بنگلورو میں ہنی ٹریپ کرنے والی سرسی کی لڑکی کو پولیس نے کیا گرفتار۔ برہنہ تصویروں کے سہارے بلیک میل کرکے وصول کیے تھے 15لاکھ روپے

Source: S.O. News Service | Published on 11th July 2019, 8:03 PM | ساحلی خبریں | ریاستی خبریں |

سرسی11/جولائی (ایس او نیوز) سرسی کی ایک لڑکی ایک 60 سالہ تاجر کو ہنی ٹریپ میں پھنساکر برہنہ تصاویر سوشیل میڈیا پر عام کرنے کی دھمکی دینے اور لاکھوں روپے وصول کرنے والی لڑکی کو بنگلورو پولیس نے سرسی میں اس کے گھر سے گرفتا ر کرلیا ہے۔

موصولہ تفصیلات کے مطابق بنگلورو میں سونے کے زیورات کی دکان چلانے والے ایک شخص کے ساتھ سرسی کی اس لڑکی گزشتہ ایک سال سے دوستی کرلی۔ اس کے بعدکچھ مہینوں تک اس نے بنگلورو میں واقع اس شخص کی زیورات کی دکان پر نوکری کرلی۔ پھر نوکری چھوڑنے کے بعد اس نے اسی شخص کے ساتھ چکمگلورو میں واقع ایک ریسارٹ میں قیام کیا اور وہاں پر دونوں کی برہنہ تصویریں اتاریں۔ اس کے بعد سے اس لڑکی نے دونوں کی برہنہ تصویریں سوشیل میڈیا پر عام کرنے کی دھمکی دیتے ہوے مذکورہ تاجر کو بیلک میل کرنا شروع کیااورتقریباً15 لاکھ روپے وصول کرلیے۔جب اس نے مزید 10لاکھ روپوں کا مطالبہ کیا تو اس شخص نے پولیس کے پاس شکایت درج کروائی تھی جس پر کارروائی کے بعد ہنی ٹریپ کے ذریعے بلیک میل کرنے والی لڑکی کو گرفتار کرلیا گیا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

انجمن ِ اسلام اور اترکنڑامسلم تنظیموں کی جانب سے ہبلی میں حج بھون تعمیرکا مطالبہ : میمورنڈم

ریاست کرناٹکا کے 9اضلاع پر مشتمل شمالی کرناٹکا کے لئے ہبلی میں حج بھون تعمیر کا مطالبہ لےکر دھارواڑ ضلع انجمن ِ اسلام کے ممبران سمیت دیگر مسلم تنظیموں کے عہدیداران نے اترکنڑا ضلع انتظامیہ کی جانب سے اترکنڑا ضلع اپر ڈپٹی کمشنر ناگراج سنگریر کو میمورنڈم سونپا۔

اُترکنڑا میں صبح سے زبردست بارش؛ سداپور میں چلتی بائک پر درخت گرنے سے فوریسٹ آفسر ہلاک؛ انکولہ میں ریلوے پٹری پر چٹان کھسکنے سے کچھ گھنٹوں کے لئے سروس متاثر

اُترکنڑا میں ضلعی انتظامیہ کی جانب سے ریڈ الرٹ جاری کرنے کے بعد آج منگل کو صبح چھ بجے سے صبح آٹھ بجے تک زبردست بارش ہوئی جس کے نتیجے میں بعض علاقوں سے نقصانات کی بھی خبریں آرہی ہیں۔  بارش  کے تیز تیور دیکھتے ہی   ڈپٹی کمشنر نے  صبح اسکول کھلنے سے قبل ہی تمام اسکولوں اور ...

منگلورو۔بنگلوروٹریک پرچٹان توڑنے کا کام مسلسل جاری۔ دن کے وقت چلنے والی ریل گاڑیاں 24جولائی تک کے لئے منسوخ

انی بندا کے قریب سبرامنیا سکلیشپور ریلوے ٹریک پر ایک بڑی چٹان لڑھکنے کا خطرہ پیدا ہوگیا تھا۔ اس حادثے کو روکنے کے لئے پہاڑی تودے کو دھماکے سے توڑنے کاکام پچھلے دو تین دن سے جاری ہے جس کے لئے ہیٹاچی مشین کے کامپریسر اور بارود کا استعمال کیا جارہا ہے۔ لیکن تیز برسات کی وجہ سے دن ...

