اُڈپی اور جنوبی کینرا میں بھی بارش نے مچائی تباہی۔ کمپاؤنڈ کی دیواریں گرنے اورچٹان کھسکنے کی واردات۔ درخت اور بجلی کے کھمبے اکھڑگئے

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 6th August 2019, 6:43 PM | ساحلی خبریں | ریاستی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

منگلورو6/اگست (ایس او نیوز) ضلع اُترکنڑا کے ساتھ ساتھ جنوبی کینرا اور اڈپی ضلع میں بھی اس مرتبہ شدید بارش نے تباہی مچارکھی ہے۔پیر کے دن شروع ہونے والی تیز بارش اور طوفانی ہواؤں کی وجہ سے کئی مقامات پر سڑکوں، مکانوں اور عمارتوں کو بہت زیادہ نقصان پہنچنے کی اطلاعات موصول ہورہی ہیں۔

 منگلورو میں لگاتار بارش کی وجہ سے جیل روڈ پر ایک تجارتی کامپلیکس کے کمپاؤنڈ کی دیواراس انداز سے گر گئی کہ اس سے متصل دومکانات کے کمپاؤنڈ کی دیواروں کو بھی نقصان پہنچا اور اس گرنے والی دیوار کا ملبہ اور کیچڑ زیر زمین ڈرینیج سسٹم میں گھس گیا۔ منگلورو میونسپل کارپوریشن کے افسران اور عملے نے موقع پر پہنچ کر زیر زمین ڈرینیج سسٹم سے کیچڑ نکلوا کر گندے پانی کی نکاسی کی راہ ہموار کی۔اُروا علاقے میں گوری نامی خاتون کا گھر اس وقت بری طرح تباہ ہوگیا جب ایک درخت کی بہت بڑی شاخ اس کے  مکان پر گرگئی۔

 بنٹوال اور سالیتھور کے بیچ واقع کوڈتھاموگیرو میں پیر کی رات کو ہوئی بھاری برسات کی وجہ سے سڑک پر گاڑیاں چلانا ناممکن ہوگیا۔ ایک گھنٹے کے ٹریفک جام کے بعد راستہ سواریوں کی آمد و رفت کے قابل ہوا۔دھرمستھلا کے قریب مڈیال چاڈو میں چٹان کھسکنے کی وجہ سے سڑک پر کیچڑجمع ہوگیا اور دوطرفہ ٹریفک والا روڈ بہت دیر تک یک طرفہ روڈ میں تبدیل ہوگیا۔

 ٹرین پر گرا پیپل کا درخت:    اڈپی ضلع کے ہیبری میں سیتا ندی کا پانی سطح بہت زیادہ بڑھنے اور سڑک پر گزرنے کی وجہ سے نیشنل ہائی وے پر آمد روفت منقطع ہوگئی ہے۔اڈپی ریلوے اسٹیشن کے پلیٹ فارم کے آخری سرے پرممبئی سے منگلورو کی طرف بڑھتی ہوئی نیتراوتی ٹرین نمبر 16345 پرمنگل کی صبح ساڑھے پانچ بجے ایک بہت بڑا پیپل کا درخت گرگیا۔ ٹرین میں موجود مسافروں کو کسی قسم کا نقصان نہیں پہنچا۔ درخت کوکاٹنے اور ٹریک صاف کرنے کے بعد ٹرین کو آگے روانہ کیا گیا۔اڈپی شہر میں مشن کمپاؤنڈ کے پاس ایک الیکٹرک کا کھمبا ٹوٹ کر آٹو رکشا پر گرگیا۔ اس کے علاوہ اجرکاڈ کے علاقے میں ہی برسات سے نقصانات ہونے کی خبر ہے۔

 چارمڈی گھاٹ پر ٹریفک جام:     بیلتنگڈی سے آگے چارمڈی گھاٹ کے ساتویں موڑ پرمنگل کی صبح  چٹان کھسکنے کا واقعہ پیش آیا اور بڑی مقدار میں ملبہ سڑک پر جمع ہوگیا۔ اس کے علاوہ دو بہت بڑے درخت جڑ سے اکھڑ کر سڑک پر گرگئے جس کی وجہ سے اس علاقے میں تین مقامات پر گھنٹوں موٹر گاڑیوں کی آمدو رفت بند ہوگئی۔ 2کیلو میٹر سے زیادہ فاصلے تک موٹر گاڑیوں کی قطار لگ گئی۔متعلقہ سرکاری افسران اور عملہ وقت پر نہ پہنچنے اور بروقت کارروائی نہ کرنے سے موٹر گاڑیوں کے ڈرائیوروں اور مسافروں نے برہمی کا مظاہرہ کیا۔ اس کے بعد ضلع انتظامیہ کے افسران حرکت میں آگئے اور تیز رفتاری سے کام کرتے ہوئے ملبہ اور گرے ہوئے درختوں کو سڑک سے ہٹاتے ہوئے موٹر گاڑیوں کی آمد ورفت کو بحال کردیا۔

