وڑلڈ کپ ہاکی: سیمی فائنل میں پاکستان سے بھڑے گا ہندوستان،  کس کے ہاتھ لگے گی انڈر 19 ورلڈ کپ کی ٹرافی؟

Source: S.O. News Service | By S O News | Published on 4th February 2020, 2:02 PM | اسپورٹس |

پوٹ چیفسروم،03/فروری(آئی این ایس انڈیا) چار بار کی چمپئن ہندوستانی ٹیم انڈر 19 ورلڈ کپ کے پہلے سیمی فائنل میں منگل کو روایتی حریف پاکستان سے کھیلے گی تو اس کا مقصد مسلسل تیسرے فائنل میں جگہ بنانے کا ہوگا۔ دونوں ٹیمیں سیمی فائنل تک ناقابل تسخیر رہی ہیں۔ہندوستان نے کوارٹر فائنل میں آسٹریلیا کو اور پاکستان نے افغانستان کو شکست دی۔پاکستان کے کپتان روہیل نذیر نے اس میچ کو لے کر زیادہ جذباتی ہونے سے انکار کیا لیکن یہ حقیقت ہے کہ ٹورنامنٹ میں یہ سب سے زیادہ دباؤ والا میچ ہوگا۔اس میں دونوں ٹیموں کے کھلاڑیوں کا اصل امتحان ہو گا۔اس میچ میں اچھا کھیلنے سے کوئی بھی کھلاڑی راتوں رات اسٹار بن جائے گا۔پاکستان کے اوپنر محمد ہریرہ نے افغانستان پر ملی جیت کے بعد کہا تھاکہ یہ کافی دباؤ والا میچ ہے اور اسے لے کر کافی پُرجوش ہیں۔ہم اسے عام میچ کی طرح لیں گے اور بہترین کارکردگی کی کوشش کریں گے۔سینئر کی طرح ہی ہندوستانی جونیئر ٹیم کا پاکستان پر پلڑا بھاری ہے۔ ہندوستان نے گزشتہ سال ستمبر میں اس ایشیا کپ میں بھی شکست دی تھی۔انڈر 19 ورلڈ کپ میں گزشتہ چمپئن ہندوستان نے 2018 ورلڈ کپ میں پاکستان کو 203 رنز سے شکست دی تھی۔ویسے کرکٹ میں روایت معنی نہیں رکھتی اور پریم گرگ کی کپتانی والی ٹیم کو پاکستان پر جیت درج کرنے کے لیے اپنی بہترین کارکردگی کا مظاہرہ کرنا ہوگا۔اوپنر یشسوی جیسوال ہندوستانی بلے بازی کے محور رہے ہیں جنہوں نے چار میچوں میں تین نصف سنچری لگائے ہیں۔باقی بلے بازوں کی کارکردگی قابل ذکر نہیں رہی۔اگر کوارٹر فائنل میں نچلے آرڈر کے بلے باز نہیں چلتے تو نتیجہ کچھ اور بھی ہو سکتا تھا۔تیز گیند باز کارتک تیاگی نے بھی عمدہ کارکردگی کا مظاہرہ کیا تھا۔اتھرو اکولیکر اور فارم میں چل رہے لیگ اسپنر روی وشنوی نے ساتویں وکٹ کے لیے 61 رنز کی شراکت کی جس کی بدولت ہندوستان نے جیت درج کی۔پاکستانی تیز گیند باز عباس آفریدی، محمد عامر خان اور طاہر حسین کو کھیلنا ہندوستانی بلے بازوں کے لیے آسان نہیں ہوگا۔اوپنر ہریرہ نے گزشتہ میچ میں 64 رنز بنا کر پاکستان کی جیت میں اہم کردار ادا کیا۔

ایک نظر اس پر بھی

نیوزی لینڈ کو 372 رنز سے شکست، ہندوستان نے گھریلو میدان پر لگاتار 14ویں ٹیسٹ سیریز جیتی

آف اسپنر روی چندرن اشون اور جینت یادو کے چار چار وکٹوں کی بدولت ہندوستان نے دوسرے کرکٹ ٹسٹ میچ کے صبح کے سیشن میں نیوزی لینڈ کو 167 رنز پر ٖڈھیر کرنے کے بعد 372 رنز سے شکست دے کر دو میچوں کی سیریز 1-0 سے جیت لی۔

اعجاز پٹیل کے ’پرفیکٹ 10‘ کے بعد نیوزی لینڈ کی پوری ٹیم 62 رن پر آؤٹ

ورلڈ ٹیسٹ چمپئن نیوزی لینڈ کی ٹیم اپنے بائیں ہاتھ کے اسپنر اعجاز پٹیل کی ہندوستانی اننگ میں تمام دس وکٹیں لینے کی شاندار کارکردگی سے تحریک نہیں لے سکی اوراس کےبلے بازوں نے ہندوستانی گیندبازوں کے سامنے یہاں دوسرے اور آخری ٹسٹ میچ کے دوسرے دن ہفتہ کو محض 62 رن پر گھٹنے ٹیک دئے۔

ممبئی ٹیسٹ: اعجاز پٹیل نے ایک اننگ میں 10 وکٹ لے کر رقم کی تاریخ، ایسا کرنے والے دنیا کے تیسرے گیندباز

نیوزی لینڈ کے گیندباز اعجاز پٹیل نے کسی ٹیسٹ میچ کی ایک اننگ کے تمام 10 وکٹ حاصل کر کے تاریخ رقم کر دی ہے۔ اعجاز پٹیل ایسا کرنے والے نیوزی لینڈ کے پہلے اور دنیا کے تیسرے گیند باز ہیں۔ اعجاز سے پہلے یہ کارنامہ انیل کمبلے اور جیم لیکر انجام دے چکے ہیں۔

تمل ناڈو نے تیسری بار سیدمشتاق علی ٹرافی کا خطاب جیتا

دھماکہ خیز بلے باز شاہ رخ خان کی 15 گیندوں پر 33 رن کی زبردست اننگ کی بدولت تمل ناڈو نے یہاں پیر کو دہلی کے ارون جیٹلی اسٹیڈیم میں فائنل مقابلے میں کرناٹک کو چار وکٹ سے شکست دے کر تیسری بار سید مشتاق علی ٹرافی کاخطاب جیت لیا۔