’لڑکی ہوں، لڑ سکتی ہوں‘ نعرہ سے متاثر خاتون صحافی ندا احمد نے صحافت کو کیا الوداع، سیاست میں رکھا قدم

Source: S.O. News Service | Published on 19th January 2022, 9:28 PM | ملکی خبریں |

مراد آباد،19؍جنوری (ایس او نیوز؍ناظمہ فہیم) کانگریس جنرل سکریٹری پرینکا گاندھی کے لڑکی ہوں لڑسکتی ہوں سے متاثر ہوکر کئی ٹی وی چینلوں میں اینکر رہی نِدا احمد نے صحافت کو الوداع کرتے ہوئے کانگریس پارٹی میں شامل ہوگئی ہیں۔

 ندا احمد کا کہنا ہے کہ سیاست میں جو لوگ بہت زیادہ وعدے کر تے ہیں، وہ کچھ نہیں کرتے، اس لئے میں وعدے نہیں کروں گی، بلکہ کچھ کر کے دکھانا چاہتی ہوں۔ انہوں نے کہا کہ کانگریس کی برانڈ لیڈر پر ینکا گاندھی نے مجھے یہ موقع دیا ہے کہ میں اپنے علاقے کے عوام کے لئے کچھ کردکھاوں۔

ندا نے بتایا کہ پرینکا گاندھی کے اس نعرے ’لڑکی ہوں لڑ سکتی ہوں‘  نے مجھے بہت متاثر کیا ہے۔ صحافت میں عوامی خدمات کے لئے ایک حد بندی ہے کیونکہ آپ جس ادارے سے جڑے ہوتے ہیں اس کے مطابق آپ کو کام کرنا ہوتا ہے مگر سیاست کی زمین عوامی فلاح بہبود کے کام کرنے کے لئے بہت بڑی ہے۔ ندا نے کہا کہ حرکت کرنے کا کام ہمارا ہے اور برکت کرنے کا کام ﷲ کا ہے۔

نِدا احمد آج تک نیوز، نیوز18 اور زی نیوز جیسے کئی چینلوں میں کام کرچکی ہیں 

ندا کے دادا سنبھل میں سن 1952ء میں کانگریس کے چیئر مین رہے، یہی ان کی سیاسی میراث ہے۔ ندا جس علاقے کی رہنے والی ہیں وہاں کے قد آور لیڈر ڈاکٹر برق ہیں۔ ندا کا کہنا ہے کہ خواتین کو ہر شعبہ میں آگے آنا چاہئے، یہی سوچ کر میں نے سیاست میں قدم رکھا ہے۔ حالانکہ ندا کا زیادہ تر وقت صحافتی پیشہ کی وجہ سے دہلی میں کٹا ہے، سنبھل میں ان کی آمد و رفت کم ہی رہی ہے مگر ان کا کہنا ہے کہ سنبھل میں میرے خاندان کی جڑیں ہیں اور میں خود یہیں پیدا ہوئی ہوں اس لئے سنبھل کی ترقی اور یہاں کے عوام کے لئے کچھ کر گزرنا میری اولین خواہش ہے۔

اس دوران انہوں نے موجودہ اسمبلی ممبر اقبال محمود پر بھی سوال کھڑے کرتے ہوئے کہا کہ انہیں یہاں کے عوام نے جنتے موقعے دیئے ہیں انہوں نے یہاں کی ترقی اور عوام کی بھلائی کے لئے کوئی کام نہیں کیا۔ ندا نے کہا کہ کانگریس پارٹی ہی ملک کے سیکولزم کو مضبوط بنائے رکھنے اور ملک کی ترقی میں اہم کر دار ادا کرتی رہی ہے اس لئے عوام کی رائے بن رہی ہے کہ وہ کانگریس کو ہی اپنی نمائندگی دے۔

ندا احمد نے صاف طور پر کہا کہ خواتین کے حقوق کو لگا تار پامال کیا جا رہا ہے اور ان کے تحفظ کی بات تو ہوتی ہے مگر اس پر عمل در آمد نہیں ہوتا اور یہ صرف اس لئے ہے کہ خواتین کی نمائندگی سیاست میں بہت کم ہے۔ یہ موقع کانگریس نے دیا ہے کہ خواتین کو مضبوط سیاسی نمائندگی حاصل ہو۔ کانگریس کی سربراہ سونیا گاندھی و کانگریس کی برانڈ لیڈر پرینکا گاندھی کی موجودگی اس بات کی کھلی دلیل ہے کہ کانگریس ہی وہ واحد جماعت ہے جو خواتین کو وہ طاقت دینا چاہتی ہے جس پر خواتین کا حق ہے۔

