بھٹکل میں طوفانی بارش؛ درخت گرنے سے دو مکانوں کو نقصان؛کئی جگہوں پر بجلی کے کھمبے گرنے سے شہر میں الیکٹری سٹی متاثر

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 12th June 2019, 11:24 PM | ساحلی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

بھٹکل 12/جون (ایس او نیوز)  منگل کو کمٹہ میں طوفانی بارش کے بعد آج بدھ دوپہر کو  بھٹکل میں طوفانی ہواوں کے ساتھ زوردار بارش شروع ہوگئی جس کے ساتھ ہی شہر میں گرمی کی شدت سے عوام کو تھوڑی بہت راحت ملی۔ ویسے تو شام ہوتے ہوتے بارش کا سلسلہ رُک گیا مگر دوپہر کو  ہونے والی بارش کے  نتیجے میں  دو مکانوں پر درخت کی شاخیں گرنے سے دونوں مکانوں کو نقصان پہنچا۔

محکمہ الیکٹری سٹی ہیسکام کے اسسٹنٹ انجینر منجوناتھ نے بتایا کہ زوردار بارش کے نتیجے میں تعلقہ کے مختلف حصوں میں جملہ دس بجلی کے کھمبوں کو نقصان پہنچا جس میں  ساگر روڈ کے قریب ڈی پی کالونی کے چھ کھمبے بھی شامل ہیں۔ ڈی پی کالونی میں  ایک  بھاری بھرکم درخت گرنے سے چھ بجلی کے کھمبے گرگئے جس سے پورے شہر کی بجلی کچھ گھنٹوں کے لئے متاثر ہوئی۔

دوپہر کو جب بارش شروع ہوئی تو  پورے  آسمان پر گہرے  کالے بادل چھائے ہوئے تھے اور اندھیرا ایسا پھیلا ہوا تھا کہ   مغرب کا سماں لگ رہا تھا،  اس موقع پر ہلکی ہلکی بجلیاں بھی گررہی تھی۔

آج کی بارش کے ساتھ ہی درجہ حرارت 32 ڈگری سے سیدھے  کم ہوکر 26 ڈٖگری پر پہنچ گیا،  شام ہوتے ہوتے ویسے  بارش کا زور ٹوٹ گیا ، مگر محکمہ موسمیات کے مطابق اگلے 24 گھنٹوں میں مزید زور دار بارش کے امکانات ظاہر کئے گئے ہیں ۔ اُدھر بارش کی شروعات کے ساتھ ہی  سمندری موجوں میں بھی زبردست  اُچھال دیکھی  گئی اور  ضلعی انتظامیہ نے  حفاظتی اقدامات کے طور پر  عوام الناس سمیت ماہی گیروں کو  بھی سمندر میں نہ اُترنے کی وارننگ جاری کی۔ 

اُترکنڑا محکمہ موسمیات کی جانب سے بتائی گئی اطلاع کے مطابق  منگل شام 5 بجے سے بدھ شام 5 بجے تک بھٹکل میں 46 ایم ایم بارش ریکارڈ کی گئی ہے، اسی طرح ضلع کے  کاروار میں 43، انکولہ میں 40،  کمٹہ میں 39 اور ہوناور میں 37 ملی میٹر بارش ریکارڈ کی گئی ہے، البتہ  گھاٹ والے علاقوں بالخصوص  سداپور، منڈگوڈ، سرسی، یلاپور، ہلیال وغیرہ میں  بارش 9 ملی میٹر سے 15 ملی میٹر تک ریکارڈ کی گئی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

علاج کے لئے منگلور جانے والے توجہ دیں: منگلورو اور اڈپی کے اسپتالوں میں کل 17جون کو او پی ڈی خدمات رہیں گی بند

 بھٹکل اور اطراف سے کافی لوگ  علاج معالجہ کے لئے پڑوسی ضلع اُڈپی اور مینگلور کے اسپتالوں کا رُخ کرتے ہیں،  ان کے لئے  بری  خبر یہ ہے کہ کل  ڈاکٹروں کے احتجاج کے پیش نظر  مینگلور اور اُڈپی کے اسپتالوں میں باہری  مریضوں  کا علاج  نہیں ہوگا۔

آئی ایم اے میں سرمایہ کاری کرکے دھوکہ کھانے والے متاثرین کی قانونی مدد کے لئے اے پی سی آر کی خدمات دستیاب

آئی ایم اے میں سرمایہ کاری کرکے دھوکہ کھانے والے متاثرین کی قانونی رہنمائی اور اُن کی  مدد کے لئے  اسوسی ایشن فور پروٹیکشن آف سیول رائٹس  (اے پی سی آر)  کی خدمات حاصل کی جاسکتی ہے۔جن  لوگوں نے  اپنی چھوٹی چھوٹی سرمایہ  کاری  اس کمپنی میں کی تھی اور اب وہ کنگال ہوچکے ہیں، اے پی ...

نچلی عدالت نے چار ملزمین کو عمر قید اور ایک ملزم کو باعزت بری کیا، جمعیۃ علماء نچلی عدالت کے فیصلہ کو ہائی کورٹ میں چیلنج کرے گی:گلزاراعظمی

14 سالوں کے طویل انتظار کے بعدآج الہ آباد کی خصوصی عدالت نے رام جنم بھومی (ایودھیا دہشت گردانہ حملہ) معاملے میں اپنا فیصلہ سنایا اور پانچ میں سے ایک جانب جہاں چار ملزمین کو عمر قید کی سزا دی وہیں ناکافی ثبوت وشواہد کی بنیاد پر ایک ملزم کو باعزت بری کردیا۔

علاج کے لئے منگلور جانے والے توجہ دیں: منگلورو اور اڈپی کے اسپتالوں میں کل 17جون کو او پی ڈی خدمات رہیں گی بند

 بھٹکل اور اطراف سے کافی لوگ  علاج معالجہ کے لئے پڑوسی ضلع اُڈپی اور مینگلور کے اسپتالوں کا رُخ کرتے ہیں،  ان کے لئے  بری  خبر یہ ہے کہ کل  ڈاکٹروں کے احتجاج کے پیش نظر  مینگلور اور اُڈپی کے اسپتالوں میں باہری  مریضوں  کا علاج  نہیں ہوگا۔

آئی ایم اے معاملہ میں نرم رویہ اختیار کرنے کاسوال پیدا نہیں ہوتا: ضمیر احمد خان

آئی مانیٹری اڈوائزری (آئی ایم اے) نامی پونزی کمپنی کے دھوکہ دہی معاملہ میں نرم رویہ اختیار کئے جانے کا سوال پیدا نہیں ہوتا۔ خصوصی تحقیقاتی ٹیم (ایس آئی ٹی) کی جانب سے تحقیقات جاری ہیں۔اس پس منظر میں بی جے پی کی جانب سے عائد کئے جارہے الزامات بکواس ہیں۔