بنگلور میں زرعی قوانین بل کے خلاف کانگریس کا زبردست احتجاج؛ راج بھون چلو ریلی کو راستہ میں ہی روک دیا گیا؛ سدرامیا سمیت کانگریس لیڈران گرفتار

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 20th January 2021, 8:04 PM | ریاستی خبریں |

بنگلور20 جنوری (ایس او نیوز) کسانوں کی حمایت میں اور مرکزی حکومت کی طرف سے جاری کردہ تینوں زرعی قوانین  کی مخالفت میں جس طرح ملک گیر سطح پر احتجاج کا سلسلہ جاری ہے، اُسی  کے حصہ کے طور پر   کانگریس نے آج بدھ کو بنگلور میں زبردست احتجاجی ریلی نکالی جس میں ہزاروں احتجاجیوں نے شرکت کرتے ہوئے زرعی قوانین کو واپس لینے کا مطالبہ کیا۔  فریڈم پارک سے  راج بھون چلو ریلی کے دوران  پولس نے  راستے میں ہی احتجاجیوں کو  روک دیا اور کانگریس لیڈران کو اپنی تحویل میں  لیتے ہوئے ریلی کو آگے بڑھنے نہیں دیا۔

کے پی سی سی صدر ڈی کے شیوکمار اور  سابق وزیراعلیٰ سدرامیا سمیت کئی کانگریسی کارکنان پر مشتمل ریلی  کو پولس نے بنگلور کی مہارانی کالج کے قریب روک دیا اور  بی ایم ٹی سی بس پرسوار کراتے ہوئے اپنے ساتھ لے گئی، جبکہ دیگر احتجاجیوں کو دیگر بسوں پر سوار کراتے ہوئے  دوسری جانب روانہ کیا گیا۔

احتجاجیوں نے پہلے فریڈم پارک میں جمع ہوکر زبردست  احتجاجی جلسہ کیا تھا پھر وہاں سے  کانگریس لیڈران کی قیادت میں  راج بھون کی طرف  آگے بڑھنے لگے تھے، مگر پولس نے  مداخلت کرتے ہوئے  ریلی کو  آگے بڑھنے نہیں دیا۔

فریڈم پارک میں منعقدہ احتجاجی جلسہ سے خطاب کرتے ہوئے  ڈی کے شیوکمار نے تینوں زرعی قوانین کو  موت سے تعبیر کرتے ہوئے کہا کہ مرکزی حکومت ان قوانین کے ذریعے کسانوں کو  موت کے منہ میں دھکیلنا چاہتی ہے۔ شیوکمار نے کہا کہ  بنگلور میں  احتجاج میں شریک ہونے کے لئے ریاست بھر سے کارکنان اور کسان بنگلور پہنچ رہے تھے مگر   احتجاجیوں کو بنگلور میں داخل ہونے نہیں دیا گیا  انہوں نے بتایا کہ احتجاجیوں کو مختلف علاقوں سے پولس نے اپنی تحویل میں لیا ہے ، اس موقع پر شیوکمار  نے ہدایت جاری کی  کہ جس سرحد پر بھی احتجاجیوں کو روکا جاتا ہے، وہ وہیں احتجاجی دھرنے پر بیٹھ جائیں ۔

فریڈم پارک میں ہزاروں کی تعداد میں احتجاجی جمع ہوئے تھے۔ڈی کے شیوکمار نے کہا کہ کسانوں کی حمایت میں منعقدہ آج کا احتجاج ایک نئی تاریخ رقم کرے گا،  احتجاجیوں سے خطاب کرتے ہوئے سدرامیا نے کانگریسی کارکنوں سے کہا کہ وہ جیلوں میں جانے کے لئے تیار رہیں، انہوں نے کہا کہ ہم جیلوں میں جانے کے لئے تیار ہیں مگر مودی حکومت کو   تینوں زرعی قوانین کو کسی بھی حالت میں واپس لینا ہوگا۔

احتجاجی جب فریڈم پارک سے راج بھون کی طرف آگے بڑھنے لگے تو  مہارانی کالج کے خلاف پولس نے بیریکیڈ ڈال کر احتجاجیوں کو آگے بڑھنے سے روک دیا، اس موقع پر احتجاج میں شامل ارکان اسمبلی سومیا ریڈی ، انجلی نمبالکر اور پولس کے درمیان تکرار شروع ہوگئی، اس دوران جب پولس  احتجاجیوں کو اپنی کسٹڈی میں لینے کے لئے آگے بڑھی تو دھکا مکی میں  انجلی نمبالکر نیچے گرپڑی۔ موقع پر موجود پولس اہلکاروں نے انہیں سہارا دینے کے ساتھ ساتھ پانی بھی پلایا۔

فریڈم پارک میں جمع ہونے سے پہلے کانگریس کے سینکڑوں کارکنان نے  کرناٹکا پردیش کانگریس کمیٹی صدر ڈی کے شیوکمار اور کسانوں کے لیڈران کی قیادت میں  میجسٹک کے سنگولی رائینّا  مجسمہ کے  قریب سے ریلی نکالی جس کے نتیجے میں  کئی راستوں پر ٹریفک جام رہا۔