ندا نے خصوصی گفتگو میں کہا کہ کانگریس نے 40 فیصد خواتین کو سیاست میں نمائندگی دینے کا جو اعلان کیا تھا اس پر عمل در آمد کر کے یہ واضح کر دیا ہے کہ کانگریس جو کہتی ہے وہ کرتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ پرینکا گاندھی کی قیادت میں خواتین کا سیاسی مستقبل روشن ہے۔ خواتین جو اپنی ذمہ داریاں نبھاتی ہوئی اپنے خاندان کو سنوارتی سجاتی ہیں وہ خواتین اگر سیاست میں کسی مقام تک پہنچیں گی تو یقیناً یہ ملک اور یہاں کے عوام کا مستقبل بھی روشن ہو جائے گا۔

ایک نظر اس پر بھی

آندھرا پردیش میں گیس سلنڈر پھٹنے سے حادثہ، 4 افراد ہلاک

  آندھرا پردیش کے ضلع اننت پور میں پکوان گیس سلنڈر کے پھٹنے کے نتیجہ میں چار افراد ہلاک اور دیگر دو شدید طور پر جھلس گئے۔ ضلع کے مولاکالیڈو علاقہ کے ایک مکان میں یہ واقعہ پیش آیا۔ گیس سلنڈر کے پھٹنے سے متصل مکان کی چھت گر گئی۔ اس واقعہ میں پڑوس کے مکان کے چار افراد ہلاک ہو گئے، ...

منشیات کیس، بالی ووڈ کے سپر اسٹار شاہ رخ خان کے بیٹے آرین خان کو کلین چٹ

  بالی ووڈ کے سپر اسٹار شاہ رخ خان کے بیٹے آرین خان کو نحری جہاز میں منعقدہ ریو پارٹی میں منشایات کے استعمال کے معاملے میں منشیات مخالف دستے کی ایک خصوصی تحقیقاتی ٹیم ایس آئی ٹی نے کلین چٹ دے دی ہے جسکی تشکیل اس کیس پر انگلیاں اٹھنے کے بعد عمل میں آئ تھی اور اسے ازسرنو تحقیقات کی ...

ہندوستان میں کوئلہ بحران پھر پیدا ہونے کے آثار، شدید بجلی کٹوتی کا خدشہ: رپورٹ

ہندوستان کو رواں مالی سال (2022-23) کی دوسری یعنی ستمبر میں ختم ہونے والی سہ ماہی کے دوران کوئلہ کی شدید قلت کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے، کیونکہ اس وقت بجلی کی طلب زیادہ ہونے کی توقع ہے۔ خبر رساں ادارے روئٹرز کے مطابق وزارت توانائی کی ایک داخلی کمیٹی نے اپنی رپورٹ میں ان خدشات کا اظہار ...

دہلی : اسٹیڈیم میں کھلاڑیوں کا داخلہ روک کر کتے کو اسٹیڈیم میں سیر کرانا آئی اے ایس جوڑے کو پڑا بھاری

  دہلی کے تیاگراج اسٹیڈیم میں کھلاڑیون کا داخلہ روک کر کتے کو سیر کرانا آئی اے ایس جوڑے کو بھاری پڑ گیا ہے۔ مرکزی وزارت داخلہ نے آئی اے ایس جوڑے سنجیو کھیروار اور رنکو دُگا کا تبادلہ کر دیا ہے۔ مرکزی وزارت داخلہ کی جانب سے یہ کارروائی سنجیو کھیروار اور ان کی اہلیہ رنکو دگا کی ...

یاسین ملک کے حوالے سے او آئی سی کے بیان پر ہندستان کا شدید اعتراض

ہندوستان نے جمعہ کو یاسین ملک معاملے میں عدالت کے فیصلے سے متعلق اسلامی تعاون تنظیم کے آزاد مستقل انسانی حقوق کمیشن کے تبصروں پر سخت اعتراض کیا اور کہا کہ ان تبصروں کے ذریعے او آئی سی۔ آئی پی ایچ آر سی نے کشمیر کے علیحدگی پسند لیڈر کی دہشت گردانہ کارروائیوں کی حمایت کی ہے۔