آئی پی ایل 2020: دلچسپ مقابلے میں حیدرآباد کی شکست، پنجاب کی 12 رن سے جیت

Source: S.O. News Service | Published on 25th October 2020, 2:35 PM | اسپورٹس | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

دبئی،25؍اکتوبر(ایس او نیوز؍ایجنسی) آئی پی ایل کے رواں سیزن میں پنجاب ایک بار پھر سانس روک دینے والے میچ کا گواہ بنی۔ پہلے بلے بازی کرتے ہوئے کنگز الیون پنجاب نے مقررہ 20 اوور میں 7 وکٹ کے نقصان پر 126 رن اسکور بورڈ پر جمع کیے تھے۔ ایک وقت جب حیدر آباد کا اسکور بغیر کوئی وکٹ گنوائے 6.1 اوور میں 56 رن تھا تو ایسا محسوس ہو رہا تھا جیسے میچ پر سے پنجاب کی گرفت ختم ہو گئی ہے اور دو ضروری پوائنٹ سے وہ محروم رہ جائے گی۔ لیکن ساتویں اوور کی دوسری گیند پر کپتان وارنر کا وکٹ گرتے ہی پنجاب نے ایسی واپسی کی کہ وارنر کی پوری ٹیم 19.5 اوور میں 114 رن بنا کر آؤٹ ہو گئی۔ ایک دلچسپ مقابلے میں پنجاب کی 12 رنوں سے جیت ہوئی اور اس طرح وہ پوائنٹس ٹیبل میں 10 پوائنٹ کے ساتھ پانچویں مقام پر پہنچ گئی۔

حیدر آباد کے کپتان ڈیوڈ وارنر نے ٹاس جیت کر گیندبازی کا فیصلہ کیا تھا اور بلے بازی میں پنجاب کے سلامی بلے بازوں نے تیز شروعات دینے کی کوشش کی تھی جس میں کچھ حد تک کامیابی بھی ملی۔ پہلا وکٹ مندیپ سنگھ (14 گیندوں میں 17 رن) کی شکل میں پانچویں اوور میں گرا تھا اور تب تک ٹیم کا اسکور 37 رن پہنچ گیا تھا۔ مشکل اس وقت کھڑی ہوئی جب کرس گیل (20 گیندوں پر 20 رن) اور کپتان کے ایل راہل (27 گیندوں پر 27 رن) دو لگاتار گیندوں پر پویلین لوٹ گئے۔ گیل کو جیسن ہولڈر نے دسویں اوور کی آخری گیند پر اور راہل کو راشد خان نے گیارہویں اوور کی پہلی گیند پر آؤٹ کیا۔ دو لگاتار وکٹ گرنے سے ٹیم کا اسکور 10.1 اوور میں 3 وکٹ کے نقصان پر 66 رن ہو گیا اور پھر یہاں سے جو دباؤ پنجاب کے بلے بازوں پر بنا، وہ آخر تک قائم رہا۔

گلین میکسویل ایک بار پھر ناکام ثابت ہوئے جب سندیپ شرما کی گیند پر 12 رن بنا کر آؤٹ ہوئے، پھر کچھ ہی دیر بعد دیپک ہوڈا بھی بغیر کوئی رن بنائے راشد خان کا شکار بن گئے۔ بعد ازاں کرس جارڈن 7 رن بنا کر اور مروگن اشون 4 رن بنا کر جلدی جلدی آؤٹ ہو گئے۔ قابل غور بات یہ ہے کہ چوتھے نمبر پر بلے بازی کرنے آئے نکولس پورن سے امید تھی کہ وہ آخر کے اوور میں تیزی کے ساتھ رن بنائیں گے، لیکن حیدر آباد کی بہترین گیندبازی کے سامنے کچھ خاص نہیں کر سکے۔ انھوں نے 28 گیندوں پر 2 چوکوں کی مدد سے ناٹ آؤٹ 32 رن بنائے۔ یہ بھی کہا جا سکتا ہے کہ پورن کی اس سنبھل کر کھیلنے والی اننگ نے پنجاب کو 126 رن تک پہنچنے میں کافی مدد پہنچائی۔

حیدر آباد کی جانب سے گیندبازی میں ایک بار پھر راشد خان نے سبھی بلے بازوں کو پریشان کیا۔ انھوں نے 4 اوور میں محض 14 رن دے کر 2 وکٹ لیے۔ 2-2 وکٹ جیسن ہولڈر اور سندیپ شرما کو بھی ملے جنھوں نے 4-4 اوور میں بالترتیب 27 اور 29 رن دیے۔ خلیل احمد نے 4 اوور میں 31 رن اور نٹراجن نے 4 اوور میں 23 رن دیے، ان دونوں کو کوئی وکٹ حاصل نہیں ہوا۔