 تعلیمی اداروں کو دی گئی چھٹی:    برسات کی تباہ کاریوں کو دیکھتے ہوئے جنوبی کینرا اور اڈپی دونوں اضلاع میں ضلع انتظامیہ نے احتیاطی اقدام کے طور پر 7/اگست کو تعلیمی اداروں میں چھٹی کا اعلان کیا ہے۔اسکولوں کے علاوہ تمام کالجوں میں بھی چھٹی رہے گی۔منگلورو کے ڈپٹی کمشنر سسی کانت سینتھل نے بتایا کہ محکمہ موسمیات کی طرف سے کل بھی بہت بھاری مقدار میں بارش ہونے کی پیشین گوئی کی گئی ہے، اس لئے تعلیمی اداروں کو چھٹی دے دی گئی ہے۔جبکہ اڈپی ضلع کی ڈپٹی کمشنر ہیپسبا رانی کورلاپتی نے اخباری نمائندوں سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ضلع میں ریڈ الرٹ جاری کیا گیا ہے۔ اس لئے اگر 20سینٹی میٹر سے زیادہ بارش ہوتی ہے تو پھرتعلیمی اداروں کی چھٹی میں 8اور9اگست تک توسیع کرنے کے بارے میں کل غور کیاجائے گا۔

 این ڈی آر ایف ٹیم چوکنا:     ڈی سی ہیپسبا رانی نے مزید یہ بھی کہا کہ قدرتی آفات سے نمٹنے کے لئے فنڈ کی کوئی کمی نہیں ہے۔ فی الحال برسات سے پیدا ہونے والے ہنگامی حالات میں راحت کاری کے لئے ہر تحصیلدار کو 10لاکھ روپے کا فنڈ منظور کیا گیا ہے۔اس کے علاوہ نیشنل ڈِس ایسٹر ریسپونس فورس(این ڈی آر ایف) کی ایک ٹیم کو سورتکل میں چوکنااورتیار رکھا گیا ہے، جوبوقت ضرورت ایک گھنٹے کے اندر اڈپی تک پہنچ سکتی ہے۔انہوں نے کہا کہ ہم لوگ حالات پر پوری طرح نظر بنائے ہوئے ہیں اور متاثرہ مقامات پر پہنچ کر معائنہ کرنے کا کام جاری ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

بھٹکل: مرڈیشور میں راہ چلتی خاتون کو اغوا کرنے کی کوشش ہوگئی ناکام؛ علاقہ میں تشویش کی لہر

تعلقہ کے مرڈیشور میں ایک خاتون کو اغوا کرنے کی کوشش اُس وقت  ناکام ہوگئی جب اُس نے ہاتھ پکڑ کھینچتے وقت چلانا اور مدد کے لئے پکارنا شروع کردیا،  وارات  منگل کی شب قریب نو بجے مرڈیشور کے نیشنل کالونی میں پیش آئی۔واقعے کے بعد بعد نہ صرف مرڈیشور بلکہ بھٹکل میں بھی تشویش کی لہر ...

کیا شمالی کینرا سے شیورام ہیبار کے لئے وزارت کا قلمدان محفوظ رکھا گیا ہے؟

کرناٹکاکے وزیراعلیٰ  ایڈی یورپا نے دو دن پہلے اپنی کابینہ کی جو تشکیل کی ہے اس میں ریاست کے 13اضلاع کو اہمیت دیتے ہوئے وہاں کے نمائندوں کو وزارتی قلمدان سے نوازا گیا ہے۔اور بقیہ 17اضلاع کو ابھی کابینہ میں نمائندگی نہیں دی گئی ہے۔

ساگر مالا منصوبہ: انکولہ سے بیلے کیری تک ریلوے لائن بچھانے کے لئے خاموشی کے ساتھ کیاجارہا ہے سروے۔ سیکڑوں لوگوں کی زمینیں منصوبے کی زد میں آنے کا خدشہ 

انکولہ کونکن ریلوے اسٹیشن سے بیلے کیری بندرگاہ تک ’ساگر مالا‘ منصوبے کے تحت ریلوے رابطے کے لئے لائن بچھانے کا پلان بنایا گیا اور خاموشی کے ساتھ اس علاقے کا سروے کیا جارہا ہے۔

ماڈرن زندگی کا المیہ: انسانوں میں خودکشی کا بڑھتا ہوا رجحان۔ ضلع شمالی کینرا میں درج ہوئے ڈھائی سال میں 641معاملات!

