اعلیٰ ا مریکی طبی مشیرکا مشورہ ؛ ہندوستان میں چند ہفتوں کے مکمل لاک ڈاؤن کی ضرورت ، ہندوستان میں صرف 2فیصد ٹیکہ کاری ہوئی، فتح کاجشن جلدمنالیاگیا

Source: S.O. News Service | Published on 2nd May 2021, 12:35 PM | ملکی خبریں | عالمی خبریں |

واشنگٹن،2/ مئی(ایس او نیوز/ایجنسی)ہر نئے دن کورونا مریضوں کے جو نئے اعداد و شمار آ رہے ہیں، اس سے پورے ملک میں خوف کا ماحول ہے۔ ایسے میں عوام سے لے کر حکو مت تک اس کو لے کر فکرمند ہے کہ اس وبا کو کیسے روکا جائے، اس کی شدت کو کیسے کم کیا جائے۔ امریکی صدر جو بائیڈن کے مشیر اور کورونا وائرس پر کام کرنے والوں میں ایک معتبر نام ڈاکٹر فاؤچی نے ہندوستان کو مشورہ دیا ہے کہ وہ کچھ فوری اور کچھ لمبے وقفہ کے منصوبوں پر عمل کرے۔

انگریزی اخبار انڈین ایکسپریس سے بات چیت کرتے ہوئے انہوں نے مشورہ دیا ہے کہ پورے ملک میں کچھ ہفتوں کیلئے لاک ڈاؤن نافذ کیا جائے۔ انہوں نے کہا ہے کہ 3 اسٹیپس پر یعنی 3 مراحل پر کام کرنے کی ضرورت ہے۔انہوں نے کہا کہ اس وقت ہندوستانی عوام کو ٹیکہ لگایا جانا بہت ضروری ہے، ساتھ میں آکسیجن و دیگر طبی سہولیات کی فراہمی کیلئے کمیشن یا ایمرجنسی گروپ بنانے کی ضرورت ہے۔

ڈاکٹر فاؤچی نے کہا کہ یہ منصوبہ بنایا جائے کہ آکسیجن کیسے حاصل کی جائے، کیسے سپلائی کی جائے، کیسے دوائیں دستیاب کرائی جائیں۔ انہوں نے کہا کہ ہندوستان کو عالمی طبی تنظیموں اور دیگر ممالک سے مشورہ کرنے کی ضرورت ہے۔انہوں نے گفتگو کے دوران یہ بھی کہا کہ جیسے جنگ کے دوران عارضی ماڈل اسپتال بنائے جاتے ہیں ایسے اسپتال بنانے کی ضرورت ہے۔ڈاکٹر فاؤچی نے چین کی مثال دیتے ہوئے امریکہ کے تجربات کا بھی ذکر کیا۔انہوں نے اس بات پر بہت زور دیاکہ عوام کو ٹیکہ لگایا جانا چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ پہلے فوری حالات کو سمجھیں پھر منصوبہ بندی کریں۔ لاک ڈاؤن کو ضروری بتاتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ہندوستان کو6 ماہ کیلئے لاک ڈاؤن کی ضرورت نہیں ہے لیکن وائرس کے پھیلاؤ کو روکنے کیلئے عارضی لاک ڈاؤن کی ضرورت ہے اور اس کیلئے کچھ ہفتوں کیلئے ملک گیر لاک ڈاؤن نافذ کیا جائے۔

ہندوستانی وزیر اعظم نریندر مودی قوم سے خطاب میں کہہ چکے ہیں کہ لاک ڈاؤن کو آخری متبادل کے طور پر لینا چاہئے جس کا سیدھا مطلب ہے کہ وہ ملک گیر لاک ڈاؤن کے حق میں نہیں ہیں۔ واضح رہے کہ گزشتہ سال جب ملک میں کورونا کے معاملہ زیادہ نہیں تھے تو اس وقت وزیر اعظم نے کسی کو سنبھلنے اور حالات کو سمجھنے کا موقع بھی نہیں دیا تھا اور لاک ڈاؤن نافذ کر دیا تھا لیکن اس مرتبہ وہ ایسا کرنے سے بچ رہے ہیں اور یہی وجہ ہے کہ بی جے پی کی اقتدار والی ریاستوں میں کرناٹک کو چھوڑ دیں تو کسی بھی ریاست نے ابھی مکمل لاک ڈاؤن نافذ نہیں کیا ہے۔ ایسے میں کورونا وائرس پرکام کرنیوالے ماہر ڈاکٹر فاؤچی کے مشوروں کا کیا ہوگا؟

