یوم عہد کے لئے وزیراعلیٰ نے اجازت دی ہے آج پولیس بلاوجہ رکاوٹ کھڑی نہ کرے: ڈی کے شیوکمار

Source: S.O. News Service | Published on 2nd July 2020, 11:16 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو،2؍جولائی(ایس او نیوز) کرناٹک پردیش کانگریس کمیٹی (کے پی سی سی) صدر ڈی کے شیوکمار آج بروز جمعرات 2/جولائی باقاعدہ عہدہ سنبھال رہے ہیں۔ اس کے لئے وزیراعلیٰ بی ایس ایڈی یورپا نے اجازت بھی دی ہے۔

اس پروگرام کو ڈجیٹل ٹکنالوجی کے ذریعہ نشر کیا جائے گا جس کا انتظام ریاست کے مختلف شہروں میں کیا جائے گا لیکن چند مقامات پر پولیس رکاوٹیں کھڑی کررہی ہے۔ اس پر اپنا رد عمل ظاہر کرتے ہوئے شیوکمار نے میڈیا کو بتایا کہ اس پروگرام کے لئے وزیراعلیٰ نے اجازت دی ہے۔ انہوں نے خود ریاستی وزیر داخلہ امور، شہر کے پولیس کمشنر اور ڈی آئی جی سے بھی بات کی ہے۔ اس کے باوجود چند مقامات پر پولیس تحریری درخواست طلب کررہی ہے جس کی ضرورت نہیں۔

میڈیا کے ذریعہ انہوں نے پارٹی ورکرس اور لیڈروں سے کہا ہے کہ کورونا وائرس کی وجہ سے اس پروگرام میں داخلہ صرف محدود لیڈروں کا ہوگا اورداخلہ بذریعہ پاس ہوگا۔ پروگرام کے دوران کانگریس بھون کی ذمہ داری پولیس اور سیوادل کو دے دی گئی ہے۔ دعوت ناموں اور پاس کے بغیر داخلہ نہیں ہوگا۔ اس لئے کل کانگریس بھون نہ آئیں، بلکہ اپنے اپنے مقامات ہی پر ڈجیٹل پروگرام کو دیکھیں اور انہیں آشیر واد دیں، اس کے بعد ایک مس کال ضرور دیں جس کا نمبر ویب سائٹ پردستیاب ہے۔ میڈیا والوں کا داخلہ بھی محدود ہوگا۔

ایک نظر اس پر بھی

کیرالہ میں پیش آیا چٹان کھسکنے کا خطرناک حادثہ۔ 15ہلاک اور60سے زائدافراد ہوگئے لاپتہ۔ ملبے میں دب گئیں 30جیپ گاڑیاں 

کیرالہ کے مشہور تفریحی مقام ’مونار‘ سے قریب ’ایڈوکی‘ میں چٹان کھسکنے کا ایک خطرناک حادثہ پیش آیا جس میں تاحال 15افراد ہلاک ہونے اور 60سے زیادہ لوگ لاپتہ ہونے کے علاوہ 30جیپ گاڑیاں چٹان کے ملبے میں دب کر رہ جانے کی خبر ہے۔

کورونا کی وبا اور دعوت رجوع الی اللہ، اس عنوان کے تحت جماعت اسلامی ہند، کرناٹک کی 15 روزہ مہم کا آغاز

  کورونا کی وبا سے اس وقت پوری انسانیت پریشان ہے۔ اس مرض کا مقابلہ کرنے کیلئے حفاظتی اور احتیاطی تدابیر اختیار کرتے ہوئے لوگ اپنے رب سے رجوع ہوں۔ کورونا جیسی بیماریوں پر قابو پانے کیلئے طبی علاج کے ساتھ روحانی اور اخلاقی طاقت کا ہونا بھی ضروری ہے۔

کرناٹک سے 40 امیدوار سیول سرویسز امتحان میں کامیاب

کرناٹک سے زائداز 40 امیدواروں نے 2019 کے یونین پبلک سرویس کمیشن (یو پی ایس سی ) سیول سرویس امتحان میں کامیابی حاصل کی اور اب آئی اے ایس ، آئی ایف ایس اور آئی پی ایس اور دیگر میں ملازمت حاصل کریں گے۔