حکومت کرناٹک نے کانگریس کے میکے ڈاٹو پدیاترا پرعائد کی پابندی

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 13th January 2022, 12:56 AM | ریاستی خبریں |

بنگلور 12 جنوری (ایس او نیوز) ہائی کورٹ اوربعض بی جے پی ارکان اسمبلی کی تنقید کے بعد  بسواراج بومائی کی زیرقیادت بی جے پی حکومت نے بدھ کے روز کووڈ 19 کی پہلے سی بگڑتی صورت حال  کا حوالہ دیتے ہوئے کانگریس کے میکے ڈاٹو پدیاترا پر پابندی لگا دی ہے۔

چیف سکریٹری پی روی کمار نےبدھ دیر شام ایک اعلیٰ سطحی میٹنگ کے بعد حکم نامے پر دستخط کیے جس کی صدارت بومئی نے کی تھی۔ ہائی کورٹ  کی جانب سے کووڈ 19 کے بڑھتے ہوئے کیسوں کے درمیان چوتھے دن میں داخل ہونے والی پد یاترا کی اجازت دینے پر حکومت کی کھنچائی کے چند گھنٹے بعد ہی حکومت نے اس پدیاترا پر پابندی عائد کرنے کا فرمان جاری کیا۔

چیف سکریٹری کی طرف سے  جاری کئے گئے حکم  نامہ میں کہا گیا ہے کہ’’نما نیرو نمما حقو‘‘ پدیاترا میں حصہ لینے کے لیے تمام بین الاضلاع یعنی کرناٹک کے اندر اور ضلع رام نگر کے اندر گاڑیوں اور افراد کی نقل و حرکت اگلے حکم نامہ تک ممنوع رہے گی۔

کانگریس کی طرف سے شروع کی گئی اس پدیاترا کے بعد حکومت پر کام کرنے کا زبردست دباؤ تھا۔ اتوار سے جاری پدیاترا کے بعد 134 کانگریس لیڈروں اور حامیوں کے خلاف تین ایف آئی آر درج کی گئی ہیں۔ یہ ریلی 19 جنوری کو بنگلورو میں ختم ہونے والی تھی۔

حکومت نے تمام ڈپٹی کمشنروں، پولیس سپرنٹنڈنٹس، پولیس کمشنروں اور ٹرانسپورٹ کمشنر سے کہا ہے کہ وہ حکم پر سختی سے عمل درآمد کو یقینی بنائیں۔

ہائی کورٹ کے مشاہدے کے پیش نظر صبح ہی حزب اختلاف کے قائد سدارامیا پارٹی کے ساتھیوں کے ساتھ بات چیت کرنے ریلی سے نکل کر واپس بنگلورپہنچے، جہاں نامہ نگاروں سے بات چیت کرتے ہوئے سدارامیا نے شروع میں کہا کہ پارٹی نتائج کا سامنا کرنے کے لیے تیار ہے۔ بعد میں، انہوں نے کہا کہ کانگریس ہائی کورٹ کے حکم کا احترام کرے گی۔ انہوں نے کہا کہ دیکھتے ہیں کہ عدالت کیا حکم دیتی ہے۔ یہ پوچھے جانے پر کہ کیا کانگریس نے پدیاترا کی اجازت لی تھی، انہوں نے کہا: "اجازت لینے کے بعد کوئی احتجاج نہیں کیا جاتا۔"

بتایاجارہا ہے کہ سدارامیا اورڈی کے شیوکمار دونوں نے کے پی سی سی لیگل سیل کے سربراہ اور سابق ایڈیشنل ایڈوکیٹ جنرل اے ایس پوننا کے ساتھ اس پر تبادلہ خیال کیا ہے، جو ممکنہ طور پر عدالت میں بحث کریں گے کہ احتجاج ایک بنیادی حق ہے۔

ذرائع سے پتہ چلا ہے کہ کانگریس ایک ایسے منصوبے پر بھی غور کر رہی ہے جہاں صرف سدارامیا، ڈی کے شیوکمار اور کچھ دوسرے لیڈران پدیاترا کو جاری رکھ سکیں۔

ایک نظر اس پر بھی

کانگریس لیڈران نے مرکزی حکومت پر لگایا پسماندہ ہندو سماج اورمظلوم طبقے کی ہتک کرنے کا الزام

ہرسال یوم جمہوریہ کی تقریب میں ریاستوں کی نمائندگی کرنےوالی نمائش  کا اہتمام ہوتاہے۔ اس مرتبہ  ریاست کیرلا کی جانب سےبھیجے گئے انقلابی شخصیت ، سماجی مصلح شری نارائن گرو مجسمہ کو نمائش میں شامل کرنے سے مرکزی حکومت نے انکار کیاہے۔ اس طرح  مرکزی حکومت نے بھارت کی تاریخی ، اہم ...

جمعیۃ علماء کرناٹک کاانتخابی اجلاس : مولانا عبدالرحیم رشیدی جمعیۃ علماء کرناٹک کے صدر منتخب

مسجد حسنیٰ شانتی نگر بنگلور میں جمعیۃ علماء کرناٹک کا انتخابی اجلاس جمعیۃ علماء ہندکے جنرل سکریٹری مولانامفتی سید معصوم ثاقب قاسمی کی نگرانی میں منعقد ہوا جس میں مولانا عبدالرحیم رشیدی کو مجلس منتظمہ کے اراکین نے اتفاق رائے سے اگلی  میعاد  کیلئے صدر منتخب کیا ۔ مولانا ...

کرناٹک کانگریس نے کووڈ کے بڑھتے ہوئے معاملوں کے درمیان میکے ڈاٹو پیدل مارچ کو کردیا معطل؛ سدرامیا نے کورونامعاملوں میں اضافے کےلئے بی جے پی کو قرار دیا ذمہ دار

میکے ڈاٹو واٹر پروجکٹ کا مطالبہ  لے کر شروع کی گئی کانگریس کی میکے  ڈاٹو پیدل ریلی کو کانگریس نے  کووڈ کے بڑھتے ہوئے معاملوں کو دیکھتے ہوئے عارضی طور پر معطل کرنے کا اعلان کیا ہے۔

کرناٹکا ہائی کورٹ نے کانگریس کو پدیاترا نکالنے کا اجازت نامہ عدالت میں داخل کرنے کی دی ہدایت

کرناٹکا ہائی کورٹ نے کرناٹک پردیش کانگریس کمیٹی (کے پی سی سی) سے کہا کہ وہ 14 جنوری تک میکے ڈاٹو پدیاترا نکالنے کے لئے حکومت کی طرف سےلئے گئے اجازت نامہ کو عدالت میں پیش کرے۔ عدالت نے پوچھا کہ کیا کے پی سی سی نےرام نگر ضلع کے میکے ڈاٹو میں کاویری ندی کے پار متوازن آبی ذخائر کا ...