عراق میں نئی پارلیمنٹ کا پہلا اجلاس ہنگاموں کی نذر۔ بھگدڑ اور افراتفری کے درمیان اسپیکر کا انتخاب

Source: S.O. News Service | Published on 11th January 2022, 12:14 PM | عالمی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

بغداد، 11؍ جنوری (ایس او نیوز؍ایجنسی)  عراق میں  خداخدا کرکے نئی پارلیمنٹ کی کارروائی شروع ہوئی لیکن اس کے پہلے اجلاس کا پہلا ہی دن ہنگاموں کی نذر ہو گیا۔ اس دوران  ایوان میں بھگدڑ جیسا ماحول تھا۔ اسی افراتفر ی کے دوران نئے اسپیکر کا انتخاب عمل میں آیا۔  یاد رہے کہ عراق میں عام انتخابات کو ۳؍ ماہ ہو چکے ہیں۔ لیکن نئے عوامی نمائندوں کو ایوان پہنچ کر  اپنے آئینی فرائض انجام دینے کی راہ میں کئی رکاوٹوں کا سامنا کرنا پڑا۔ بالآخر اتوار کو اس کا پہلا اجلاس منعقد کیا گیا۔   

   پہلے اجلاس میں اسپیکر کا انتخاب ہونا تھا جس کیلئے ووٹنگ کی جانی تھی۔ لیکن اجلاس کے شروع ہوتے ہی ہنگامہ آرائی شروع ہوگئی  اور بھگدڑ  جیسا ماحول پیدا ہو گیا۔اور اسی افراتفری کے دوران  محمدالحلبوسی کو ایوان کا اسپیکر منتخب کیا گیا۔ حالانکہ اس کیلئے باقاعدہ ووٹنگ ہوئی  لیکن ہنگاموں کے درمیان ۔محمدالحلبوسی اور محمود المشہدانی میں سے کسی ایک کا انتخاب کرنے کیلئے پارلیمان کے ۲۲۸؍ اراکین نے ووٹنگ  میں حصہ لیا۔ایوان نمائندگان (پارلیمان) کے میڈیا ڈپارٹمنٹ کے حوالے سے بتایا گیا ہے کہ الحلبوسی کو ان کے حریف مشہدانی کے ۱۴؍کے مقابلے میں ۲۰۰؍ ووٹ ملے ہیں جبکہ ۱۴؍ووٹ مسترد کردیئے گئے ہیں۔اس افتتاحی اجلاس کی صدارت  پہلے محمود المشہدانی  کرنے والے تھے کیونکہ وہ ایوا ن میں سب سے عمررسیدہ ہیں، لیکن ان کی طبیعت  اچانک صحت بگڑ جانے کی وجہ سے سب سے  ان کے بعدسب سےعمررسیدہ رکن پارلیمان خالد الدراجی کو یہ ذمہ داری سونپی گئی ۔ ایوان کی صدارت ہی کے معاملے میں بات بگڑگئی اور ایوان میں  افراتفری مچ گئی۔ خالد الدراجی نے افراتفری اور بھگدڑ کے بعد ا جلاس کو  عا رضی طورپرملتوی کر دیا۔ بعض میڈیا اطلاعات کے مطابق محمود مشہدانی پر بعض اراکین  نے مبیّنہ طور پرحملہ کیا تھا جس کی وجہ سے ان کی حالت بگڑی تھی۔

 اب پارلیمنٹ نئے وزیراعظم کا انتخاب کرے گی۔  یاد رہے کہ عراقی پارلیمنٹ میں کسی بھی  پارٹی کو اتنی اکثریت حاصل نہیں ہے جو کہ  اپنے دم پر وزیراعظم منتخب کر سکے۔ ۳۲۹؍ اراکین والی پارلیمنٹ میں سب سے زیادہ سیٹیں  مذہبی پیشوا مقتدیٰ الصدرکی پارٹی کے پاس ہے۔ انہیں ۷۳؍ سیٹٰں حاصل ہوئی ہیں۔اور امکان ہے کہ  انہیں دیگر کئی گروہوں کی حمایت حاصل ہو جائے گی۔ لیکن اس کیلئے انہیں کافی جدوجہد کرنی پڑے گی۔ کیونکہ ان میں سے کئی پارٹیاں انتخابی نتائج کو مسترد کرچکی ہیں اور اب جبکہ وہ کسی طرح ایوان کی کارروائی  میں شامل ہوئی ہیں تو  حکومت سازی کے عمل میں اپنی بات منوانے کا مطالبہ کر رہی ہیں۔عراق کے سب سے بااثر سیاسی رہنماؤں میں سے ایک مقتدیٰ الصدر ۱۰؍اکتوبر کو منعقدہ انتخابات میں سب سے بڑے فاتح رہے تھے۔ واضح رہے کہ  مقتدیٰ الصدر کا شمار امریکہ مخالف لیڈروں میں ہوتا ہے ساتھ ہی وہ عراق کے سابق صدر صدام حسین کے بھی خلاف تھے۔ امریکی  فوجیوں پر حملوں میں ان کی تنظیم کے ملوث ہونے کے الزام لگتے رہے ہیں۔ 

