بسوراج بومئی آر ایس ا یس کے کٹھ پتلی بن کر رہ گئے ہیں، بی جے پی قائدین کو جمہوری نظام میں اعتماد نہیں: سدارامیا

Source: S.O. News Service | Published on 27th August 2022, 11:39 AM | ریاستی خبریں |

میسور و،27؍اگست (ایس او نیوز) بروز جمعہ یہاں پتراکرترا بھون میں میسورو ضلع صحافیوں کی انجمن کے زیر اہتمام میٹ دی پریس پروگرام منعقد کیا گیا جس میں سابق ریاستی وزیر اعلیٰ سدرامیا نے حصہ لیا اور صحافیوں کے سولات کے جوابات دئے۔ ضلع صحافیوں کی انجمن کے صدرا یس ٹی روی کمار اور جنرل سکریٹری سبرامنیم،انوراگ بسوراج بھی موجود تھے۔

اس موقع پر سدارامیانے کہا کہ ریاستی وزیر اعلیٰ بسوراج بومئی فرقہ پرست تنظیم آر ایس ایس کی کٹھ پتلی بن کر رہ گئے ہیں۔ بھارتیہ جنتا پارٹی کی ریاستی حکومت عوام کی جانب سے منتخب کردہ حکومت نہیں ہے بلکہ آپریشن کنول کے ذریعہ تشکیل کردہ ناجائز طریقے سے بنائی گئی حکومت ہے۔ بھارتیہ جنتا پارٹی نے انتخابی منشور میں کئے گئے وعدوں میں سے اب تک 10 فیصد وعدوں پر بھی کام نہیں کیا ہے۔ اس سلسلے میں کھلی بحث کیلئے تیار ہوں۔ موجودہ حالت میں رشوت خوری کا بازارگرم ہے، یہ صرف میں نہیں بلکہ عوام کے ساتھ ساتھ، سرکاری افسر،میڈیا اور ودھان سودھا کے در و دیوار کہہ رہے ہیں۔ کنٹراکٹرس نے دو مرتبہ وزیر اعظم کو مکتوب روانہ کیا لیکن اب تک اس پر کارروائی نہیں ہوئی ہے۔

ایوان میں کھڑے ہوکر وزیر داخلہ ارگا گنانیندرا نے کہا تھا کہ محکمہ پولیس کے سب انسپکٹر کے تقرر کے معاملہ میں کوئی بدعنوانی نہیں ہوئی ہے لیکن بعد میں اڈیشنل ڈائرکٹر جنرل آف پولیس امرت پال کو اسی معاملے میں گرفتار کرلیا گیا۔جب میں اس ریاست کا وزیر اعلیٰ رہا تو پانچ برسوں میں 15لاکھ مکانات تعمیر کروائے اور ضرورت مندوں میں تقسیم کروائے لیکن موجودہ بھارتیہ جنتا پارٹی نے اب تک ایک مکان بھی تعمیر نہیں کروایا۔ سدارامیا نے اس موقع پر کہا کہ سال 2018میں ریاستی حکومت پر 242000کروڑ روپیوں کا قرضہ تھا جو آج بڑھ کر 5,40,000کروڑ تک پہنچ گیا۔ موجودہ حالات میں ریاست میں حکومت نام کی کوئی چیز باقی نہیں ہے۔بھارتیہ جنتا پارٹی کے قائدین کو جمہوری نظام میں اعتماد ہی نہیں ہے، یہاں تک کہ ہندوستان کے آئین پر بھی بالکل بھروسہ نہیں ہے۔ اینٹی کرپشن بیورؤ کو عدالت کی جانب سے تحلیل کردئے جانے کے تعلق سے سدارامیانے کہا کہ میں نے اسی وقت ریاستی ہائی کورٹ کے فیصلہ کا خیر مقدم کیا تھا۔ لیکن اے سی بی صرف کرناٹکا میں نہیں ہے بلکہ گجرات میں بھی موجود ہے۔ پارلیمانی حلقے میسور و کورگ کے رکن پارلیمان پرتاپ سمہا کے متنازعہ بیانات کے تعلق سے سدارامیا نے کہا جب بھی پرتاپ سمہا بات کرتے ہیں جھوٹ ہی ان کے منہ سے نکلتا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

بجٹ 2023: ’کوئی امید نہیں، بجٹ ایک بار پھر ادھورے وعدوں سے بھرا ہوگا‘، سدارمیا کا اظہارِ خیال

یکم فروری کو مرکز کی مودی حکومت رواں مدت کار کا آخری مکمل بجٹ پیش کرنے والی ہے۔ مرکزی وزیر مالیات نرملا سیتارمن کے ذریعہ بجٹ پیش کیے جانے سے قبل بجٹ 2023 کو لے کر کانگریس کے کچھ لیڈران نے اپنے خیالات ظاہر کیے ہیں۔

کرناٹک ہائی کورٹ کی وارننگ، کہا: چیف سکریٹری دو ہفتوں میں لاگو کرائیں حکم

کرناٹک ہائی کورٹ نے منگل کو انتباہ دیا کہ اگر ریاستی حکومت دو ہفتوں کے اندر سبھی گاؤں اور قصبوں میں قبرستان کے لئے زمین فراہم کرانے کے اس کے حکم پر عمل درآمد کرنے میں ناکام رہتی ہے تو وہ چیف سکریٹری کے خلاف توہین عدالت کی کارروائی شروع کرنے پر مجبور ہوجائے گا ۔

منگلورو: محمد فاضل قتل میں ہندوتوا عناصر ملوث ہونے کا دعویٰ - اپوزیشن پارٹیوں نےکیا کیس کی دوبارہ جانچ کامطالبہ 

بی جے پی یووا مورچہ لیڈر پروین نیٹارو قتل کے بدلے میں عناصر کی طرف سے سورتکل میں محمد فاضل کو قتل کرنے کا کھلے عام دعویٰ کرنے والے وی ایچ پی اور بجرنگ دل لیڈر شرن پمپ ویل کے خلاف کانگریس ، جے ڈی ایس اور ایس ڈی پی آئی جیسی اپوزیشن پارٹیوں نے اس قتل کیس کی ازسر نو جانچ کا مطالبہ کیا ...

ٹمکورو میں اشتعال انگیز بیان دینے والے شرن پمپ ویل سمیت دیگر ہندوتوا لیڈروں کے خلاف قانونی کارروائی کا مطالبہ لے کر اے پی سی آر نے ایس پی کو دیا میمورنڈم

حال ہی میں ریاست کرناٹک کے  ٹمکور میں  منعقدہ شوریہ یاترا کے دوران وی ایچ پی لیڈر شرن پمپ ویل نے جو متنازع اور اشتعال انگیز بیان دیا  تھا ، اس پر کٹھن کارروائی کرتے ہوئے اسے گرفتارکرنے کا مطالبہ لے کر  ایسوسی ایشن فار پروٹیکشن آف سوِل رائٹس (اے پی سی آر) کے  ایک وفد نے ٹمکورو ...