127 رن کے ہدف کا پیچھا کرنے اترے حیدر آباد کے کپتان وارنر اور جانی بیرسٹو نے ٹیم کو تیز شروعات دی اور محمد سمیع کی گیندوں پر کچھ اچھے شاٹ لگائے۔ عرش دیپ سنگھ بھی اپنے پہلے اوور میں کافی مہنگے ثابت ہوئے۔ پنجاب کو پہلی کامیابی اسپنر روی بشنوئی نے دلائی جنھوں نے خطرناک بلے بازی کر رہے کپتان وارنر کو وکٹ کے پیچھے کیچ آؤٹ کرایا۔ وارنر نے 20 گیندوں پر 2 چھکوں اور 3 چوکوں کی مدد سے 35 رن کی اننگ کھیلی۔ جلد ہی دوسرے سلامی بلے باز جانی بیرسٹو بھی 20 گیندوں پر 19 رن بنا کر آؤٹ ہو گئے۔ میچ نے دلچسپ موڑ تب اختیار کیا جب عبدالصمد محض 7 رن بنا کر محمد سمیع کا شکار ہو گئے۔ اس وقت حیدرآباد کا اسکور 8.5 اوور میں 3 وکٹ کے نقصان پر 67 رن تھا اور پنجاب میچ میں واپسی کی امید کر رہی تھی۔

اس مقام پر گزشتہ میچ کے ہیرو رہے منیش پانڈے اور وجے شنکر نے ٹیم کو مضبوطی عطا کی اور سنگل-ڈبل لے کر ٹیم کا اسکور بڑھاتے رہے۔ کچھ مواقع پر باؤنڈری بھی آئے لیکن باؤنڈری لائن پر سچت کے ذریعہ ایک لاجواب کیچ نے منیش پانڈے کی اننگ کا خاتمہ کر دیا۔ پانڈے نے وکٹ بچانے کی کوشش میں دھیمی بلے بازی کی اور انھوں نے 29 گیندوں میں محض 15 رن بنائے۔ 16.1 اوور کے بعد حیدر آباد کا اسکور 100 رن ہو گیا تھا اور جیت بہت مشکل نہیں تھی کیونکہ 23 گیندوں میں محض 27 رنوں کی ضرورت تھی اور ہاتھ میں 6 وکٹ تھے۔ پنجاب کے خیمہ میں خوشی کی لہر اس وقت دوڑ گئی جب 18ویں اوور کی پانچویں گیند پر وجے شنکر بھی 26 (27 گیندوں پر 4 چوکے کی مدد سے) رن بنا کر آؤٹ ہو گئے۔

میچ دیکھنے والوں کی سانسیں تھم گئیں تھیں کیونکہ 13 گیندوں پر 17 رن کی ضرورت تھی اور ہاتھ میں 5 وکٹ تھے۔ لیکن انیسویں اوور کی تیسری اور چوتھی وکٹ گیند پر کرس جورڈن نے لگاتار دو وکٹیں گرا کر پنجاب کی امیدوں کو پَر لگا دیا۔ ہولڈر 5 رن اور راشد خان بغیر کوئی رن بنائے پویلین لوٹ گئے تھے۔ آخری اوور میں حیدر آباد کو جیت کے لیے 13 رن کی ضرورت تھی اور گیند پنجاب کے کپتان راہل نے عرش دیپ سنگھ کو تھمائی گئی۔ انھوں نے پہلی گیند پر ایک رن دیا، اور دوسری گیند پر سندیپ شرما (صفر) کو پویلین بھیج دیا۔ حیدر آباد کی ساری امیدیں پریم گرگ کے اوپر جم گئیں کیونکہ وہ بڑے شاٹ لگانا جانتے تھے۔ لیکن اگلی ہی گیند پر وہ بھی 3 رن کے انفرادی اسکور پر کیچ آؤٹ ہو گئے۔ میچ پر اب پنجاب کی گرفت مضبوط ہو گئی۔ چوتھی گیند پر کوئی رن نہیں بنا اور یہیں پر میچ ایک طرح سے ختم ہو گیا کیونکہ جیت کے لیے 12 رنوں کی ضرورت تھی۔ پانچویں گیند پر خلیل (صفر) رن آؤٹ ہو گئے اور اس طرح سے آخری گیند پھینکنے کی ضرورت بھی نہیں پڑی۔ 1 گیند رہتے ہی حیدر آباد کی پوری ٹیم 114 رن بنا کر آؤٹ ہو گئی۔

پنجاب کی طرف سے مجموعی طور پر سبھی گیندبازوں نے اپنی طرف سے بہترین کارکردگی کا مظاہرہ کیا۔ کوئی گیندباز ایسا نہیں رہا جس کے وکٹ کا خانہ خالی ہو۔ خصوصی طور پر کرس جورڈن اور عرش دیپ سنگھ قابل تعریف رہے جنھوں نے بالترتیب 4 اوور میں محض 17 رن دے کر 3 وکٹ، اور 3.5 اوور میں 23 رن دے کر 3 وکٹ اپنے نام کیا۔ علاوہ ازیں روی بشنوئی نے 4 اوور میں 13 رن دے کر 1 وکٹ، مروگن اشون نے 4 اوور میں 27 رن دے کر 1 وکٹ اور محمد سمیع نے 4 اوور میں 34 رن دے کر 1 وکٹ۔

