مودی۔امیت شاہ کی حرکتوں سے ملک کا اتحاد خطرے میں : راج ٹھاکرے

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 18th April 2019, 11:35 AM | ملکی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

ممبئی،18؍اپریل (ایس او نیوز؍یواین آئی) مہاراشٹر نونرمان سینا کے سربراہ راج ٹھاکرے نے آج ایک بارپھر بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کو آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے کہاکہ بی جے پی کی اور اس کے لیڈروں مودی ۔امیت شاہ کی وجہ سے ملک کی جمہوریت کو شدید خطرہ ہے ،اچل کرنجی میں ایک جلسہ سے خطاب کرتے ہوئے راج نے مزید کہا کہ ملک کی تاریخ میں ایسا پہلی بار ہوا کہ سپریم کورٹ کے چار ججوں نے ایک پریس کانفرنس میں متنبہ کیا کہ ملک کی آزادی ،جمہوریت اور مقننہ کو شدید خطرہ ہے ۔ انہوں نے مزید کہا کہ ملک ایک بار ان کے جھانسے میں پھنس گیا ہے ،لیکن اب دوسری بار عوام کو ان کی جال میں پھنسنا نہیں ہے ،ان کا کہنا تھاکہ بی جے پی کے پاس ان کے سوالات کے جواب نہیں ہیں۔راج ٹھاکرے نے سپریم کورٹ کے ججوں کی پریس کانفرنس کے حوالے سے بی جے پی اور مودی ۔امیت شاہ کی جوڑی کو نشانہ بناتے ہوئے جج لویا کی پراسرارموت کا بھی ذکر کیا ۔انہوں نے اشارے میں اس کے لیے بی جے پی صدرامیت شاہ کوذمہ دار قراردیا۔انہوں نے کہا کہ میں نے حال کے جلسوں میں بی جے پی کے سربراہوں مودی اور شاہ سے ملک کی موجودہ صورتحال پر متعدد سوالات کیے ہیں ،لیکن ان کے پاس میرے سوالات کے جواب نہیں ہیں۔ایم این ایس سرابرہ راج ٹھاکرے نے کہاکہ ریزروبینک کے دوگورنروں کو دباؤ میں لیا گیا اور انہیں عہدے سے ہاتھ دھونا پڑا ، انہوں نے کہا کہ امیت شاہ وزیراعظم مودی کے پٹھو ہیں۔

ایک نظر اس پر بھی

ڈونالڈ ٹرمپ نےسودے بازی کرنے میں مودی کو بتایا سخت ۔ ہند۔امریکہ کے درمیان 3/ارب ڈالر کے دفاعی معاہدوں کا اعلان

امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ کا گجرات کے احمد آبادپہنچنے پر شاندار استقبال کیا گیا۔ وزیر اعظم نریندر مودی نے احمد آباد ہوائی اڈے پر امریکی صدر اور ان کی بیوی کا خیر مقدم کیا اور’نمستے ٹرمپ‘ پروگرام کے لئے موٹیر اسٹیڈیم کے راستے پر لوگ قطار میں کھڑے ہو کرہاتھوں میں ترنگا اور امریکی ...

سابرمتی آشرم میں ڈونالڈ ٹرمپ نے ’باپو‘ کا ذکر تک نہیں کیا

امریکہ کے صدر ڈونالڈ ٹرمپ نے سابرمتی آشرم پہنچ کر مہاتما گاندھی کو خراج عقیدت پیش کیا، لیکن حیرانی کی بات ہے کہ اس موقع پر انھوں نے باپو کا ذکر کرنا مناسب نہیں سمجھا۔ سابرمتی آشرم پہنچے ٹرمپ اور ان کی بیوی میلانیا کا استقبال ہندوستانی پی ایم نریندر مودی نے شال پیش کرتے ہوئے ...