 ان کے حریف ایران کے حامی  گروہ ہیں جو اپنی دو تہائی نشستوں سے محروم ہو گئے تھے اور یہ ان کیلئے ایک بڑا دھچکا ہے۔ یا د رہے کہ اکتوبر میں انتخابات کے نتائج آنے کے بعد  مسلح گروہوں کے حامیوں نے دو ماہ سے زیادہ عرصے تک بغداد کے گرین زون کے ارد گرد خیمے لگائے اور دھرنا دیا تھا۔انھوں نے عراق کی اعلیٰ عدالت میں انتخابی نتائج کے خلاف اپیل بھی دائرکی تھی۔لیکن عراق کی عدالتِ عظمیٰ نے ایران کے حمایت یافتہ گروہوں  کی جانب سے دائر کردہ اس اپیل کو مسترد کردیا تھا اور گزشتہ ماہ کے آخر میں انتخابی نتائج کی توثیق کرتے ہوئے حکومت کی تشکیل کا راستہ صاف کردیا تھا۔

  اس کے بعد ان سیاسی پارٹیوں کے درمیان  میٹنگوں کا ایک طویل دور چلا جس کے بعد پارلیمنٹ کی کارروائی شروع کرنے پر اتفاق  ہوا۔  کسی طرح اتوار کو یہ کارروائی شروع ہوئی۔ یاد رہے کہ ۲۰۰۳ء  میں امریکہ کے حملے کے بعد سے عراق انتشار کا شکار ہے۔  یہاں اب تک جتنی حکومتیں آئیں انہیں امریکہ کی کٹھ پتلی قرار دیا گیا۔ گزشتہ ۲؍ سال سے عراق میں بڑے پیمانے پر احتجاج ہو رہے تھے جس میں امریکی فوجوں کی واپسی اور کٹھ پتلی حکومت کے خاتمے کا مطالبہ کیا جا رہا تھا۔ بالآخر یہ حکام نے ان مطالبوں پر کان دھرے اور  دونوں  ہی باتوں کو تسلیم کیا گیا۔ امریکہ نے اپنی فوجیں  واپس بلانے کا اعلان کیا تو دوسری طرف   الیکشن بھی کروائے گئے لیکن ان انتخابات میں صرف ۴۴؍ فیصد ووٹروں نے حصہ لیا۔ 

ایک نظر اس پر بھی

’تائیوان پر بڑے حملہ کی تیاری کر رہا چین‘، تائپے کے وزیر خارجہ کا دعویٰ

تائیوان کے وزیر خارجہ جوسیف وو نے منگل کے روز دعویٰ کیا کہ چین خود مختار جزیرہ پر زوردار حملہ کرنے کی تیاری میں ہے اور اسی کے لیے اس کے آس پاس بڑے پیمانے پر فوجی تربیت کر رہا ہے۔ آر ٹی کے مطابق جوسیف وو نے کہا کہ ’’چین نے تائیوان پر حملہ کی تیاری کے لیے تربیت اور اپنی فوجی پلے ...

بلوچستان میں سیلاب متاثرین کی ایک بڑی تعداد امدادکی منتظر، ہزاروں بے یارو مددگار

پاکستان کے بلوچستان صوبہ میں سیلاب متاثرین کو اب تک امداد نہیں مل سکی ہے۔ اس دوران سیلاب سے زراعت کا شعبہ سب سے زیادہ متاثر ہوا ہے۔  ہزاروں ایکڑ رقبہ پرمشتمل تیار فصلیں سیلابی ریلوں میں بہہ گئی ہیں جس سے دھنیا، ٹماٹر، کپاس  اور دیگر فصلیں بری طرح متاثر ہوئی ہیں۔ کوئٹہ کے علاقے ...

