ریاست میں پانی کی صورتحال مخدوش: وزیر اعلیٰ کمار سوامی

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 13th June 2019, 10:55 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو،13؍جون (ایس اونیوز) مانسون کی غیر معمولی تاخیر کے سبب ریاست میں پانی کی صورتحال مخدوش ہوگئی ہے- اس سلسلے میں نہ صرف تملناڈو بلکہ ریاست کے اندر اضلاع بھی اپنا کوٹہ طلب کر رہے ہیں - محکمہ آبی وسائل کا جائزہ لیتے ہوئے وزیر اعلیٰ کمار سوامی نے کہا ”2007 میں نظر ثانی عرضی داخل کرنے کے بعد گو ہمیں کاس کاویری 14ٹی ایم سی افزود پانی ملا ہے مگر ریاست کے مختلف اضلاع سے اس کے کئی دعویدار ہیں - ریاست کرناٹک کے قدرتی آفات نگرانی مرکز (کے ایس این ڈی ایم سی) کے مطابق اس سال 11جون تک آبی ذخائر میں ایک ٹی ایم سی سے کم پانی بہا ہے- کے ایس این ڈی ایم سی کے ڈائرکٹر جی سرینواس ریڈی ے کہا گو ساحلی حصوں اور ملناڈ کے علاقوں میں بارش ہوئی ہے، یہ مانسون کی آمد کیلئے درکار تمام ضوابط کو پورا نہیں کرتی، ایک دہے میں کم از کم پہلی مرتبہ مانسون کی آمد میں اس قدر تاخیر ہوئی ہے اور اسے پوری ریاست کا احاطہ کرنے میں مزید کچھ دن لگیں گے- جائزہ میٹنگ میں کمار سوامی نے منتخب نمائندوں پر الزام لگایا اور کہا ”ہم ووٹ کے لئے افسروں پر دباؤ ڈالتے ہیں اور حکومت کے پیسے کا غلط استعمال کرتے ہیں، یہ نشاندہی کرتے ہوئے کہ صرف ان پراجکٹوں کے لئے رقم جاری کی جائے جو نتیجہ دیتے ہیں - انہوں نے کہا کہ افسروں کو مضبوط رہنا چاہئے اور انہیں اس پر آمادہ کرنا چاہئے کہ رقم کا صحیح استعمال ہو“ انہوں نے کہا ”اندھرا پردیش کو دیکھو کہ انہوں نے کرشنا کا پانی ہندوپوراور مڈاکاسرا تک لایا ہے جو ہمارے پاؤگڈھ اور ملباگل کے بعد ہے- اگر ہم کرشنا کا پانی ٹمکورو یا کولار کو لاناچاہئیں تو خود ہمارے اپنے لوگ مخالفت کریں گے- ریاست میں مانسون کی تاخیر پر وضاحت کرتے ہوئے ریڈی نے کہا کہ سیلابی آندھی ”وایو“ بادلوں کو جنوب سے گجرات کے ساحل لے گئی ہے، ایسے کئی واقعات ہیں کہ کرناٹک کے ساحلوں تک مانسون آنے کے بعد اسے پوری ریاست کا احاطہ کرنے ایک ہفتے سے زیادہ کا وقت لگا ہے-انہوں نے کہا ”حالیہ یادداشت میں مانسون اتنا موخر نہیں ہوا- وایو کے تھمنے پر 16/جون کے بعد اندرونی علاقوں میں اچھی بارشیں ہوں گی-

ایک نظر اس پر بھی

کیرالہ کے وائناڈمیں ٹیچراور انتظامیہ کی غفلت کا دردناک انجام۔ کلاس روم میں سانپ کاٹنے سے بچی کی موت۔ طلبہ کا احتجاج۔ ٹیچراور ڈاکٹر معطل

کیرالہ کے سیاحتی مقام وائناڈ میں واقع سرکاری سرواجناہائر سیکنڈری اسکول کے ٹیچر اورانتظامیہ کے غیر ذمہ دارانہ رویے کی وجہ سے پانچویں جماعت میں پڑھنے والی معصوم طالبہ کی جان چلے جانے کا واقعہ پیش آیا ہے۔

انکولہ اور گوکرن میں پوجا کے لئے پہنچے کانگریس دگج لیڈر ڈی کے شیوکمارنے کہا’ضمنی انتخابات پارٹی کے لئے نہیں بلکہ  رائے دہندگان کے وقار کا سوال ہے‘

ریاست میں ہورہے ضمنی انتخابات رائے دہندگان کے لئے ایک وقار بن گیا ہے ، ان انتخابات میں میری یا کانگریس کے وقار کاسوال نہیں ہے، ووٹروں کی خود اعتمادی کو دھکا لگاہے، اس کا وہی صحیح اور ٹھیک ٹھیک جواب دیں گے۔ کانگریس کے دگج لیڈر ڈی کے شیوکمار نے ان خیالات کا اظہار کیا۔

سڑک حادثات میں کرناٹک چوتھے مقام پر

حالیہ برسوں میں سڑک حادثات بکثرت پیش آرہے ہیں - پیش آمدہ حادثات کے پیش نظر قومی سطح پر ایک سروے کے ذریعہ سڑک حادثات کی کثرت والی ریاستوں کی فہرست تیار کی گئی ہے-

بی جے پی میں نااہل ارکان اسمبلی کی شمولیت اور ضمنی انتخابات کو لے کر مسائل کے انبار: پرانے لیڈران اور کارکنان کے ساتھ مفاہمت اور ہم آہنگی کا فقدان

ریاست کرناٹک کے 15حلقوں میں ضمنی انتخابات ہورہے ہیں جن میں 13حلقوں سے نااہل قرار دئیے گئے ارکان اسمبلی انتخابی میدان میں ہیں، کئی حلقوں میں نااہل ارکان اسمبلی کے حمایتیوں اور مقلدوں کا زور ہونے کی وجہ سے بی جےپی کے اصل کارکنان کو اپنی شناخت بچائے رکھنے کی فکر ستا رہی ہے۔ خبر ملی ...

پتور دوہرے قتل معاملے کو جنوبی کینرا پولیس نے 24گھنٹوں میں حل کردیا۔ ملزم کریم خان گرفتار

پتور میں آدھی رات کو جو وحشتناک دوہرا قتل ہواتھا اور ایک بزرگ خاتون سنگین طور پر زخمی ہوگئی تھیں، اس معاملے کو جنوبی کینرا پولیس نے بڑی سرعت دکھاتے ہوئے 24گھنٹوں کے اندر حل کردیا اور ملزم کریم خان کو گرفتار کرنے میں کامیاب ہوگئی۔

یلاپور ضمنی انتخاب: ضلع میں بدلتی ہوئی کانگریس کی پوزیشن۔ اتی کرم داروں کے قائداور جنتادل ایس کے لیڈر رویندرانائک تھام سکتے ہیں کانگریس کا ہاتھ

کانگریس پارٹی سے بغاوت اور مخلوط حکومت کو گرانے کا سبب بننے والے شیو رام ہیبار کے لئے بی جے پی نے اپنا ٹکٹ تو دے دیا ہے، لیکن بدلتے ہوئے سیاسی حالات سے لگ رہا ہے کہ سابق ضلع انچارج وزیر اور ہلیال کے رکن اسمبلی آر وی دیشپانڈے کی طرف سے شیورام ہیبار کی جیت دشوار کرنے کا پورا انتظام ...