اور اب کرونا وائرس سے ہلاکت 1868 سے پار !!! متاثرہ افراد کی مجموعی تعداد 72 ہزار 436 تک پہنچی

Source: S.O. News Service | By INS India | Published on 18th February 2020, 8:37 PM | عالمی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

 بیجنگ /18 فروری (آئی این ایس انڈیا) چین میں کرونا وائرس سے مزید 98 افراد کی ہلاکت کے بعد اس وائرس سے مرنے والوں کی مجموعی تعداد 1868 ہو گئی ہے۔چین کے محکمہ نیشنل ہیلتھ کے مطابق منگل تک کرونا وائرس کے مزید 1886 نئے کیسز سامنے آئے ہیں۔ وائرس سے متاثرہ افراد کی مجموعی تعداد 72 ہزار 436 تک پہنچ چکی ہے جن میں بیشتر کا تعلق صوبہ ہوبئی سے ہے۔

سرکاری ٹی وی نے منگل کو کرونا وائرس سے ہلاک ہونے والے ووہان وچنگ اسپتال کے ڈائریکٹر لی زمنگ کی ہلاکت کی بھی تصدیق کی ہے۔حکام کا کہنا ہے کہ 30 جنوری کے بعد سے ایک روز کے دوران کرونا وائرس سے متاثرہ مریضوں کی تعداد کم رپورٹ ہوئی ہے۔ اس سے قبل روزانہ کی بنیاد پر دو ہزار یا اس سے زائد کیسز رپورٹ ہو رہے تھے۔ اسی طرح 11 فروری کے بعد سے اموات کی شرح میں بھی کمی واقع ہوئی ہے۔حکام کا کہنا ہے کہ نئے کیسز میں کمی اس جانب اشارہ ہے کہ حکومت کے سخت اقدامات کی وجہ سے وائرس کو مزید پھیلنے سے روکنے میں مدد مل رہی ہے۔

بیجنگ میں قمری چاند کی تعطیلات اور خوشیاں ماند پڑ چکی ہیں۔کرونا وائرس نے چین سے عالمی تجارت کو شدید نقصان پہنچایا ہے۔ متعدد ممالک نے چین سے آنے والے مسافروں کے داخلے پر پابندی عائد کر رکھی ہے جب کہ چند بڑی فضائی کمپنیوں نے چین کے لیے آپریشنز معطل کر رکھے ہیں۔چین میں بین الاقوامی کمپنیوں نے بھی کام تقریباً بند کر دیا ہے جب کہ کروز شب انڈسٹری کو بھی بڑا جھٹکا لگا ہے۔ چین میں کھیلوں کے مقابلے اور ثقافتی تقریبات بھی بری طرح متاثر ہوئی ہیں۔

عالمی ادارہ صحت نے کرونا وائرس کے پھیلاؤکو روکنے کے لیے چین کے اقدامات کی تعریف کی ہے۔ عالمی ادارے نے کروز جہازوں کو روکنے کی تجویز مسترد کر دی ہے۔ اس سے قبل ڈبلیو ایچ او نے چین میں سفر پر پابندی کو غیر ضروری قرار دیا تھا۔ڈبلیو ایچ او کے سربراہ ٹیڈروس ایڈیھنم نے کہا ہے کہ حالات کے مطابق اقدامات کرنے کی ضرورت ہے۔یاد رہے کہ کرونا وائرس سے سب سے زیادہ متاثر ہونے والے صوبے ہوبئی کو چین کے حکام نے ملک کے دیگر شہروں سے الگ تھلک کر لیا ہے جہاں زمینی اور فضائی سفر پر پابندی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

اٹلی: کورونا پازیٹو مریضوں کا علاج کر رہے 51 ڈاکٹروں کی موت

کورونا وائرس نے اٹلی میں اپنا قہر سب سے زیادہ برپا کر رکھا ہے۔ مہلوکین کی تعداد اٹلی میں چین سے بہت زیادہ ہو چکی ہے اور متاثرین کی تعداد بھی یہاں اتنی زیادہ ہے کہ ڈاکٹروں کو علاج کرنے میں کافی مشقتوں کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔

امریکا: کرونا وائرس سے متاثرہ افراد کی تعداد ایک لاکھ سے متجاوز

امریکا میں کرونا وائرس کے سبب اموات اور نئے کیس سامنے آنے کا سلسلہ جاری ہے۔ اس سلسلے میں مزید 354 افراد کی اموات واقع ہوئی ہیں اور 18 ہزار نئے کیسوں کا اندراج ہوا ہے۔ یہ ایک روز کے اندر اموات اور متاثرین کی ریکارڈ تعداد ہے۔

امریکی بحری بیڑے پر موجود 23 افراد کی کرونا کا شکار ہونے کی تصدیق

بحر الکاہل میں موجود امریکی طیارہ بردار بحری بیڑے 'یو ایس ایس تھیوڈور روزویلٹ' پر موجود کم سے کم 23 افراد کے کرونا کا شکار ہونے کی تصدیق کی گئی ہے۔ کرونا میں مبتلا ہونے والے تمام مریضوں کو ایک بندرگاہ پر الگ تھلگ کیا جا رہا ہے۔

کشمیر میں کورونا وائرس کی وباء سے دوسری موت، 62 سالہ شخص فوت

وادی کشمیر میں شمالی ضلع بارہمولہ کے ٹنگمرگ علاقے سے تعلق رکھنے والے ایک 62 سالہ شخص کی کورونا وائرس کے باعث موت واقع ہوئی ہے جس کے بعد وادی میں اس عالمی وباء کی وجہ سے جاں بحق ہونے والوں کی تعداد بڑھ کر 2 ہوگئی ہے۔

’ہزاروں مہاجر مزدوروں کا پیدل سفر کرنا ’کورونا‘ سے بھی بڑا سانحہ‘: اجے ماکن

کانگریس کے سینئر رہنما اجے ماکن نے کہا کہ ہزاروں کی تعداد میں پریشان حال غریب، مزدور، خواتین اور بچوں کا لاک ڈاؤں کے دوران شہروں سے اپنے گھروں کو لوٹنے کے لئے سینکڑوں کلو میٹر کا سفر پیدل طے کرنا آج کے دور کا ایک عظیم انسانی سانحہ ہے۔

سعودی عرب میں کرونا وائرس سے چوتھی موت کی تصدیق، مزید 99 افراد کے ٹیسٹ مثبت

سعودی عرب کی وزارتِ صحت نے ہفتے کے روز کرونا وائرس سے چوتھی ہلاکت کی تصدیق کی ہے اور بتایا ہے کہ گذشتہ 24 گھنٹے کے دوران میں مزید 99 افراد کے اس مہلک وائرس کے ٹیسٹ مثبت آئے ہیں اور اس کے مریضوں کی تعداد 1203 ہوگئی ہے۔