جدید تہذیب اور مادی ترقی نے جہاں انسانوں کو بہت ساری سہولتیں اور آسانیاں فراہم کی ہیں، وہیں پر زندگی جینا بھی اتنا ہی مشکل کردیا ہے۔ جس کے نتیجے میں عام لوگوں اور خاص کرکے نوجوانوں میں خودکشی کا رجحان بڑھتا جارہا ہے۔

منگلورو پولیس نے ایک اور مشکوک کار کو پکڑا؛ پنجاب نمبر پلیٹ والی کار کے تعلق سے پولس کو شکوک و شبہات

دو دن دن پہلے لٹیروں اور جعلسازوں کی ایک ٹولی کے قبضے سے منگلورو پولیس نے ایسی کار ضبط کی تھی جس پر نیشنل کرائم انویسٹی گیشن بیوریو، گورنمنٹ آف انڈیا لکھا ہوا تھا۔اب مزید ایک مشکوک کار کو پولیس نے اپنے قبضے میں لیا ہے۔ جس پر بھی گورنمینٹ آف انڈیا لکھا ہوا ہے۔

ریاستی حکومت نے آئی ایم اے فراڈ کیس کی جانچ سی بی آئی کے حوالے کیا

ریاست کی سابقہ کانگریس جے ڈی ایس حکومت کے دور میں کی گئی مبینہ ٹیلی فون ٹیپنگ کی سی بی آئی جانچ کے ا حکامات صادر کرنے کے دودن بعد ہی آج ریاستی حکومت نے کروڑوں روپیوں کے آئی ایم اے فراڈ کیس کی جانچ سی بی آئی کے سپرد کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

کیا شمالی کینرا سے شیورام ہیبار کے لئے وزارت کا قلمدان محفوظ رکھا گیا ہے؟

کرناٹکاکے وزیراعلیٰ  ایڈی یورپا نے دو دن پہلے اپنی کابینہ کی جو تشکیل کی ہے اس میں ریاست کے 13اضلاع کو اہمیت دیتے ہوئے وہاں کے نمائندوں کو وزارتی قلمدان سے نوازا گیا ہے۔اور بقیہ 17اضلاع کو ابھی کابینہ میں نمائندگی نہیں دی گئی ہے۔

بنگلورو: نشے میں دھت شخص نے فٹ پاتھ پر 7 لوگوں کو کچل دیا

شراب کے نشے میں دھت ایک شخص نے بہت تیز رفتار کار فٹ پاتھ پر چڑھا دی اور فٹ پاتھ پر چل رہے 7 افراد اس کار کی زد میں آ گئے۔ زخمیوں کو فوراً اسپتال پہنچایا گیا اور خبر لکھے جانے تک ان لوگوں کی حلات نازک بنی ہوئی ہے۔ یہ واقعہ بینگلورو کے ایچ ایس آر لے آؤٹ علاقے کا ہے۔

بھٹکل: مرڈیشور میں راہ چلتی خاتون کو اغوا کرنے کی کوشش ہوگئی ناکام؛ علاقہ میں تشویش کی لہر

تعلقہ کے مرڈیشور میں ایک خاتون کو اغوا کرنے کی کوشش اُس وقت  ناکام ہوگئی جب اُس نے ہاتھ پکڑ کھینچتے وقت چلانا اور مدد کے لئے پکارنا شروع کردیا،  وارات  منگل کی شب قریب نو بجے مرڈیشور کے نیشنل کالونی میں پیش آئی۔واقعے کے بعد بعد نہ صرف مرڈیشور بلکہ بھٹکل میں بھی تشویش کی لہر ...

کاروارمیں ریڈ الرٹ کے باوجود کوسٹل سیکیوریٹی پولیس کی انٹر سیپٹر کشتیاں نہیں اتریں سمندر میں!

ابھی دو دن پہلے ملک کی خفیہ ایجنسی نے سمندری راستے سے دہشت گردانہ حملہ ہونے کا خدشہ ظاہر کیا تھا جس کے بعد پوری ریاست کرناٹکا میں اور بالخصوص ساحلی کرناٹکا میں ریڈ الرٹ جاری کیا گیا ہے۔