پاکستان پر فضائی حملے سے بی جے پی کے لئے پارلیمانی الیکشن کا راستہ ہوگیا آسان !  

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 27th February 2019, 12:42 PM | ساحلی خبریں | ملکی خبریں | اسپیشل رپورٹس |

بھٹکل 27؍فروری (ایس او نیوز)پاکستان کے بہت ہی اندرونی علاقے میں موجود دہشت گردی کے اڈے پر ہندوستانی فضائی حملے سے بی جے پی کو راحت کی سانس لینے کا موقع ملا ہے اور آئندہ پارلیمانی انتخابات جیتنے کی راہ آسان ہوگئی۔اور اب وہ سال2017میں یو پی کے اسمبلی انتخابات جیتنے کی طرز پر درپیش لوک سبھا انتخابات جیتنے کے تعلق سے بھی پر اعتماد ہوگئی ہے۔کیونکہ 2017میں یوپی اسمبلی انتخابات سے ذرا قبل پاک مقبوضہ کشمیر کی سرحدپرُ یوری میں’سرجیکل اسٹرائک‘ کیا گیا تھااور اس کی وجہ سے بی جے پی کی ڈوبتی کشتی کو اُس وقت بڑا سہارا ملاتھا۔اور اب لوک سبھا انتخابات سے چند ہی مہینے پہلے ’فضائی اسٹرائک‘ کیا گیا ہے تو ظاہر ہے کہ انتخابی نقطۂ نظر سے اس کا راستہ بالکل صاف ہوگیا ہے۔

میڈیا رپورٹوں سے معلوم ہوا ہے کہ بی جے پی کے صدر امیت شاہ نے 27فروری بدھ کے دن اپنے قریبی حلیفوں کی میٹنگ طلب کی ہے تاکہ نئے منظر نامے میں پارلیمانی الیکشن جیتنے کے تعلق سے امکانات اور وسائل پر کھل کرگفتگو کرتے ہوئے منصوبے بنائے جائیں۔دوسری طرف پاکستانی سرزمین پر فضائی حملے کی تفصیلات عام ہوتے ہی بی جے پی کی طرف سے ’کمل جیوتی‘ مہم بھی شروع کردی گئی ہے تاکہ اس موقع سے بھرپور فائدہ اٹھایا جاسکے۔

بی جے پی کے ایک اعلیٰ عہدیدار کے مطابق ’’سال 2017کے یو پی اسمبلی انتخابات میں کانگریس اور سماج وادی پارٹی کے مہاگٹھ بندھن کے مقابلے میں بی جے پی کو شکست ہونے کے پورے امکانات دکھائی دے رہے تھے۔لیکن سیاسی پنڈت اُس وقت 26دسمبر 2016کو کیے گئے ’ سرجیکل اسٹرائک‘سے پیدا ہونے والی انتخابی زیریں لہروں کو سمجھنے میں ناکام تھے۔اور اب پاکستان کے اندرونی علاقے میں گھس کر جوتازہ فضائی حملہ کیا گیا ہے اس سے وزیراعظم نریندرا مودی کی حمایت میں بہت ہی بڑی اور تیز زیریں لہریں دوڑنے لگی ہیں۔‘‘

سیاسی تجزیہ نگاروں کا احساس ہے کہ اس تازہ حملے کے بعدبی جے پی کے لئے یو پی اور بہار میں ذات اور طبقات کی بنیاد پر بنے مہاگٹھ بندھن کے سامنے قومیت کاجذبہ ابھارتے ہوئے اور ’مودی کی طاقتور و فیصلہ کن قیادت ‘ کے نام پرمقابلہ کرنا بالکل آسان ہوجائے گا۔وزیر اعظم مودی خود بھی اپنی حالیہ تقریروں میں دہشت گردی کے خلاف سخت ترین موقف اور اقدامات کی باتیں زور و شور سے کررہے ہیں۔اب چونکہ ہرایک ہندوستانی کی زبان پر فضائی حملہ اور اس کے اثرات کا ہی چرچا ہے تو بی جے پی خود سمجھنے لگی ہے کہ بے روزگاری اور زراعتی مسائل وغیرہ جو کہ اس کے لئے دردِ سر بنے ہوئے تھے وہ سب اب پیچھے چلے گئے ہیں اورانتخابات کے لئے اب وہ رکاوٹ پیداکرنے والے مسائل نہیں رہیں گے۔

