کرناٹک کے سنئیر کانگریسی لیڈر روشن بیگ نے مسلمانوں کو دیا ضرورت پڑنے پر بی جے پی سے ہاتھ ملانے کا مشورہ

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 21st May 2019, 11:35 PM | ریاستی خبریں |

بنگلور:21 /مئی( ایس او  نیوز) سینئر کانگریس لیڈر، کرناٹک کے سابق وزیر  اور شیواجی نگر کے رکن اسمبلی آر روشن بیگ نے ایگزٹ پول پر اپنا تبصرہ پیش کرتے ہوئے مسلمانوں  کو مشورہ دیا  کہ وہ حالات سے سمجھوتہ کرلیں اور کسی ایک پارٹی کے پیچھے  نہ رہیں۔ انہوں نے مسلمانوں سے  کہا کہ ضرورت پڑی تو وہ بی جے پی سے ہاتھ ملائیں مگر  کسی ایک سیاسی جماعت  کے دم چھلے بن کر نہ رہیں۔ انہوں نے لوک سبھا کے لئے کرناٹک میں صرف ایک سیٹ مسلمانوں کو دینے پر بھی  پارٹی سے سخت ناراضگی ظاہر کی۔ روشن بیگ نے  اپنے بیان میں  کے پی سی سی صدر دنیش گنڈوراو کو فلاپ شو کا صدر قرار دیا۔

 لوک سبھا انتخابات کے ایگزٹ پول پرتبصرہ کرتے ہوئے روشن بیگ نے  سابق وزیر اعلیٰ اورکانگریس لیجس لیچر پارٹی لیڈر سدارامیا، اے آئی سی سی جنرل سکریٹری انچارج کرناٹک کے سی وینو گوپال اور کے پی سی سی صدر دنیش گنڈو راؤ کو اپنی شدید تنقید کانشانہ بنایا۔  روشن بیگ کے  اپنی ہی پارٹی لیڈران کو تنقید کا نشانہ بنانے پر  ریاست کے سیاسی حلقوں میں غیر معمولی ہلچل مچ گئی ہے اور ریاست کے عوام   شبہ ظاہر کررہے ہیں کہ آیا روشن بیگ بی جے پی سے ہاتھ ملانے والے تو نہیں ہیں۔  مگر  روشن بیگ نے واضح کیا کہ ان کا بیان کانگریس پارٹی کے خلاف ہرگز نہیں ہے بلکہ کانگریس کے امور پر غالب ان موقع پرستوں کے خلاف ہے جو اپنے مقام ومرتبے کا غلط استعمال کرتے ہوئے کھلے عام عہدوں کا دھندہ کررہے ہیں۔

جب میڈیا کے ایک نمائندے نے اُن سے سوال کیا کہ کیا وہ آنے والے دنوں میں کانگریس سے علحدگی اختیار کریں گے تو بیگ نے کہا کہ اگر ضرورت پڑی تو وہ کانگریس کو چھوڑ نے کا فیصلہ لے  سکتے ہیں۔ روشن بیگ نے کہا کہ" اگر ضرورت پڑی تو مجھے ایسا ہی کرنا پڑے گا کیونکہ ہم (مسلمان) بے عزتی برداشت کرکے اور ذلت کے ساتھ کسی پارٹی میں نہیں رہ سکتے۔ ہم  عزت کے ساتھ جینے والے لوگ  ہیں، جہاں ہمیں عزت نہیں ملے گی ہم وہاں رہنا پسند نہیں کریں گے، ہم کو پیار محبت سے کوئی بٹھائے  تو ہم بیٹھیں گے۔" 

