ہائی کورٹ نے کووڈ19 کے مفت علاج سے منسلک درخواست پر سماعت کرنے سے کیا انکار 

Source: S.O. News Service | Published on 30th June 2020, 11:02 PM | ملکی خبریں |

نئی دہلی، 30 جون (آئی این ایس انڈیا) دہلی ہائی کورٹ نے منگل کو کوڈ19 کے مفت علاج سے متعلق درخواست پر غور کرنے سے انکار کردیا اور کہا کہ ذمہ داری کے ساتھ مفادعامہ کی درخواست داخل کی جانی چاہئے۔

درخواست میں قومی دارالحکومت کے تمام نجی لیبارٹری اور اسپتالوں میں کووڈ19 کی مفت اسکریننگ اور علاج کی ہدایت دینے کی درخواست کی گئی تھی۔

جسٹس ڈی این پٹیل اور جسٹس پرتیک جالان کی بنچ نے کہا کہ وہ جرمانے عائد کرنے کے ساتھ ہی اس درخواست کو خارج کردے گی۔ اس پر درخواست گزار کے وکیل نے درخواست واپس لینے کے لئے اجازت مانگی۔ درخواست گزار سشانت مشرا نے نجی لیبارٹریوں اور اسپتالوں میں کووڈ19 کے ٹیسٹ اور علاج کے لئے مرکز اور دہلی حکومت کو ہدایت دینے کی مانگ کی تھی۔

عدالت نے کہا کہ امیرلوگوں کے مفاد کے لئے یہ درخواست دائر کی گئی ہے۔ عدالت نے درخواست گزار کو غریبوں کے لئے ایسی درخواست دائر کرنے کا مشورہ دیا، جو کووڈ19 کی جانچ اور علاج کے متحمل نہیں ہیں۔ عدالت نے کہاکہ اس طرح دونوں چیزوں کو آپس میں مت ملاؤ۔ بنچ نے کہا کہ ماگی گئی راحت مرکزی اور ریاستی حکومتوں کے پالیسی ساز فیصلے کے تحت آتی ہے۔ حکومت طے کرے گی کہ مفت علاج اور معاوضے جیسے فوائد کا کون حقدار ہے۔

عدالت نے کہا کہ محاذ پر کام کرنے والے صحت ملازم کی انفیکشن کی وجہ سے موت کی صورت میں دہلی حکومت اس خاندان کو ایک کروڑ روپئے کی رقم فراہم کرتی ہے،اس لئے انہیں اپنا کام کرنے دیں۔ بنچ نے کہاکہ بہتر ہے کہ ہم مداخلت نہ کریں۔ سماعت کے دوران دہلی حکومت نے عدالت کو بتایا کہ وہ اپنے تمام اسپتالوں میں کووڈ 19 کے مریضوں کافری علاج کررہی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

مانسون اجلاس: پیگاسس اور کسانوں کے مسئلہ پر حزب اختلاف کا ہنگامہ جاری، راجیہ سبھا کی کارروائی تک ملتوی

راجیہ سبھا میں اپوزیشن جماعتوں کے ارکان نے پیگاسس جاسوسی کیس، کسانوں کے مسائل اور مہنگائی پر راجیہ سبھا میں شور و غل اور ہنگامہ کیا، جس کی وجہ سے ایوان کو دوپہر 2 بجے تک ملتوی کر دیا گیا۔ صبح ضروری دستاویزات میز پر رکھے جانے کے بعد چیئرمین ایم وینکیا نائیڈو نے کہا کہ ضابطہ 267 کے ...

دہلی: ریپ کے بعد قتل کی گئی بچی کے اہل خانہ سے راہل گاندھی کی ملاقات، ’انصاف کے راستہ پر میں ساتھ ہوں‘

  کانگریس کے سابق صدر راہل گاندھی نے بدھ کی صبح راجدھانی دہلی میں عصمت دری اور قتل کی شکار ہونے والی بچی کے اہل خانہ سے ملاقات کی۔ ملک کو شرمسار کر دینے والے اس واقعہ کا المناک پہلو یہ ہے کہ متاثرہ بچی کی لاش کو اہل خانہ کی مرضی کے بغیر نذر آتش کر دیا گیا۔ راہل گاندھی صبح کے وقت ...

دہلی سنبھال نہیں پا رہے ہیں، وزیر داخلہ یو پی کو دے رہے ہیں سرٹیفکیٹ: پرینکا گاندھی

کانگریس کی جنرل سکریٹری پرینکا گاندھی نے دہلی میں ایک بچی کے ساتھ ہوئے حادثے کی مذمت کرتے ہوئے وزیرداخلہ امت شاہ کو ہدف تنقید بنایا اور کہا کہ وہ دہلی کا لاء اینڈ آرڈر سنبھال نہیں پا رہے ہیں اور اترپردیش میں بہتر نظم و نسق کا سرٹیفکیٹ بانٹ رہے ہیں۔

راہل گاندھی کی ’ناشتہ پارٹی‘ کے بعد کانگریس نے کہا ’یہ آنے والے 2024 کی تصویر ہے‘

 کانگریس کے سابق صدر راہل گاندھی کی دعوت پر آج صبح 9.30 بجے 17 اپوزیشن پارٹیوں کے لیڈران کانسٹی ٹیوشن کلب پہنچے اور چائے و ناشتہ کی دعوت میں شرکت کی۔ اس سلسلے میں کانگریس ترجمان ابھشیک منو سنگھوی نے ایک پریس کانفرنس کر ان سبھی اپوزیشن پارٹی لیڈران کا شکریہ ادا کیا جنھوں نے راہل ...

دہلی میں 9 سالہ دلت بچی کی عصمت دری اور قتل کے خلاف کانگریس سراپا احتجاج

دہلی میں 9 سالہ دلت بچی کی عصمت دری اور قتل معاملہ کو لے کر کانگریس نے سخت ناراضگی کا اظہار کرتے ہوئے دہلی کی کیجریوال حکومت اور دہلی پولیس کے ساتھ ساتھ مرکز کی مودی حکومت کو بھی تنقید کا نشانہ بنایا ہے۔