ایک نظر اس پر بھی

کمٹہ کے چنداور میں نوتعمیر شدہ  مسجد سیدنا عثمان بن عفان کا بھٹکل کےقاضی مولانا محمد اقبال ملا ندوی کی دعاسے افتتاح

کمٹہ سے قریب چنداور گاؤں  کے توحید محلے میں نوتعمیر شدہ مسجدِ جامعہ سیدنا عثمان بن عفان کا جماعت المسلمین بھٹکل کے قاضی مولانا محمد اقبال ملا ندوی کی دعا سے  افتتاح عمل میں آیا۔

سپریم کورٹ کے ریزرویشن فیصلے پر نظرثانی کا مطالبہ لےکر بھٹکل بلاک کانگریس کا احتجاج

سپریم کورٹ کی طرف سے دئیے گئے ایک فیصلے میں ریزرویشن کو بنیادی حق قرار نہیں دینے سے پسماندہ ذات، پچھڑی ذات اور پسماندہ طبقات کی  بےچینی میں اضافہ کردیا ہے۔ متعلقہ فیصلے کے خلاف مرکزی حکومت فوری نظر ثانی کی عرضی داخل کرنے کا مطالبہ لےکر سابق رکن اسمبلی منکال وئیدیا کی قیادت میں ...

بنگلورو کےپروگرام میں ’پاکستان زندہ باد‘ کا نعرہ ؛ امولیا کو سی اے اے مخالف احتجاجیوں نے کردیا باہر ؛ کیا تھا امولیا کا منشاء ؟

شہریت قانون کی مخالفت میں ٹیپو سلطان فرنٹ کے زیراہتمام بنگلور کے فریڈم پارک میں منعقدہ احتجاجی جلسہ میں اچانک  امولیا نامی خاتون مقرر نے پاکستان زندہ باد کے نعرے لگانے شروع کردیے  جس پر منتظمین اور اسٹیج پر تشریف فرما حیدر آباد کے رکن پارلیمان اسد الدین اویسی  حیرت میں پڑ ...

بھٹکل: شرالی گرام پنچایت دفتر کے روبرو خواتین ماہی گیروں کا پھر ایک بار مچھلیاں بیچ کر احتجاج

شرالی گرام پنچایت کی مچھلی مارکیٹ کے باہری علاقےمیں قانون کی خلاف ورزی کرتےہوئے مچھلیاں  فروخت کئے جانے پر گرام پنچایت کی جانب سے کسی بھی طرح کی کوئی  کارروائی نہ کرنے کا الزام عائد کرتے ہوئے مچھلیاں بیچنے والی خواتین نے گرام پنچایت آفس  کے باہر ہی پھر ایک بار  مچھلیاں  لے ...

بھٹکل سرکاری اسپتال کی جانب سے معروف تاجر یونس قاضیا کی تہنیت

بھٹکل کی سرکاری اسپتال کی عمارت کو پینٹنگ کے تمام اخراجات ادا کرنے اور اسپتال کو خوبصورتی بخشنے پر   بھٹکل کے مشہورو معروف تاجر اور بھٹکل مسلم خلیج کونسل کے جنرل سکریٹری جناب محمد یونس قاضیا کے خدمات کی سراہنا کرتے ہوئے  بھٹکل سرکاری اسپتال کی جانب سے شال پوشی کرتے ہوئے ...

ہندوؤں کو اقلیتی درجہ دینے کا مطالبہ کرنے والی عرضی سپریم کورٹ سے خارج

سپریم کورٹ نے لفظ اقلیت کی تعریف کرنے اور ملک کی 9 ریاستوں میں اقلیتوں کی شناخت کےلئے ہدایت جاری کرنے سے متعلق عرضی جمعرات کو خارج کر دی۔ عرضی میں مطالبہ کیا گیا تھا کہ جن ریاستوں میں ہندوؤں کی تعداد کم ہے وہاں انہیں اقلیتی درجہ فراہم کیا جائے۔

اپہار آتشزدگی سانحہ: متاثرین کی ’كيوریٹو عرضی‘ خارج، انسل برادران نہیں جائیں گے جیل