ایک نظر اس پر بھی

آئی پی ایل فائنل میں چنئی نے دی کولکاتا نائٹ رائڈرس کو شکست، چنئی بنا چوتھی مرتبہ آئی پی ایل چیمپئن

سلامی بلے باز ڈو پلیسسز (86) کی بہترین نصف سنچری کے ساتھ روبن اتھپا کے (31) اور معین علی کے (ناٹ آؤٹ37) کی جارحانہ اننگز کے نتیجے میں چنئی سپر کنگس نے کولکاتا نائٹ رائڈرس کو  27 رنوں سے شکست دے دی اور چوتھی بار آئی پی ایل چمپئن بننے کا فخر حاصل کرلیا۔ 

آئی پی ایل 2021: کولکاتہ تیسری مرتبہ آئی پی ایل کے فائنل میں ، راہل ترپاٹھی نے چھکا لگا کر دلائی جیت

)  آئی پی ایل 2021 کا خطابی مقابلہ اب کولکاتہ نائٹ رائیڈرس اور چنئی سپرکنگس کے درمیان کھیلا جائے گا ۔ کے کے آر نے کوالیفائر 2 کے میچ میں دہلی کیپیٹلز کو 3 وکٹوں سے شکست دیدی ہے ۔ دہلی کی ٹیم پوائنٹس ٹیبل پر سرفہرست رہی تھی اور اس کو کوالیفائر 1 میں چنئی سپرکنگس نے شکست دی تھی ۔ میچ ...

چنئی نے ریکارڈ بنایا، نویں بار آئی پی ایل کے فائنل میں پہنچی، دہلی کو دی شکست

دبئی میں کھیلے گئے کوالیفائنگ مقابلہ میں چنئی سپر کنگس (سی ایس کے) نے دہلی کیپیٹلس کو شکست دے کر فائنل میں اپنی جگہ بنا لی ۔ سی ایس کے کپتان دھونی نے ایک شاندار پاری کھیلتے ہوئے چھہ گیندوں میں 18 رن بنائے اور آخری گیند پر چوکا لگاکر ٹیم کو جیت دلائی۔رابن اتھپا اور رتو راج ...

اتراکھنڈ: شدید بارش سے اب تک 46 افراد ہلاک، 11 لاپتہ

اتراکھنڈ میں تقریباً 48 گھنٹے ہوئی موسلا دھار بارش اور لینڈ سلائیڈنگ کی زد میں آنے سے اب تک کل 46 افراد ہلاک اور 11 دیگر لاپتہ ہیں۔ اس تباہی میں کل 12 افراد زخمی حالت میں اسپتالوں میں زیر علاج ہیں۔ تباہی میں کل نو عمارتوں کو جزوی یا مکمل طور پر نقصان پہنچا ہے۔

بھٹکل میونسپالٹی کے 21دکانوں کی نیلامی 25اکتوبر کو : خواہش مند تاجر حضرات توجہ دیں

بھٹکل ٹاؤن میونسپالٹی کی ملکیت والے 21پرانے دکانوں کی25اکتوبر کو  دوبارہ نیلامی کی جائے گی ۔ اس سلسلےمیں بھٹکل میونسپالٹی حدود کے عوام الناس کو اطلاع دی گئی ہےکہ وہ متعلقہ دکانیں 12برسوں کی مدت کے لئے کرایہ پر دئیے جائیں گے۔ خواہش مند حضرات متعلقہ  ضروری دستاویزات اور شرائط کے ...

مرکزی حکومت ہر محاذ پر ناکام، گیس سلنڈر، پٹرول -ڈیزل کی بڑھتی قیمتوں پرسچن پائلٹ کامرکز پرحملہ

راجستھان کے سابق نائب وزیر اعلیٰ سچن پائلٹ منگل کو جودھپور کے دورے پر تھے۔ ہوائی راستے سے جودھ پور پہنچنے کے بعد، ہوائی اڈے پر میڈیا سے بات کرتے ہوئے انہوں نے مرکزی حکومت پر حملہ کیا۔

شاہ رُخ خان کے بیٹے آرین خان کی حمایت میں شیوسینالیڈرپہنچے سپریم کورٹ

بالی ووڈ کے سپر اسٹار شاہ رخ خان کے بیٹے سے وابستہ کروز ڈگرس پارٹی کا معاملہ سپریم کورٹ تک پہنچ گیا ہے۔ شیو سینا کے لیڈر کشور تیواری نے سپریم کورٹ میں درخواست پیش کرتے ہوئے آرین خان اور دیگر ملزمان کے بنیادی حقوق کا حوالہ پیش کیا ہے۔