منگلورومیں بارش کا قہر۔ چٹانیں کھسکنے، درخت اور بجلی کے کھمبے اکھڑنے سے مکانات اور موٹر گاڑیوں کو پہنچا نقصان۔ ضلع انتظامیہ نے جاری کیا ریڈ الرٹ

پچھلے چار پانچ دنوں سے ضلع شمالی کینرا میں جاری تیز بارش کی وجہ سے بھاری نقصانات کی خبریں مل رہی ہیں۔ چونکہ محکمہ موسمیات نے 27جولائی تک تیز بارش کا سلسلہ جاری رہنے کی پیشین گوئی کی ہے اس لئے ضلع انتظامیہ نے ریڈالرٹ جاری کیا ہے۔

ساحلی کرناٹکا میں موسلادھار بارش کا سلسلہ جاری؛ اُترکنڑا میں ریڈ الرٹ؛ ساگرروڈ پر غیر قانونی باکڑوں کو نہ ہٹانے کے پیچھے کیا راز ؟ مینگلور اور اُڈپی میں منگل کو اسکولوں اور کالجوں میں چھٹی

ساحلی کرناٹکا بشمول اُتر کنڑا، اُڈپی اور دکشن کنڑا میں  اتوار سے  جاری زوردار بارش کا سلسلہ آج پیر کو بھی جاری رہا جس سے  کئی علاقوں میں راستے تالاب میں تبدیل ہوگئے،  اس درمیان  محکمہ موسمیات کی جانب سے  بتایا گیا ہے کہ  کل اتوار کو بھٹکل میں جو زبردست بارش ہوئی، اُس کی ...

منگلورو۔بنگلوروٹریک پرچٹان توڑنے کا کام مسلسل جاری۔ دن کے وقت چلنے والی ریل گاڑیاں 24جولائی تک کے لئے منسوخ

انی بندا کے قریب سبرامنیا سکلیشپور ریلوے ٹریک پر ایک بڑی چٹان لڑھکنے کا خطرہ پیدا ہوگیا تھا۔ اس حادثے کو روکنے کے لئے پہاڑی تودے کو دھماکے سے توڑنے کاکام پچھلے دو تین دن سے جاری ہے جس کے لئے ہیٹاچی مشین کے کامپریسر اور بارود کا استعمال کیا جارہا ہے۔ لیکن تیز برسات کی وجہ سے دن ...

کرناٹک: بی ایس پی ارکان اسمبلی کمارسوامی کے حق میں ووٹ کریں گے:مایاوتی

کرناٹک میں کانگریس اورجے ڈی ایس کی مخلوط حکومت رہے گی یا جائے گی اس کا فیصلہ آج ہو جائے گا ۔ برسر اقتدار اتحاد کے ارکان اسمبلی کو بی جے پی ٹوڑنے کی کوشش کر رہی ہے لیکن اس بیچ بی ایس پی سپریموں نے کہا ہے کہ اس کی پارٹی کے ارکان اسمبلی کمارسوامی حکومت کے حق میں ہی ووٹ ڈالیں گے ۔ یہ ...

مخلوط حکومت کی بقا کا سسپنس برقرار آج بھی اسمبلی میں تحریک اعتماد پر ووٹنگ کا امکان،باغیوں کو واپس لانے کیلئے سدارامیا کو وزیر اعلیٰ بنانے کی پیش کش

ریاست میں کانگریس جے ڈی ایس مخلوط حکومت کوبچانے کے لئے اتحادی جماعتوں کے قائدین کی کوششوں کا سلسلہ جاری ہے تو دوسری طرف اپوزیشن بی جے پی اس کوشش میں ہے کہ کسی طرح پیر کے روزتحریک اعتماد پر اسمبلی میں ووٹنگ ہو جائے لیکن خدشات ظاہر کئے جارہے ہیں