ہائی کورٹ کے احاطہ میں زمین دوز پارکنگ تعمیر کرنے کی تجویز

Source: S.O. News Service | Published on 12th September 2019, 11:13 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو؍12ستمبر(ایس او نیوز) ریاستی وزیر اعلیٰ بی ایس ایڈی یورپا نے کل گذشتہ کہا ہے کہ شہر میں پارکنگ کے بھاری مسئلہ پر قابو پانے کے سلسلہ میں ریاستی حکومت ہائی کورٹ کی عمارت کے سامنے والی خالی جگہ میں زیر زمین گاڑیوں کی پارکنگ تعمیر کرنے کے امکانات پر غور کرے گی، البتہ اس کارروائی کے دوران اس بات کی کوشش ضروری ہوگی کہ ماحول کو کسی بھی طرح کا نقصان ہونے نہ پائے-انہوں نے کہا کہ ریاست حکومت اس بات کی بھی عہد بند ہے کہ وہ کورٹ کے انتظامی بلاک کے لئے سہولیات فراہم کرنے کے سلسلہ میں 20 کروڑ روپئے کی لاگت سے کرناٹک کی چیف الیکٹرول دفتر کے مقام پر ایک چھ منزلہ عمارت تعمیر کرے گی-ریاستی وزیر اعلیٰ شہر میں میٹرو پالیٹن مجسٹریٹ کورٹ کی جدید انیکس کورٹ عمارت کا افتتاح کرنے اور اس کے دوسرے مرحلہ کے تعمیراتی کاموں کے لئے سنگ بنیاد رکھنے کے بعد خطاب کر رہے تھے-انہوں نے کہا کہ موجودہ ثالثی مرکز سے متصل ایک خندانی عدالت کی عمارت بھی کل 120 کروڑ روپئے کی لاگت سے تعمیر کی جائے گی، یہ عمارت زمین دوز احاطہ کے ساتھ 13 منزلہ رہے گی-ریاستی ہائلی کورٹ کے چیف جسٹس ابھے سرینواس اوکا نے بتایا کہ جدید عمارت میں چھ کورٹ ہال اور پارکنگ کی سہولت رہے گی جبکہ دوسرے مرحلہ میں تعمیر ہونے والی عمارت میں مزید نو کورٹ ہال شامل رہیں گے-انہوں نے بتایا کہ مجوزہ خاندانی عدالت کی عمارت میں منظورشدہ تمام 21 خاندانی عادلتوں کے لئے سہولت فراہم کی جائے گی، واضح رہے کہ اس وقت منظور شدہ خاندانی عدالتوں میں سے صرف سات ہی کام کر رہے ہیں -

ایک نظر اس پر بھی

سولیا: پہاڑی مہم جو ٹیم کا ایک رکن ہوگیا لاپتہ۔قریبی جنگلات میں جاری ہے تلاشی مہم 

بنگلورو کی ایک کمپنی کے ملازمین کی ٹیم سبرامنیا میں واقع پہاڑی ’کمارا پروتا‘ کو سر کرنے کی مہم پر نکلی تھی۔ لیکن واپسی کے وقت ٹیم کا ایک رکن جنگلات میں اچانک لاپتہ ہوگیا ہے، جس کی شناخت سنتوش (25سال) کے طور پر کی گئی ہے۔

سیلاب متاثرین سے وزیر اعظم کو کوئی ہمدردی نہیں منڈیا میں منعقدہ پرتیبھا پرسکار کے جلسہ سے سابق وزیر اعلیٰ سدارامیا کا خطاب

ملک کے وزیر اعظم کو سیلاب متاثرین سے کوئی ہمدردی نہیں ہے۔ پچھلے ایک سو سال سے کبھی نہ دیکھا گیا سیلاب ریاست میں آیا ہے اور ہزاروں افراد کی زندگی تباہ ہوچکی ہے۔

آئی ایم اے فراڈ کیس کا ایک نیا موڑ، قدآور شخصیات راڈر پر، منصور خان نے سابق وزیر دیش پانڈے پر 5/کروڑ روپئے طلب کرنے کا الزام لگایا 

آئی ایم اے فراڈ کیس دن بدن نیا زاویہ اختیار کرتا جارہا ہے، اس کیس کے کلیدی ملزم اور آئی ایم اے کے سربراہ منصور خان نے دعویٰ کیا ہے کہ سابق ریاستی وزیر اور سینئر کانگریس لیڈر آر وی دیش پانڈے نے آئی ایم اے کو 600کروڑ روپئے کا قرضہ حاصل کرنے کے لئے نو آبجیکشن سرٹی فکیٹ (این او سی) جاری ...