منکی میں عورت اور اُس کی دو بیٹیوں کی نعشیں ملنے کا معاملہ؛ ہوگئی شناخت ؛ کیا اُس کے شوہر نے ہی ان تینوں کا قتل کرایا ؟

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 17th May 2019, 2:36 AM | ساحلی خبریں |

بھٹکل 17/مئی (ایس او نیوز) قریبی علاقہ منکی میں گذشتہ روز ایک خاتون اور دو لڑکیوں کی نعشیں  سمندر کنارے برآمد ہوئی تھیں، جس کے تعلق سے شبہ ظاہر کیا جارہا تھا کہ انہوں نے خودکشی کی ہوگی، مگر اس معاملے میں ایک نیا موڑ آگیا ہے جس کے مطابق  گمان کیا جارہا ہے کہ اُسی کے شوہر نے  اُن  کا قتل کیا ہے۔

خاتون کی شناخت  بنگلور کی رہنے والی  مینا ناگراج (36)، اُس کی دو لڑکیاں  مونیشا ناگراج  (14)   اور کومل ناگراج (10) کی حیثیت سے کی گئی ہے۔ 

بتایا گیا ہے کہ مینا اپنے شوہر ناگراج اور اپنی دو لڑکیوں مونیشا  اور کومل  کے ساتھ بنگلور سے 9/مئی کو مرڈیشور کی سیاحت کے لئے نکلے  تھے، جس کے بعد شوہر ناگراج  کچھ روز بعد واپس   بنگلور پہنچ گیا  اور اپنی   صحت خراب ہونے کی بات کہہ کر خود اسپتال میں ایڈمٹ ہوگیا تھا۔

مہلوک مینا کے بھائی بنگلور کے رہائشی جگدیش نے  پولس تھانہ پہنچ کر اپنے ہی بہنوئی پر تینوں کے قتل کا الزام لگایا ہے جس میں انہوں نے بتایا ہے کہ اس کا بہنوئی ناگراج  اس کی بہن مینا پر ظلم ڈھاتا تھا اور اسی نے مرڈیشور میں 10/مئی کو پہنچنے کے بعد  12/مئی کو  منکی پہنچ کر  ان تینوں کو سمندر میں دھکا دے کر گرایا ہے اور  اُن کا قتل کرایا ہے۔

خیال رہے کہ 13/مئی کو  ماں اور دو بٹیوں کی نعشیں منکی سمندر سے برآمد ہوئی تھیں، جن  کے تعلق سے شبہ ظاہر کیا جارہا تھا کہ  ماں نے پہلے دونوں بیٹیوں کو  سمندر میں پھینک کر بعد میں خود سمندر میں چھلانگ لگا کر   خودکشی کی ہوگی، پولس نے تینوں نعشوں کو ہوناور سرکاری اسپتال کے فریزر میں  رکھا تھا اور چھان بین جاری تھی، آج جمعرات کو  ان تینوں کی شناخت ہوئی اور مینا کے بھائی جگدیش نے ہوناور اسپتال پہنچ کر نعشوں کی شناخت کرنے کے بعد  منکی پولس تھانہ پہنچ کر بہنوئی ناگراج کے خلاف شکایت درج کرائی۔

شام چھ بجے  نعشوں کا پوسٹ مارٹم کرکے نعشوں کو گھروالوں کے حوالے کردیا گیا اور منکی کے سماجی کارکن  ذاکر کٹنگری نے   مہلوک کے خاندان کی بھرپور مدد کرتے ہوئے ایمبولنس کی مدد سے  خود نعشوں کو بنگلور لے جانے کے لئے نکل پڑے۔

منکی پولس پورے معاملے کی چھان بین کررہی ہے۔ اُدھر بنگلور سے خبر ملی ہے کہ بنگلور پولس نے  مہلوک خاتون مینا کے شوہر ناگراج کو اسپتال سے ہی گرفتار کرلیا ہے اور  پوچھ تاچھ جاری ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

اُترکنڑا سے چھٹی مرتبہ جیت درج کرنے والے اننت کمار ہیگڑے کی جیت کا فرق ریاست میں سب سے زیادہ؛ اسنوٹیکر کو سب سے زیادہ ووٹ بھٹکل میں حاصل ہوئے

پارلیمانی انتخابات میں شمالی کینرا کے بی جے پی امیدوار اننت کمار ہیگڈے نے پوری ریاست کرناٹک میں سب سے زیادہ ووٹوں سے کامیابی حاصل کی ہے۔ انہوں نے 479649 ووٹوں کی اکثریت سے کانگریس  جے ڈی ایس مشترکہ اُمیدور  آنند اسنوٹیکر  کو شکست دی ۔

ریاست میں کبھی ہار کا منھ نہ دیکھنے والے سیاسی لیڈروں کی ذلت بھری شکست

ریاست کرناٹکا میں انتخابی میدان میں کبھی ہار کا منھ نہ دیکھنے والے چند نامورسیاسی لیڈران جیسے ملیکا ارجن کھرگے، دیوے گوڈا، ویرپا موئیلی اورکے ایچ منی اَپا وغیرہ کو اس مرتبہ پارلیمانی انتخاب میں انتہائی ذلت آمیز شکست سے دوچار ہونا پڑا ہے۔ 

منگلورو:کلاس میں اسکارف پہننے پر سینٹ ایگنیس کالج نے طالبہ کو دیا ٹرانسفر سرٹفکیٹ۔طالبہ نے ظاہر کیاہائی کورٹ سے رجوع ہونے اور احتجاجی مظاہرے کاارادہ

کلاس روم میں اسکارف پہن کر حاضر رہنے کی پاداش میں منگلورومیں واقع سینٹ ایگنیس کالج نے پی یو سی سال دوم کی طالبہ فاطمہ فضیلا کو ٹرانسفر سرٹفکیٹ دیتے ہوئے کالج سے باہر کا راستہ دکھا دیا ہے۔

بھٹکل میں رمضان باکڑہ کی نیلامی؛ 40 باکڑوں کے لئے میونسپالٹی کو 1126 درخواستیں

رمضان کے آخری عشرہ کے لئے بھٹکل  میں لگنے والے رمضان باکڑہ کی آج میونسپالٹی کی جانب سے  نیلامی کی گئی۔ بتایا گیاہے کہ 40 باکڑوں کی نیلامی کے لئے  میونسپالٹی کے جملہ 1126 درخواست فارمس فروخت ہوئے تھے۔