شراب کی آن لائن فروخت کامنصوبہ ریاستی حکومت کے زیر غور نہیں:ریاستی ایکسائز وزیر ایچ ناگیش

Source: S.O. News Service | Published on 7th September 2019, 10:45 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو،7؍ستمبر(ایس او  نیوز) گھر کے دروازے تک جاکر لوگوں کو شراب مہیا کرانے کاکوئی منصوبہ ریاستی حکومت کے زیر غور نہیں ہے۔ اس بات کی وضاحت ریاستی ایکسائز وزیر ایچ ناگیش نے کی۔آج وکاس سودھا میں ایکسائز محکمہ کے کام کاج کا جائزہ لینے کیلئے منعقدہ اجلاس میں شرکت کے بعد اخباری نمائندوں سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ کل میں نے جو بیان دیاتھا اسے توڑ مروڑ کر پیش کیا گیا ہے۔ میں نے کہا تھا کہ گجرات میں آن لائن شراب فروخت کی جارہی ہے۔ اس نظام کے ریاست میں رائج کرنے پر غور کیا جارہا ہے۔ میری بات کاغلط مطلب نکالا گیا اور کہا گیا کہ ریاستی حکومت صارفین کو ان کے گھروں تک جاکر شراب فروخت کرنے کا منصوبہ رکھتی ہے۔ انہوں نے واضح کیا کہ ریاستی حکومت کا ایسا کوئی منصوبہ نہیں ہے۔شراب کی آن لائن فروخت کے تعلق سے ریاستی وزیر کا بیان شوشیل میڈیا پر وائرل ہوگیا تھا۔

ایک نظر اس پر بھی

کرناٹک کے وجیا پور میں شہریت ترمیمی قانون کے خلاف زبردست احتجاجی مظاہرہ۔سیاسی و سماجی لیڈروں نے کیا 2لاکھ سے زائد افرادسے خطاب 

شہریت سے متعلقہ سی اے اے، این آر سی اور این پی آر قوانین کے خلاف”دستور بچاؤ“ عنوان کے تحت ایک زبردست احتجاجی مظاہرہ وجیاپور میں منعقد کیا گیا جس سے خطاب کرتے ہوئے سابق مرکزی وزیر یشونت سنہا نے کہا کہ ایسے قوانین کا نفاذ کرتے ہوئے مرکزی حکومت ملک کے آئین کی دھجیاں اڑانے کا کام ...

کرناٹک کے اقلیتی بجٹ میں 40فیصد تک کٹوتی کے آثار،2019/20کے 2950کروڑ کے مقابلے 2000کروڑ بھی مل گئے تو غنیمت

ایسے مرحلے میں جبکہ وزیر اعلیٰ بی ایس ایڈی یورپا کی طرف سے ریاستی بجٹ کی تیاری کا عمل تیزی سے جاری ہے۔ مختلف سرکاری محکموں کے افسروں سے وزیر اعلیٰ کی میٹنگوں کا سلسلہ بھی تکمیل کی طر ف گامزن ہے۔

انڈر ورلڈ ڈان روی پجاری کو بنگلورو لایا گیا؛ عدالت میں پیش ، 14؍ دنوں تک پولیس کی حراست میں

متعدد مقدمات میں پولیس کو مطلوب انڈرورلڈ ڈان روی پجاری کو پیر کی صبح اولین ساعتوں میں کرناٹکا پولیس کی ٹیم سنیگیل سے بنگلورو لے آئی۔ بنگلورو آمد کے بعد اسے شہر کی عدالت میں پیش کیا گیا جہاں اسے 14؍ دن کی پولیس حراست میں دیا گیا۔

ٹرمپ کے بھارت دورے سے ملک کو کوئی فائدہ نہیں : حزب مخالف لیڈر سدرامیا

امریکہ کے صدر ڈونالڈ ٹرمپ کے بھارت دورے سے ہمارے ملک کو کوئی فائدہ نہیں ہے۔ مودی بھی جب امریکہ کا دورہ کئے تھے تو  کیا ہمارے ملک کو فائدہ ہواتھا ؟ ۔ ودھان سبھا میں حزب مخالف لیڈر سدرامیا نے ٹرمپ کے دورے کو لے کر سوال کیا۔

آئین نے ہی ایک چائے بیچنے والے کو وزیر اعظم کا عہدہ دیا؛ بیدر ضلع کے بسواکلیان میں سیاہ قوانین کے خلاف جلسہ عام ۔ سابق وزیر اعلیٰ سدارامیا و دیگر کا خطاب

بیدر شہر کے تعلقہ اسٹیڈیم میں کل شام جوائنٹ ایکشن کمیٹی بسواکلیان کے زیر اہتمام مرکزی حکومت کی جانب سے نافذ کئے گئے سیاہ قوانین سی اے اے ، این آر سی ، این پی آر کے خلاف جلسہ عام منعقد ہوا۔جس میں بسواکلیان کے علاوہ ضلع بیدر ، کلبرگی ، عمرگہ ، سولہ پور، لاتو، نیلنگہ سے بھی عوام ...