روشن بیگ کا کہنا ہے کہ  پچھلے کچھ دنوں سے کانگریس کی ریاستی قیادت کی طرف سے دانستہ طور پر اقلیتی طبقے کو نظر انداز کیا جارہا ہے ۔ انہوں نے  ایگزٹ پول میں کانگریس کے ناقص مظاہرے کا  حوالہ دیتے کہا کہ اگر کانگریس پارٹی کا مظاہرہ ایگزٹ پولس کے مطابق خراب رہا تو اس کے لئے سدارامیا، وینو گوپال اور دنیش گنڈو راؤ ذمہ دار ہوں گے۔سدارامیا کو ایک مغرور اور گھمنڈی سیاستدان قرار دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ سدارامیا نے اپنی انا کی خاطر بارہا پارٹی کے مفادات کو نقصان پہنچایا ہے۔دنیش گنڈو راؤ کو ایک ناکام کے پی سی سی صدر قرار دیتے ہوئے روشن بیگ نے کہا کہ لوک سبھا انتخابات میں اگر کانگریس پارٹی کا مظاہرہ ناقص رہا تو اس کے لئے دنیش گنڈو راؤ بھی برابر کے ذمہ دارہوں گے۔اے آئی سی سی جنرل سکریٹری وینوگوپال پر سخت تنقید کرتے ہوئے روشن بیگ نے انہیں ایک مسخرہ قرار دیا اور کہا کہ ان تینوں نے مل کر ریاست میں کانگریس کو غیر معمولی نقصان پہنچایا ہے۔

روشن بیگ کے اس بیان نے آج صبح سے نہ صرف صوبائی بلکہ قومی میڈیا میں سیاسی ہلچل پیدا کردی۔کانگریس کی ریاستی قیادت میں ان کے اس بیان پر فوراً کارروائی کرتے ہوئے روشن بیگ کے نام وجہ بتاؤ نوٹس جاری کردیا گیا اور 7 دن میں  جواب دینے کی ہدایت دی گئی۔ اس نوٹس پر بھی ٹویٹر کے ذریعہ اپنا سخت رد عمل ظاہر کرتے ہوئے  روشن بیگ نے کہا کہ وہ اس نوٹس کا جواب دینا تو دور،  دیکھنابھی پسند نہیں کریں گے۔

ایک نظر اس پر بھی

بنگلورو میں نااہل قراردئیے ارکان اسمبلی بی جےپی میں شامل : ضمنی انتخابات میں 13ارکان کو پارٹی نےدیا ٹکٹ

ملیشور میں واقع بی جےپی دفتر کے سامنے منعقد ہوئے پروگرام میں وزیر اعلیٰ بی ایس یڈیورپا کی موجودگی میں نااہل قرار دئیے گئے ارکان اسمبلی بی جے پی پرچم کو حاصل کرتے ہوئے بی جے پی میں شامل ہوئے۔

ریاست کے مختلف مہانگر پالیکا اور میونسپالٹی ، پنچایت کے انتخابی نتائج کا اعلان : منگلورو میں بی جےپی تو ڈاونگیرہ میں کانگریس

ریاست میں بی ایس یڈیورپا کی قیادت والی بی جےپی حکومت اقتدار سنبھالنےکےبعد ہوئے مقامی عوامی اداروں کے لئے 12 نومبر کو انتخابات ہوئے تھے ، جس کے نتائج 14نومبر کو اعلان کئے گئے۔ ظاہری طورپر ریاست کے جن مقامی اداروں  کے اعلان کئے گئے نتائج میں مہانگرپالیکا کے کل وارڈوں میں سے ...

مسلمان مسائل میں الجھنے کی بجائے حکمت و دانشمندی سے کام لیں -آئینی حقوق اور ذمہ داریوں کے متعلق مسلمانوں میں بیداری عام کرنا وقت کا تقاضا: کےرحمن خان

ہر دور میں مختلف حلقوں سے مسلمانوں کو الگ الگ مسائل میں الجھایا گیا ہے مسلمانو ں نے بھی حکمت او ر سمجھداری کے بغیر اپنے آپ کو ان مسائل میں الجھا لیا اب وقت آگیا ہے کہ مسلمان دانش مندی اور حکمت کے ساتھ ان پر لادے جانے والے مسائل کے متعلق فیصلہ لیں اور ان میں اپنے آپ کو نہ ...

باغی اراکین اسمبلی کو الیکشن لڑنے کی اجازت، مخلوط حکومت گرانے کی سازش کیلئے یڈ یورپا حکومت برخاست کی جائے:کانگریس

سپریم سپریم کورٹ نے کرناٹک کے 17باغی اراکین اسمبلی کو نااہل قرار دئے جانے والے اس وقت کے اسپیکر کے فیصلہ کو آج جائز ٹھہرایا ہے لیکن انہیں اسمبلی کے ضمنی انتخابات لڑنے کی اجازت دے دی ہے - کورٹ نے کرناٹک کے 17باغی اراکین اسمبلی کو نااہل قرار دئے جانے والے اس وقت کے اسپیکر کے فیصلہ ...