اخبارنویسوں سے گفتگو کرتے  ہوئے ڈی کے شیوکمار نے بتایا  کہ  یہ احتجاج کانگریس کا احتجاج نہیں بلکہ کسانوں کا احتجاج ہے، کانگریس صرف کسانوں  کے احتجاج کی حمایت میں کھڑی ہے۔ آگے بتایا کہ پولس نے بنگلور، ٹمکور، رام نگرم اور دیگر اضلاع میں  کسانوں کو احتجاج میں شریک ہونے سے روکا ہے اور حکومت نے کسانوں کو احتجاج میں شریک ہونے نہ دے کر  ان  کی بے عزتی کی ہے۔ میں اس حرکت کی سخت مذمت کرتا ہوں۔ انہوں نے کہا کہ ہمارا احتجاج اُس وقت تک جاری رہے گا جب تک کہ مرکزی حکومت ان تینوں قوانین کو واپس نہیں لیتی۔

 

 

ایک نظر اس پر بھی

ریاست کے دو الگ الگ مقامات پر بڑی مقدار میں دھماکہ خیز اشیاء ضبط

بیلگام اور یادگیری ضلع کے دو الگ الگ مقامات پر بہت بڑی مقدار میں دھماکہ خیز اشیا ء کو پولس  ضبط کیا ہے۔ بیلگام ضلع کے ہونگا میں 6675کلو گرام اور یادگیری ضلع کے کیمباوی میں 750کلو گرام دھماکہ خیز اشیاء ضبط کرلینے کی پولس ذارائع نے جانکاری دی ہے۔  

کرناٹک میں ایس ایس ایل سی  طلباء کیلئے بڑی سہولت۔ ہر پرچہ میں ایک نمبر کے 30 سوالات شامل رہیں گے

رواں سال میں ایس  ایس ایل سی امتحان  لکھنے والے طلبہ کو ایک بہت بڑی راحت فراہم کرتے ہوئے کرناٹکا سکینڈری ایگز امنیشن بورڈ(  کے ایس ای ڈی) نے دسویں جماعت کے پر چہ سوالات کی ساخت کو اس قدر آسان بنانے کا فیصلہ کیا ہے کہ اس سے طلباء  کو کم از کم در کار پاسنگ مارکس آسانی سے مل جا ئیں گے ...

ریاستی بی جے پی کے 6؍ وزراء  کی عرضی مستر دکروانے کا نگریس عرضی داخل کرے گی 

ریاستی بی جے پی وزیر کی سیکس ویڈیو وائر ل ہونے کے معاملہ میں بی جے پی کے  6؍  وزراء  نے عدالت میں جو عرضی داخل کی ہے ان وزراء کے خلاف اس ویڈیو کے سلسلہ  میں میڈیا یا  سوشیل میڈیا پرکوئی تبصرہ یا خبر شائع کرنے پر پابندی عائد کی جائے۔

کرناٹک کےسابق وزیر  رمیش جار کی ہولی سی ڈی معاملہ میں نیا موڑ ، دنیش کلہکی  نے کیس واپس لینے کاكيا فیصلہ 

کرناٹک کے سابق وزیر  رمیش جارکی ہولی کی رنگ رلیوں کے تعلق سے وائرل سی ڈی معاملہ کو اب نیا موڑ دے دیا گیا ہے۔  سو شیل اکٹی  ویسٹ  اور شہری حقوق تحریک کمیٹی کے صدر دنیش کلہکی  نے رمیش  جار کی ہولی کے خلاف داخل کردہ  شکایت واپس لینے کا فیصلہ کرلیا ہے اور اس سلسلہ میں پولیس تھانہ میں ...

کیا اننت کمارہیگڈے  بیمار ی کے چلتے سرگرم سیاست سے علاحیدہ ہونگے  ؟:کیا اگلے انتخابات میں بی جےپی کا نیا امیدوار میدان میں اُترے گا ؟

اترکینرا کے رکن پارلیمان اننت کمار ہیگڈے آج کل بیمار چل رہے ہیں۔ اننت کمار بیمار کیا ہوئے ان  کے حمایتیوں میں بحث  چل پڑی  ہےکہ  کیا اننت کمار ہیگڈے  بیماری کے بہانے اگلے انتخابات میں سیاست سے کنارہ کشی اختیار کریں گے؟ اسی طرح  بی جے پی کے اندر بھی یہ بحث  جاری ہےکہ انتخابات ...

ممبئی: حافظ قرآن سہا آرمار نے یونیورسٹی میں شاندار کامیابی، 2 گولڈ میڈل سمیت 5؍اعزاز

کرناٹک کے ساحلی علاقے سے تعلق رکھنے والی ممبئی کے تعلیمی ادارے ’انجمن اسلام کے بیگم جمیلہ حاجی عبدالحق کالج آف ہوم سائنس‘ کی طالبہ سوہا معظم ارمار نے ’بی ایس سی، ہوم سائنس‘ میں ’ایس این ڈی ٹی ویمنس یونیورسٹی‘ میں اول مقام حاصل کیا ہے۔