ریفرنڈم 2020 بیکار کا مسئلہ ہے: ہندوستانی سفیر ہرش وردھن شررنگلا

Source: S.O. News Service | Published on 14th October 2019, 7:36 PM | ملکی خبریں | عالمی خبریں |

واشنگٹن،14اکتوبر(ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا)  امریکہ میں ہندوستان کے سفیر ہرش وردھن شررنگلا نے کہا کہ مٹھی بھر سکھوں کی طرف سے حمایت یافتہ ریفرنڈم 2020 ایک بیکار کا مسئلہ ہے جسے ہندوستان مخالف ایک پڑوسی ملک حمایت دے رہا ہے۔شررنگلا نے اتوار کو کہا کہ اسے وہ مٹھی بھر لوگ حمایت دے رہے ہیں جنہیں کمیونٹی کی بہت ہی کم حمایت حاصل ہے۔انہوں نے کہا کہ اس قسم کے گروپ دہشت گرد ایکٹ  ہیں۔ایسا پہلی بار ہے جب کسی چوٹی کے ہندوستانی سفیر نے ریفرنڈم 2020 کے خلاف کھلے عام کچھ کہا ہے۔خالصتان کی تشکیل کو لے کر علیحدگی پسند سکھ ریفرنڈم 2020 کو حمایت دے رہے ہیں۔انہوں نے بالٹیمور میں ایک گرودوارہ میں درشن کے بعد نامہ نگاروں سے کہاکہ (ریفرنڈم کے) اسپانسر مٹھی بھر لوگ ہیں،نام نہاد ریفرنڈم 2020 بیکار کا مسئلہ ہے۔ شررنگلا نے کہاکہ وہ مایوس ہو رہے ہیں اور دہشت گردی اور عسکریت پسند انہ کارروائیوں کو انجام دے رہے ہیں،مجھے لگتا ہے کہ یہ ماضی کی بات ہو جائے گی۔ انہوں نے ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے ریفرنڈم کا معاملہ اٹھانے والوں کو پاکستان کے ایجنٹ بتایا۔شررنگلا نے کہاکہ جیسا کہ ہم جانتے ہیں کہ ان لوگوں کو ہمارا وہ پڑوسی ملک حمایت دے رہا ہے، جو مسلسل ہمارا مخالف رہا ہے،وہ اس ملک کے ایجنٹ ہیں۔انہوں نے جھوٹی افواہیں پھیلائی ہیں اور پروپیگنڈہ کیا ہے۔ انہوں نے امریکہ اور ہندوستان کے درمیان تعلقات کو مضبوط کرنے میں سکھوں کے کردار کی تعریف کرتے ہوئے کہاکہ ہم بڑی کمیونٹی کے ساتھ کام جاری رکھیں گے اور چھوٹے اور سکڑ رہی کمیونٹی کو نظر انداز کریں گے۔ سکھوں کی روایتی پگڑی اور سفید کرتا اور پتلون پہنے سفیر نے ’سکھ ایسوسی ایشن آف بالٹیمور گرودوارہ‘ اور ’سکھس آف امریکہ‘ دو منعقد پروگرام میں سکھ کمیونٹی کے ارکان سے بات چیت کی۔انہوں نے کہا کہ مودی حکومت نے کمیونٹی کے مسائل کو دور کرنے کے لئے اقدامات کئے ہیں۔

ایک نظر اس پر بھی

ممتا بنرجی کا بڑا اعلان، ریاستی کسانوں کو ہر سال 10 ہزار روپے دے گی حکومت

اسمبلی انتخابات سے قبل کسانوں سے کئے گئے وعدے کو پورا کرتے ہوئے وزیر اعلی ممتا بنرجی نے جمعرات کو ’کرشک بانڈو‘ منصوبے کا اعلان کیا ہے۔ اس کے تحت ریاست کے کسانوں کو ہر سال 10 ہزار روپے کی مالی امداد دی جائے گی۔ ریاست کے 60 لاکھ کسان اس سے مستفید ہوں گے۔

مہاراشٹر: پٹاخہ فیکٹری میں دھماکہ سے افرا تفری، کئی کلو میٹر تک گھروں کو پہنچا نقصان

مہاراشٹر کے پالگھر ضلع واقع ڈھانو میں ایک پٹاخہ فیکٹری میں زوردار دھماکہ کی وجہ سے آگ لگ گئی ہے۔ یہ فیکٹری ڈھانو ہائیوے سے تقریباً 15 کلو میٹر دور جنگل میں موجود ہے۔ دھماکہ کے بعد لگی آگ سے تقریباً 10 سے 12 کلو میٹر تک کے علاقے میں موجود گھروں میں نقصان ہونے کی خبر سامنے آ رہی ...

