آئی ایم اے معاملہ میں نرم رویہ اختیار کرنے کاسوال پیدا نہیں ہوتا: ضمیر احمد خان

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 16th June 2019, 12:21 PM | ریاستی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

بنگلورو،16جون (ایس او  نیوز/ایجنسی) آئی مانیٹری اڈوائزری (آئی ایم اے) نامی پونزی کمپنی کے دھوکہ دہی معاملہ میں نرم رویہ اختیار کئے جانے کا سوال پیدا نہیں ہوتا۔ خصوصی تحقیقاتی ٹیم (ایس آئی ٹی) کی جانب سے تحقیقات جاری ہیں۔اس پس منظر میں بی جے پی کی جانب سے عائد کئے جارہے الزامات بکواس ہیں۔ اس پر توجہ دینے کی کوئی ضرورت نہیں۔ یہ باتیں ریاستی وزیراقلیتی امور بی زیڈ ضمیر احمد خان نے کہیں۔

بروز ہفتہ کوئنس روڈ پر واقع کے پی سی سی دفتر میں کے پی سی سی کے صدر دنیش گنڈوراؤ سے ملاقات اور آئی ایم اے کروڑہا روپئے گھوٹالے معاملہ میں جانکاری فراہم کرنے کے بعد انہوں نے کہا کہ تحقیقات کیلئے تشکیل ٹیم ایس آئی ٹی میں ہم خود جاکر بیٹھ نہیں سکتے۔ اس کیلئے قانون میں گنجائش نہیں ہے۔ ایس آئی ٹی میں شامل افسروں سے امید ہے کہ وہ اس معاملہ کو ضرور حل کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ آئی ایم اے گھپلہ معاملہ سے متعلق سب سے پہلے وزیراعلیٰ کما ر سوامی سے ملاقات کرتے ہوئے تحقیقات کا مطالبہ کرنے والا ضمیر احمد خان ہے۔ بی جے پی قائدین کوچاہئے کہ وہ من مانی باتیں کرنے سے گریز کریں۔ آئی ایم اے گھپلہ میں میرا کردار ہونے سے متعلق کوئی ثبوت ہے تو بی جے پی قائدین پیش کریں۔اس کے بجائے خواہ مخواہ الزام تراشی کرنا ناقابل برداشت ہے۔ اگر وہ میرا کردار ثابت کردیں تو وہ جیسا کہیں گے میں ویسا کرنے تیار ہوں۔انہوں نے مزید کہا کہ ریاستی بی جے پی یونٹ کے صدر بی ایس ایڈی یورپا کہیں بھی بیٹھ کر عوام کو انصاف دلانے کی باتیں کررہے ہیں۔ لیکن معاملہ منظر عام پر آنے کے بعد سے ہم عوام کے ساتھ مسلسل لگے ہوئے ہیں۔ شیواجی نگر کے رکن اسمبلی آر روشن بیگ کاآئی ایم اے گھپلہ میں ہاتھ ہونے کا کوئی ثبوت اب تک نہیں ملا ہے۔آئی ایم اے کمپنی کے مینجنگ ڈائرکٹر محمد منصور خان کی آڈیو کلپ میں روشن بیگ کانام لیا گیا ہے۔ لیکن اس آڈیو کلپ کی آواز منصور خان کی ہے، یانہیں،اس کی تصدیق ابھی باقی ہے۔ تحقیقات سے پہلے کسی کو بھی ملزم قرار نہیں دیا جاسکتا۔ تحقیقات کے بعد حقیقت سامنے آجائے گی، تب تک انتظار کرنا ہوگا۔

ایک نظر اس پر بھی

کرناٹک: بی ایس پی ارکان اسمبلی کمارسوامی کے حق میں ووٹ کریں گے:مایاوتی

کرناٹک میں کانگریس اورجے ڈی ایس کی مخلوط حکومت رہے گی یا جائے گی اس کا فیصلہ آج ہو جائے گا ۔ برسر اقتدار اتحاد کے ارکان اسمبلی کو بی جے پی ٹوڑنے کی کوشش کر رہی ہے لیکن اس بیچ بی ایس پی سپریموں نے کہا ہے کہ اس کی پارٹی کے ارکان اسمبلی کمارسوامی حکومت کے حق میں ہی ووٹ ڈالیں گے ۔ یہ ...

