں و کشمیر میں دفعہ 370 کو ...

منگلورو : ملالی مسجد کے مقام پر دیوی موجود ہے - کیرالہ کے نجومی کا دعویٰ - ضلع انتظامیہ نے نافذ کیے امتناعی احکامات

ملالی میں واقع السید عبداللہ جامع مسجد میں تجدید نو کے دوران مندر کے باقیات پائے جانے کا دعویٰ کرتے ہوئے ہندو شدت پسند تنظیموں نے جو تنازعہ کھڑا کیا ہے اس میں اب مزید پیچیدگی پیدا ہوگئی ہے ، کیونکہ ہندو مذہبی عقیدہ کے مطابق کیرالہ سے بلائے گئے علم زائچہ کے ماہر اور نجومی ...

شیموگہ ضلع میں بارش کی وجہ سے 40 کروڑ کا نقصا ن

پچھلے ہفتے ہوئی مسلسل بارش سے ضلع میں تقریباً 40کروڑ روپئے کا نقصان ہونے کا اندازہ لگایاگیاہے۔وزیر اعلیٰ کے ساتھ اس سلسلے میں تبادلہئ خیال کرنے کے بعد ضروری معاوضہ دلانے کیلئے اقدامات کئے جائیں گے۔یہ بات ضلع نگران کار وزیر نارائن گوڈانے کہی۔