ریاستوں کے پاس کورونا کے 2.18 کروڑ سے زیادہ ٹیکے دستیاب: وزارت صحت

 صحت اور خاندانی بہبود کی وزارت نے جمعرات کے روز کہا کہ ریاستوں اور مرکز کے زیر انتظام علاقوں میں ابھی بھی کووڈ-19 کے ٹیکے کے 21828483 ڈوز دستیاب ہیں۔ وزارت نے کہا کہ ریاستوں اور مرکز کے زیر انتظام علاقوں میں اگلے تین دنوں میں کم از کم 5671350 اور ڈوز مل جائیں گے۔ آج صبح کے اعداد و شمار ...

مایاوتی نے پھر سماج وادی پارٹی کو تنقید کا نشانہ بنایا

بہوجن سماج پارٹی (بی ایس پی) سپریمومایاوتی نے جمعرات کو ایک بار پھر پارٹی سے نکالے گئے باغی اراکین اسمبلی سے ایس پی سربراہ کی ملاقات اور ان کو پارٹی میں شامل کرنے کی چہ مہ گوئیوں کے درمیان ایس پی کو اپنی سخت تنقیدوں کا نشانہ بنایا۔

دہلی فساد: آصف اقبال تنہا اور نتاشا ناروال سمیت تینوں سماجی کارکنان کو راحت، عدالت کا فوری رہائی کا حکم

دہلی تشدد سے متعلق معاملہ میں جامعہ کے طالب علم آصف اقبال تنہا اور پنجرا توڑ کی سماجی کارکن نتاشا ناروال اور دیونگنا کالیتا کو بڑی راحت حاصل ہوئی ہے۔ دہلی کی کڑکڑڈومہ عدالت نے ان تینوں کو ؎فوری رہا کرنے کا حکم صادر کیا ہے۔ دہلی ہائی کورٹ سے درخواست ضمانت منظور ہونے کے بعد بھی ...

ٹیکہ کاری کے معاملہ میں دنیا کے 89 ممالک ہندوستان سے آگے: کپل سبل

 کانگریس لیڈر کپل سبل نے بی جے پی پر ٹیکہ کاری کے معاملہ میں سیاست کرنے کا الزام عائد کیا ہے اور ہندوستان کو ٹیکہ کاری کے معاملہ میں دنیا میں 89 ممالک سے پیچھے قرار دیا۔ اس سے قبل اس معاملہ پر پی اے سی (پبلک اکاؤنٹ کمیٹی) میں بحث کرنے کی برسراقتدار جماعت کے ارکان پارلیمنٹ نے ...

امریکہ اور روس کا اپنے اپنے سفیروں کی ماسکو اور واشنگٹن میں واپسی کا اعلان

امریکہ اور روس نے اپنے اپنے سفیروں کی ایک دوسرے کے دارالحکومت میں واپسی سے اتفاق کیا ہے۔ جنیوا میں بدھ کو روسی صدر ولادی میر پوتین نے امریکی ہم منصب جو بائیڈن سے ملاقات کے بعد دونوں ملکوں کے سفیروں کی ان کے مناصب پر واپسی کا اعلان کیا ہے۔

اسرائیل کا غزہ پر پھر فضائی حملہ، غباروں کے جواب میں گولے داغے!

 اسرائیل نے نئی حکومت تشکیل دئے جانے کے بعد فلسطین پر پھر آگ برسانی شروع کر دی ہے۔ اسرائیلی فوج کا کہنا ہے کہ اس نے غزہ میں واقع حماس کے ٹھکانوں کو نشانہ بنایا ہے اور یہ کارروائی غزہ پٹی کی جانب سے بھیجے جانے والے غبارے کے بعد کی گئی ہے۔