ایک نظر اس پر بھی

دہلی پولیس کا شری نیواس بی وی سے پوچھ گچھ کرنا سیاسی انتقام کے سوا کچھ نہیں ہے۔ ایس ڈی پی آئی

سوشیل ڈیموکریٹک پارٹی آف انڈیا (ایس ڈی پی آئی) کے قومی جنرل سکریٹری کے ایچ عبدالمجید نے اپنے جاری کردہ اخباری بیان میں دہلی میں کوویڈ وبائی مرض سے متعلق امدادی سرگرمیوں میں حصہ لینے والے انڈین یوتھ کانگریس کے صدر شری نیواس بی وی سے دہلی پولیس کی جانب سے پوچھ گچھ کا سخت نوٹس  ...

کورونا کا خاتمہ جولائی تک نہیں ہوگا: ایکسپرٹ

جس طرح کورونا کے نئے معاملوں کی تعداد میں کمی درج ہو رہی ہے اس سے یہ امید بنی ہے کہ ہندوستان میں کورونا کی دوسری لہر کا خاتمہ جلد ہو جائے گا لیکن وبائی بیماریوں کے ماہر شاہد جمیل کا کہنا ہے کہ بھلے ہی ابھی کچھ ریاستوں میں کورونا کے کیس کم ہوتے نظر آ رہے ہوں لیکن دوسری لہر کا ...

سادگی کے ساتھ عید منائیں اور چھوٹی جماعت کے ساتھ عید کی نماز ادا کریں ، سرکردہ مسلم رہنماوں کی مسلمانوں سے اپیل

آل انڈیا مسلم پرسنل لاء بورڈ کے صدر مولانا رابع حسنی ندوی ۔ جمعیت علماءہند کے صدر مولانا ارشد مدنی ۔ جماعت اسلامی ہند کے امیر سید سعادت اللہ حسینی سمیت دیگر سرکردہ علماء اور مسلم قائدین مسلمانوں نے اپیل کی ہے کہ وہ کرونا کے بڑھتے خطرات کے پیش نظر احتیاط کریں اور مختصر جماعت ...

لاک ڈاؤن پر ہو سختی سے عمل: اشوک گہلوت

راجستھان میں عالمی وبا کورونا کی دوسری لہر کی چین توڑنے کے لئے آج صبح 5بجے سے لے کر 24 مئی تک سخت لاک ڈاؤن نافذ ہوگیا ہے۔ اس مدت کے دوران، ہنگامی اور ضروری خدمات، میڈیکل، دودھ اور دیگر ضروری خدمات کے لئے رعایت رہے گی۔

افغانستان کے کابل کی مسجد میں دھماکہ، امام سمیت 12 نمازی جاں بحق

افغانستان کے دارالحکومت کابل کی مسجد میں دھماکے کے نتیجے میں امام سمیت 12 نمازی جاں بحق ہوگئے، دھماکہ   جمعہ  کی نماز کی ادائیگی کے دوران کیا گیا۔افغان پولیس  ترجمان کے مطابق کابل کے ضلع شکر درہ میں مسجد کے اندر دھماکہ کیا گیا جس میں مسجد کے امام مفتی نعمان  سمیت ۱۲ نمازی جاں ...

فلسطین میں اسرائیلی فضائی حملے جاری؛ شہید ہونے والوں کی تعداد 119 کو پہنچ گئی؛ بمباری کے باوجود قبلہ اول میں فرزندان توحید نے ادا کی عید الفطر کی نماز

اسرائیل کے غزہ کی پٹی پر جاری فضائی حملوں میں گذشتہ چار روز میں شہید ہونے والے فلسطینیوں کی تعداد بڑھ کر113 ہوگئی ہے جن  میں 31 بچے بھی شامل ہیں۔ میڈیا رپورٹوں کے مطابق ایک طرف بمباری جاری تھی اور دوسری طرف غزہ پر بمباری کے دوران  قبلہ اول میں ایک لاکھ سے زائد فرزاندن توحید  عید ...