موب لنچنگ کے خلاف پی ایم مودی کو خط لکھنے والوں کی حمایت میں آئے کمل ہاسن

Source: S.O. News Service | Published on 9th October 2019, 1:35 PM | ملکی خبریں |

چنئی،9؍اکتوبر (ایس او نیوز؍ایجنسی) اداکار سے سیاستداں بنے کمل ہاسن نے منگل کو ملک کی 49 مشہور ہستیوں کے خلاف بہار میں داخل غدار وطن کے مقدمہ کو ختم کرنے کی عدالت سے اپیل کی۔ انھوں نے ٹوئٹ کر کہا کہ ’’ایک شہری ہونے کے ناطے میں گزارش کرتا ہوں کہ ہماری اونچی عدالتیں جمہوریت کے ساتھ انصاف کرنے کی سمت میں قدم اٹھائیں اور بہار میں دائر مقدمے کو ختم کریں۔‘‘

اپنے ٹوئٹ میں کمل ہاسن نے آگے لکھا کہ ’’وزیر اعظم خیرسگالی والا ہندوستان چاہتے ہیں۔ پارلیمنٹ میں دیا گیا ان کا بیان اس کی تصدیق کرتا ہے۔ ریاست اور اس کے قانون کو کیا خط اور جذبات کی قدر نہیں کرنی چاہیے؟ میرے 49 ساتھی وطن سے غداری کے ملزم بنائے گئے ہیں، یہ وزیر اعظم کی امیدوں کے برعکس ہے۔‘‘ ان کا اشارہ ملک میں پیٹ پیٹ کر قتل کے واقعات پر وزیر اعظم کو خط لکھنے والے فلمکار منی رتنم، اداکارہ ریوتی اور مورخ رام چندر گوہا سمیت 49 لوگوں کے خلاف بہار کے ایک تھانہ میں ایف آئی آر درج کیے جانے کی طرف تھا۔

اس سے قبل ڈی ایم کے سربراہ ایم کے اسٹالن نے بھی اس معاملے پر حیرانی ظاہر کرتے ہوئے کہا تھا کہ ’’جمہوریت اور عدم برداشت برقرار رکھنے کو کہنا وطن سے غداری کیسے ہو سکتا ہے؟‘‘ اسٹالن نے یہ بھی کہا تھا کہ گوہا، ریوتی اور منی رتنم جیسے لوگوں کو غدار وطن کی شکل میں مشتہر کیا جانا ناقابل قبول ہے۔ اسٹالن نے ان لوگوں کے خلاف ایف آئی آر درج کیے جانے کی تنقید کرتے ہوئے کہا کہ یہ لوگوں کے دل میں اندیشہ اور خوف پیدا کرتا ہے کہ وہ جمہوری ملک میں رہتے ہیں یا نہیں۔

غور طلب ہے کہ ملک میں بڑھتی موب لنچنگ کے واقعات پر پی ایم مودی کو کھلا خط لکھنے والے رام چندر گوہا، انوراگ کشیپ، منی رتنم اور اپرنا سین سمیت تقریباً 49 مشہور ہستیوں کے خلاف 3 اکتوبر کو بہار کے مظفر پور کی ایک عدالت کے حکم پر غدار وطن کا معاملہ درج کیا گیا ہے۔ مقامی وکیل سدھیر کمار اوجھا کی جانب سے چیف جوڈیشیل مجسٹریٹ کی عدالت میں دو مہینے پہلے اس معاملے میں ایک عرضی داخل کی گئی تھی، جس پر سماعت کرنے کے بعد سی جے ایم سوریہ کانت تیواری کے حکم پر یہ معاملہ درج کیا گیا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

پی ایم مودی کی بھتیجی کے ’پرس‘ کی طرح تلاش کرتے تو میرا بیٹا میرے ساتھ ہوتا، نجیب کی ماں

جواہر لال نہرو یونیورسٹی (جے این یو) کے طالب علم نجیب احمد کے لاپتہ ہونے کے تین سال بعد اس کی والدہ فاطمہ نفیس نے منگل کے روز جنتر منتر پر احتجاج کیا اور وزارت داخلہ سے اپنے بیٹے کی گمشدگی کے حوالہ سے جواب مانگا۔ اس موقع پر یونائیٹڈ اگینسٹ ہیٹ کی جانب سے ایک احتجاجی مارچ کا ...

