ہندوستان خام تیل کی قیمت 70؍ ڈالر فی بیرل کروانے کیلئے کوشاں

Source: S.O. News Service | Published on 20th October 2021, 11:41 AM | ملکی خبریں |

نئی دہلی، 20؍اکتوبر (ایس او نیوز؍ایجنسی)  مودی حکومت پیٹرول اور ڈیزل پر عائد ٹیکس کو تو کم کرنے کو تیار نہیں ہے تاہم ان کی قیمتوں پر قابو پانے کیلئے وہ ان ممالک پر تیل کی قیمت کم کرنے کیلئے دباؤ ڈال رہی ہے جن سے خام تیل خریدا جاتاہے۔حکومت ہند کی دلیل ہے کہ عالمی منڈی میں  خام  تیل کی قیمت 70؍ ڈالر فی بیرل سے زیادہ نہیں ہونی چاہئے جو اس وقت 84؍ ڈالر فی بیرل ہے۔حکومت ہند  اس سلسلے میں تیل پیدا کرنے والے ممالک اور صارفین  کیلئے ’’واجب دام‘‘ کی دلیل دی ہے۔ اس   کے ساتھ ہی خام تیل برآمد کرتے ہوئے بہتر قیمت پانے کیلئے حکومت ہند نے مختلف ریفائنریز کا ایک مشترکہ پینل بنانے کا بھی فیصلہ کیا ہے۔  حکومت اسی ہفتے دہلی میں منعقد ہونے والی تونائی سے متعلق عالمی کانفرنس میں بھی اس موضوع کو چھیڑے گی۔ کیمبریج اینرجی  ریسرچ اسوسی ایٹس ویک   نامی اس پروگرام میں سعودی عرب اور تیل برآمد کرنے والے ممالک کی تنظیم اوپیک کے نمائندے بھی شریک ہوں گے۔  دوسری طرف  وزیر اعظم نریندر مودی گلوبل آئل اینڈ گیس سیکٹر کے چیف ایگزیکیوٹیو افسران اور ماہرین کے ساتھ بدھ 20؍  اکتوبرکو شام 6؍ بجے ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعے  بات چیت کریں گے۔ یہ چھٹا ایسا سالانہ رابطہ ہے جو2016ء میں شروع ہوا اور یہ تیل اور گیس کے شعبے میں عالمی رہنماؤں کی شرکت کی نشاندہی کرتا ہے جو شعبے کے اہم مسائل پر غور کرتے ہیں اور ہندستان کے ساتھ تعاون اور سرمایہ کاری کے امکانی شعبے تلاش کرتے ہیں۔اس بات چیت کا وسیع موضوع صاف نمو اور پائیداری کو فروغ دینا ہے۔ یہ بات چیت ہندستان میں ہائیڈروکاربن سیکٹر میں ریسرچ اور پیداوار کی حوصلہ افزائی، توانائی کے رُخ پر آزادی، گیس پر مبنی معیشت، صاف اور توانائی کے موثر حل کے ذریعے اخراج میں کمی، گرین ہائیڈروجن معیشت،بائیو فیول کی پیداوار میں اضافہ اور اضافی دولت کی تخلیق جیسے شعبوں پر مرکوز رہے گی۔معروف کثیر ملکی تنظیموں اور بین اقوامی تنظیموں کے سی ای او اور ماہرین  اس میں شریک ہوں گے۔

ایک نظر اس پر بھی

مظفرنگر: پریکٹیکل کے بہانے نشہ دے کر 17 لڑکیوں سے ریپ کی کوشش! دو اسکول مینیجروں کے خلاف مقدمہ درج

ضلع مظفرنگر کے قصبہ پورقاضی دو نجی اسکولوں کے مینیجروں پر 17 لڑکیوں کو مبینہ طور پر نشیلی چیز کھلا کر جنسی ہراسانی کا نشانہ بنانے اور آبروریزی کی کوشش کرنے کا الزام عائد ہوا ہے۔ میڈیا رپورٹ کے مطابق پولیس نے اس معاملہ میں دونوں ملزمان کے خلاف مقدمہ درج کر لیا ہے۔ اسی کے ساتھ ...

متھرا میں شر انگیزی کی کوشش ناکام، 6؍ دسمبر پرامن گزرا

مغربی یوپی کے اہم شہرمتھرا میں مذہبی نفرت پھیلا کر ماحول خراب کرنے اور پورےبرج علاقہ کی گنگا جمنی تہذیب کو پارہ پارہ کرنے کے بھگوا تنظیموں کے منصوبوں کو پولیس و ضلع انتظامیہ کی مستعدی نے ناکام بنا دیا ہے۔اس کا نتیجہ یہ ہوا کہ ۶؍دسمبر کا دن پر امن گزر گیا، جس پر شہریوں اور ...

ناگالینڈ میں شہری ہلاکتوں پر برہمی، مرکز کا اظہار افسوس

ناگالینڈ  میں فوج کی فائرنگ میں ۱۴؍ عام شہریوں کی ہلاکت پر افسوس کااظہار کرتے ہوئے وزیر داخلہ امیت شاہ  نے لوک سبھا میں بتایا کہ کوئلے کی کانوں کے مزدوروں کی جس گاڑی کو فوجیوں  نے جنگجوؤں کی گاڑی سمجھ کر اندھادھند فائرنگ کی،اسے رُکنے کا اشارہ کیاگیاتھا مگر گاڑی رکی نہیں بلکہ ...

نتیش سرکار میں 80ہزار کروڑ کا نیا گھوٹالہ؟

کیا بہار حکومت نے 80ہزار کروڑ روپے کا گھوٹالہ کیا ہے؟ یہ سوال اس لیے اٹھایا جارہا ہے کیونکہ کمپٹرولر اینڈ آڈیٹر جنرل(سی اے جی)نے کہا ہے کہ ریاستی حکومت نے بار بار جمع کرانے کے باوجود 79,690 کروڑ روپے کے استعمال کا سرٹیفکیٹ نہیں دیا ہے۔

تبلیغی جماعت کیس میں سست روی پر عدالت برہم، پولیس اہلکار تفتیشی افسر بننے کے لائق نہیں:دہلی ہائی کورٹ

گزشتہ سال مارچ میں ملک میں کورونا انفیکشن کے پھیلاؤ کیلئے تبلیغی جماعت کو براہ راست ذمہ دار ٹھہرانے کی کوشش کی گئی تھی، اس معاملے میں اب دہلی ہائی کورٹ نے پولیس کی کھنچائی کی ہے۔

جے این یو طلبا یونین کا احتجاجی مظاہرہ، بابری مسجد کو پھر تعمیر کرنے کا مطالبہ

جواہر لال نہرو یونیورسٹی طلبا یونین نے 6 دسمبر کی شب احتجاجی مظاہرہ کرتے ہوئے بابری مسجد کو از سر نو تعمیر کرنے کا مطالبہ کیا۔ اس دوران بابا صاحب بھیم راؤ امبیڈکر کو بھی ان کی برسی کے موقع پر یاد کیا گیا اور ہندوا قوتوں کے خلاف نعرے بازی کی گئی۔