مخلوط حکومت کی بقا کا سسپنس برقرار آج بھی اسمبلی میں تحریک اعتماد پر ووٹنگ کا امکان،باغیوں کو واپس لانے کیلئے سدارامیا کو وزیر اعلیٰ بنانے کی پیش کش

ریاست میں کانگریس جے ڈی ایس مخلوط حکومت کوبچانے کے لئے اتحادی جماعتوں کے قائدین کی کوششوں کا سلسلہ جاری ہے تو دوسری طرف اپوزیشن بی جے پی اس کوشش میں ہے کہ کسی طرح پیر کے روزتحریک اعتماد پر اسمبلی میں ووٹنگ ہو جائے لیکن خدشات ظاہر کئے جارہے ہیں

منگلورو میں ڈینگی سے ٹی وی جرنلسٹ ہلاک 

بی ٹی کے لئے ویڈیو جرنلسٹ کے طور خدمات انجام دینے والے ناگیش پاڈوکی موت کے ساتھ منگلورو میں ڈینگی بخار سے ہونے والی ہلاکتوں میں ایک او ر اضافہ ہواہے۔خیال رہے کہ اس سے قبل ڈینگی بخار میں مبتلا تین افراد کی موت واقع ہوچکی ہے۔

بھٹکل میں 27 اور 28 جولائی کو ہوگا؛ فری ہارٹ چیک آپ کیمپ؛ کالی کٹ سے مشہوراورماہرامراض قلب ڈاکٹر علی فیضل کی ہوگی شرکت

کالی کٹ کے معروف میترا اسپتال اور بھٹکل  کے معروف ویلفئیر اسپتال کے اشتراک سے مورخہ 27 اور28 جولائی کو بھٹکل میں مفت ہارٹ چک اپ کیمپ کا انعقاد کیاجارہاہے جس میں ملک کے مشہور کارڈیالوجسٹ اور میترا اسپتال کے  ڈائرکٹر اینڈ چیف آف کلینکل سروس   ڈاکٹر علی فیضل  شرکت کریں گے۔اس ...

جنوری 19 کو ہوں گےانجمن حامئی مسلمین بھٹکل کے انتخابات؛ اسحاق شاہ بندری الیکشن کمشنر منتخب

قومی تعلیمی ادارہ انجمن حامئی مسلمین بھٹکل کے عام انتخابات اگلے سال 19 جنوری کو ہوں گے جس کے لئے آج سنیچر کو  ہوئی انتظامیہ میٹنگ میں  الیکشن کمشنر کا انتخاب عمل میں آیا ہے۔  اس بات کی تصدیق انجمن کے جنرل سکریٹری جناب صدیق اسماعیل نے کی ہے۔ انہوں نے بتایا کہ  آج کی میٹنگ میں ...

بھٹکلی جماعت المسلمین مینگلورو کا مستحسن اقدام : بنٹوال میں ہوئے سڑک حادثے میں شدید زخمیوں کی عیادت کرنے اور اُنہیں ہرممکن تعاون دینے جماعت کے وفد کا اسپتال دورہ

بھٹکلی  جماعت المسلمین مینگلور کے ایک وفد نے  مینگلور کے مختلف اسپتالوں کا دورہ کرتے ہو ئے  کل جمعہ کو سڑک حادثے میں ہوئے زخمی بھٹکلی لوگوں کی عیادت کی اور اُن کے رشتہ داروں سے بات چیت کرتے ہوئے جماعت کی جانب سے ہر ممکن تعاون کا یقین دلایا۔