آگسٹا ویسٹ لینڈ کے ملزم کے خلاف کارروائی پر روک لگانے کے لئے دہلی ہائی کورٹ کے فیصلے کو سپریم کورٹ نے کیا منسوخ

آگسٹا ویسٹ لینڈ کے ملزم گوتم کھیتان کے خلاف کارروائی پر روک لگانے کے لئے دہلی ہائی کورٹ کے فیصلے کو سپریم کورٹ نے منسوخ کر دیا۔سپریم کورٹ نے دوبارہ دہلی ہائی کورٹ سے کھیتان کی عرضی پر سماعت کرنے کو کہا۔دہلی ہائی کورٹ نے کہا تھا کہ کھیتان کا معاملہ 1 اپریل 2016 سے پہلے کا ہے لہٰذا ...

یوپی کی سابق ایم پی اور کانگریس لیڈر راج کماری رتنا سنگھ بی جے پی میں ہوئیں شامل

پرتاپ گڑھ کی سابق ایم پی اور کانگریس لیڈر راج کماری رتنا سنگھ اپنے حامیوں کے ساتھ بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) میں شامل ہو گئیں ہیں۔رتناسنگھ نے وزیر اعلی یوگی آدتیہ ناتھ کی موجودگی میں بی جے پی کی رکنیت حاصل کی۔بتا دیں کہ پرتاپ گڑھ کے گڑوارا میں منگل کو وزیر اعلی یوگی آدتیہ ...

یوپی: دو سال کی بچی سے عصمت دری، ملزم گرفتار

شہر کے تھانہ سی بی گنج علاقے کے ایک گاؤں میں دو سال کی بچی کے ساتھ پڑوسی نے مبینہ طور پر عصمت دری کی۔پولیس نے ملزم کو گرفتار کر لیا ہے۔سینئر پولیس سپرنٹنڈنٹ شیلندر پانڈے نے منگل کو بتایا کہ گاؤں کے رہائشی ایک شخص کی دو سالہ بیٹی پیر کی شام گھر کے باہر کھیل رہی تھی۔

بندیل کھنڈ: پہلے سوکھا اور اب بے موسم کی بارش سے پریشان کسان کررہے ہیں خودکشی

پہلے سوکھا اور اب زیادہ بارش کی وجہ سے بندیل کھنڈ کے کسان خودکشی کر رہے ہیں۔کئی سال سے بندیل کھنڈ میں پڑ رہے سوکھے کی وجہ سے کسان خودکشی کر رہے تھے، لیکن اس سال بے موسم بارش کی وجہ سے بندیل کھنڈ میں خریف کی فصل برباد ہوگئی۔جس سے کسانوں میں زبردست مایوسی ہے۔

مدھیہ پردیش: آبکاری افسر کے ٹھکانوں پر لوک آیکت کے چھاپے، کروڑوں کی جائیداد کا انکشاف

مدھیہ پردیش کے اندور میں آبکاری محکمہ کے اسسٹنٹ کمشنر آلوک کھرے کے کئی ٹھکانوں پر منگل کو لوک آیکت کی ٹیم نے چھاپہ ماری کی۔ابتدائی تحقیقات میں ہی دو مقامات پر 57 ایکڑ کے فارم ہاؤس سمیت کروڑوں کی جائیداد کا انکشاف ہوا ہے۔ٹیم مزید تفتیش میں لگی ہوئی ہے۔لوک آیکت کے ذرائع سے ملی ...