روہنگیا مسلمانوں کی میانمار واپسی، چین مدد کرے گا

بنگلہ دیش کے وزیر خارجہ اے کے عبدالمومن نے اپنے چینی ہم منصب وانگ وائی کے ساتھ اتوار کے روز ڈھاکہ میں تبادلہ خیال کیا۔ بدھ مت اکثریتی ملک میانمار میں ظلم و جبر سے بچنے کے لیے دس لاکھ سے زائد روہنگیا مسلمان وہاں سے بھاگ کر بنگلہ دیش آگئے تھے۔ ان میں سے بیشتر روہنگیا سن 2017 میں آئے ...

کیوبا میں فیول اسٹوریج میں آتشزدگی، ایک افراد ہلاک، کم از کم 122 زخمی

کیوبا کے ماتنجاس بندرگاہ میں ایک ایندھن ذخیرہ سسٹم میں زبردست آگ لگنے سے ایک شخص کی موت ہو گئی ہے اور کم از کم 122 افراد کے زخمی ہونے کی اطلاع ہے۔ یہ واقعہ آسمانی بجلی گرنے کے بعد پلانٹ میں ایک خام تیل کے ٹینک میں زبردست آگ لگنے سے پیش آیا۔ اس حادثہ کے بعد ملک پر زبردست بجلی ...

اسرائیل کا 41 فلسطینیوں کی شہادت اور جنگ بندی کے بعد زیادہ بڑے حملے کا انتباہ

اسرائیلی قابض فوج نے غزہ میں اتوار کے رات ساڑھے آٹھ بجے سے ہونے والی جنگ بندی کے بعد خبردار کیا ہے کہ اسرائیل فوج غزہ زیادہ بڑا حملہ کرنے والی ہے۔ اسرائیلی فوج نے اپنے اس امکانی بڑے حملے کو وسیع دائرے میں غزہ کے عسکریت پسندوں پر حملے کا نام دیا ہے۔

گجرات: تعزیہ داری کے دوران حادثہ، کرنٹ لگنے سے 2 افراد ہلاک، 10 زخمی

آج ہندوستان ہی نہیں، کئی دیگر ممالک میں بھی عام عاشورہ کے موقع پر تعزیہ داری کا اہتمام کیا جا رہا ہے۔ 8 اگست کو بھی کئی مقامات پر تعزیہ داری ہوئی اور عزاداری کا اہتمام بھی کیا گیا۔ اس دوران گجرات میں اندوہناک حادثہ پیش آیا ہے۔

نوئیڈا میں خاتون سے گالی گلوچ کرنے کا ملزم لیڈر شری کانت تیاگی میرٹھ سے گرفتار

 اتر پردیش کے نوئیڈا میں واقع گرینڈ اومیکس سوسائٹی میں خاتون کے ساتھ بدسلوکی کرنے کے ملزم بی جے پی لیڈر شری کانت تیاگی کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔ تیاگی کو گرفتار کرنے کے لئے ایس ٹی ایف کی کئی ٹیمیں تشکیل دی گئی تھیں۔ میڈیا رپورٹ کے مطابق شری کانت تیاگی کو میرٹھ سے گرفتار کیا گیا ...

کیوبا میں فیول اسٹوریج میں آتشزدگی، ایک افراد ہلاک، کم از کم 122 زخمی

کیوبا کے ماتنجاس بندرگاہ میں ایک ایندھن ذخیرہ سسٹم میں زبردست آگ لگنے سے ایک شخص کی موت ہو گئی ہے اور کم از کم 122 افراد کے زخمی ہونے کی اطلاع ہے۔ یہ واقعہ آسمانی بجلی گرنے کے بعد پلانٹ میں ایک خام تیل کے ٹینک میں زبردست آگ لگنے سے پیش آیا۔ اس حادثہ کے بعد ملک پر زبردست بجلی ...

پاترا چال معاملہ: سنجے راؤت کو 22 اگست تک عدالت تحویل میں بھیجا گیا

 شیو سینا کے راجیہ سبھا رکن سنجے راؤت کو 22 اگست تک عدالتی تحویل میں بھیجنے کا حکم صادر کیا گیا ہے۔ تاہم عدالت نے ان کے تئیں نرم رویہ اختیار کرتے ہوئے عدالتی تحویل کے دوران ادویات اور گھر کا کھانا منگانے کی اجازت دی ہے۔