سپریم کورٹ نے اپہار سینما آتشزدگی سانحہ میں لاپروائی کے مجرم اورملک کے جانےمانے بلڈر انسل برادران کو بڑی راحت دیتے ہوئے آتشزدگی شکار کی ایسوسی ایشن کی كيوریٹو عرضی خارج کردی ہے۔ اب سشیل انسل اور گوپال انسل کو جیل نہیں جانا پڑے گا۔

دہلی: ڈاکٹر کفیل کی رہائی کے لئے یوپی بھون پر مظاہرہ، جامعہ کے متعدد طلبا پولیس حراست میں

اتر پردیش میں سیاسی اور سماجی کارکنان کے خلاف استعمال کیے جانے والے سخت قوانین کے خلاف جامعہ ملیہ اسلامیہ کے طلبہ نے جمعرات کو یہاں اتر پردیش بھون کا گھیراؤ کرنے کی کوشش کی لیکن پولیس نے انھیں حراست میں لے لیا۔

کیرالہ: وزیر اعلیٰ وجین کا سڑک حادثے میں 20 افراد کی موت پر تعزیت کا اظہار

 کیرالہ کے وزیراعلی پنارائی وجین نے جمعرات کو تمل ناڈو کے تروپور ضلع کے اویناشی کے نزدیک قومی شاہراہ پرایک لاری کے کیرالہ ریاستی ٹرانسپورٹ کارپوریشن (کے ایس آرٹی سی) کی بس سے ٹکرانے کی وجہ سے ہوئے حادثے میں 20 افراد کی موت پر گہرے دکھ کا اظہار کیا ہے۔

بھٹکل میں موٹر گاڑیوں کی بڑھتی تعداد۔ آمدورفت کی دشواریوں پر قابو پانے کے لئے ٹریفک پولیس اسٹیشن کا قیام اشد ضروری

بھٹکل شہر تعلیمی، معاشی اور سماجی طور پرتیز رفتاری کے ساتھ ترقی کی طرف گامزن ہے۔ لیکن اس ترقی کے ساتھ یہاں پر موٹر گاڑیوں کی تعداد میں بھی بے حد اضافہ ہوا ہے جس سے ٹریفک کے مسائل پیدا ہوگئے ہیں۔ دوسری طرف ٹریفک قوانین کی خلاف ورزیاں بھی بڑھتی جارہی ہیں اوراس سے سڑک حادثے بھی ...

اسمبلی الیکشن: الٹی ہو گئیں سب تدبیریں۔۔۔ آز: ظفر آغا

الٹی ہو گئیں سب تدبیریں... جی ہاں، دہلی اسمبلی الیکشن جیتنے کی بی جے پی کی تمام تدبیریں الٹی پڑ گئیں اور آخر نریندر مودی اور امت شاہ کو کیجریوال کے ہاتھوں منھ کی کھانی پڑی۔ دہلی میں بی جے پی کی صرف ہار ہی نہیں بلکہ کراری ہار ہوئی۔

اسکول کا ناٹک ۔پولس حیلہ بازی کا ناٹک                        ۔۔۔۔۔۔بیدر کے شاہین اسکول کے خلاف ہوئی پولس کاروائی پر نٹراج ہولی یار کی خصوصی رپورٹ

بیدر کے شاہین اسکول میں کھیلے گئے ایک ڈرامے میں اداکاری کرنے والے   اسکولی بچوں سے بار بار پوچھ تاچھ کرنے والے  پولس  کا رویہ ، نہایت  خطرناک اور  خوف میں مبتلا کرنے والا ہے۔ ایک وڈیو کلپ پر انحصار کرتےہوئےمتعلقہ  ڈرامے میں شہری ترمیمی قانون کی تنقید کئے جانے اور وزیرا عظم کی ...

دہلی الیکشن.....شاہین باغ.... شہریت... اور شریعت .... آز: ڈاکٹر سید فاضل حسین پرویز

الحمدللہ! نفرت، دشمنی پھیلانے والوں کو عزت اور ذلت دینے والے نے رسوا کیا۔ ہمارے قدموں کے نیچے سے زمین کھینچنے کی کوشش کرنے والوں کے لئے اُس سرزمین پر جہاں ان کا راج ہے انہیں اجنبی جیسا بناکر رکھ دیا۔ بے شک انسان چاہے لاکھ سازشیں اور کسی کو مٹانے کی کوششیں کرلے جب تک خالق کائنات ...