شمال مشرقی دہلی میں زبردست تشدد، ایک ہیڈ کانسٹیبل،فرقان اور شاہین نامی مسلم نوجوان کی موت، گولی چلانے والاملزم گرفتار، دفعہ 144نافذ، میٹر و سرویس بند

بی جے پی کے انتہاپسند لیڈر کپل مشرا جیسے شرپسندوں کی کارستانیوں سے دہلی جل رہی ہے لیکن مودی انتظامیہ خاموش تماشائی بنی ہوئی ہے۔دہلی کے جعفرآباد میں شہریت ترمیمی قانون (CAA) کے خلاف چل رہے پرامن مظاہرے کے ردعمل میں دوسری طرف تشددکاسہارالیاگیا۔اتوار کو جو ہنگامہ شروع ہوا وہ پیر ...

بھٹکل کے بیلکے گرام پنچایت حدود میں بار اینڈ ریسٹورنٹ کی مخالفت: دیہی عوام نے سونپا اے سی کو میمورنڈم

تعلقہ کے بیلکے گرام پنچایت حدود کے گورٹے کراس کے قریب نجی زمین پر بار اینڈ ریسٹورنٹ کی شروعات  کے لئے پس پردہ کوششیں جاری ہیں۔ اس کو کسی حال میں بھی منظوری نہ دینے کا مطالبہ لے کر علاقہ کے عوام نے بھٹکل اسسٹنٹ کمشنر کو میمورنڈم سونپا۔

اترکنڑا ضلع ورکنگ جرنلسٹ اسوسی ایشن کے زیراہتمام بھٹکل سرکاری اسپتال میں عوامی مفت صحت جانچ کیمپ کا انعقاد :650سے زائد عوام نے کیا استفادہ

ضلع ورکنگ جرنلسٹ اسوسی ایشن سرسی ، تعلقہ ورکنگ جرنلسٹ اسوسی ایشن بھٹکل ، رنجن انڈین ایجنسی ، سالگدے اسپورٹس کلب ، کٹے ویرا یوا شکتی سنگھ بھٹکل کے اشتراک سے بھٹکل سرکاری اسپتال میں منعقدہ بڑے پیمانے پر مفت صحت جانچ کیمپ کارکن اسمبلی سنیل نائک نے  افتتاح کیا۔

شاہین باغ احتجاج: مصالحت کاروں نے سپریم کورٹ کو سونپی رپورٹ، اب 26 فروری کو ہو گی سماعت

دہلی کے شاہین باغ میں سی اے اے کے خلاف احتجاجی مظاہرہ جاری ہے۔ شاہین باغ میں مظاہرہ کر رہے لوگوں سے بات چیت کے بعد مذاکرہ کاروں نے اپنی سیل بند رپورٹ سپریم کورٹ کے حوالے کر دی ہے۔ پیر کے روز رپورٹ ملنے کے بعد سپریم کورٹ نے معاملے کی سماعت کے لیے آئندہ تاریخ 26 فروری مقرر کی۔ اب ...

سی اے اے: جعفر آباد میں خواتین کا مظاہرہ جاری، ہنگامہ کے بعد سیکورٹی سخت

دہلی کے جعفر آباد میٹرو اسٹیشن پر شہریت ترمیمی قانون، این پی آر اور این آر سی کے خلاف خواتین کا احتجاجی مظاہرہ جاری ہے۔ بڑی تعداد میں خواتین احتجاجی مظاہرہ میں شامل ہیں۔ سی اے اے کو لے کر موج پور میں اتوار کو دو گروپوں میں تصادم کے بعد آج علاقے میں سیکورٹی مزید سخت کر دی گئی ...

ملائیشیائی وزیر اعظم  مآثر محمد  اپنے عہدہ سے مستعفی

ملائیشیا کے وزیرِ اعظم مآثر محمد اپنے عہدے سے مستعفی ہو گئے ہیں۔ انہوں نے اپنا استعفیٰ ملائیشیا کے بادشاہ کو بھجوا دیا ہے۔مآثر محمد نے اپنے عہدے سے استعفیٰ ایسے وقت میں دیا ہے جب ملک میں سیاسی گرما گرمی عروج پر ہے۔